سرینگر جموں قومی شاہراہ بحال، صرف یاترا کی گاڑیوں کو چلنے کی اجازت

File Photo

محمد تسکین

رام بن//وقفے وقفے سے جاری پتھراﺅ کے درمیان جموں سری نگر شاہراہ آمد و رفت کیلئے بحال کر دیا گیا ہے، تاہم فی الحال شاہراہ پر یاترا کی گاڑیوں کو چلنے کی اجازت ہی دی جا رہی ہے۔
ایک عہدیدار نے بتایا کہ چندرکوٹ یاترا نواس میں روکے گئے یاتریوں کو کشمیر کی طرف جانے کی اجازت دی گئی ہے، یہ یاتری اب اننت ناگ کے میر بازار علاقے میں کریں گے۔
اُنہوں نے مزید بتایا کہ کل سے میر بازار میں روکے گئے یاتریوں کو بھی جموں کی طرف جانے کی اجازت دی گئی ہے۔
ایس ایس پی رام بن موہتا شرما نے ایک ٹویٹ کر کے بتایا، “چندرکوٹ یاترا نواس میں روکے گئے یاتریوں کو موسم میں بہتری اور شاہراہ کی بحالی کے بعد کشمیر کی طرف جانے کی اجازت دی گئی ہے”۔
ایس ایس پی ٹریفک رام بن شبیر ملک نے کہا،”آج جموں اور سرینگر سے کسی بھی گاڑیوں کو آج شاہراہ کی طرف بڑھنے کی اجازت نہیں دی جائے گی”۔
ٹریفک حکام نے بتا یا کہ جموں-سری نگر قومی شاہراہ پر مہاڑ کے مقام پر وقفے وقفے سے جاری پتھراو کا سلسلہ رک جانے کے بعد شاہراہ بحال کی گئی ہے ، چندرکوٹ یاترا نواس میں روکی گئی یاترا کو کشمیر کی طرف روانہ کیا گیا ہے۔ ا±نہوں نے بتایا کہ مغل شاہراہ پر گاڑیوں کی دو طرفہ آمد و رفت جاری ہے اور شاہراہ پر کسی بھی مقام پر کوئی رکاوٹ ہونے کی کوئی خبر نہیں ہے۔