سرینگر:غیر مجاز غیر حاضری اور دفتری اوقات کی پابندی نہ کرنے پر 162ملازمین کی تنخواہوں پر روک

File Photo

سرینگر//سرکاری دفاتر میں وقت کی پابندی کو یقینی بنانے کے لیے ڈپٹی کمشنر سری نگر محمد اعجاز اسد کی ہدایت پر ضلع انتظامیہ سرینگر کے سینئر افسران نے جمعرات کو سرینگر کے مختلف سرکاری دفاتر کا اچانک معائنہ کیا۔
اسسٹنٹ کمشنر ریونیو، سری نگر، سب ڈویژنل مجسٹریٹ، ایسٹ اور سب ڈویژنل مجسٹریٹ ویسٹ کی سربراہی میں جانچ ٹیموں نے ضلع بھر کے مختلف سرکاری دفاتر کا اچانک معائنہ کیا جن میں محکمہ دیہی ترقیات، ضلع پنچایت دفتر، اسسٹنٹ کمشنر پنچایت، چیف ایگریکلچر آفیسر، آر اینڈ بی ، آئی اینڈ ایف سی، ایف سی ایس اینڈ سی اے، آر ٹی او، ریونیو ٹریننگ انسٹی ٹیوٹ، آر اینڈ بی، میڈیکل زون بٹہ مالو میں صحت کے ادارے، کوٹھی باغ ہائر سیکنڈری، مڈل سکول کوٹھی باغ، ایگزیکٹیو انجینئر واٹر ورکس ڈویژن، یو پی ایچ سی، قمرواری، بی ایچ سکول، برتھانہ، پی ایچ سی، زینہ کوٹ، گورنمنٹ گرلز مڈل سکول زینہ کوٹ،اور دیگر شامل ہیں۔
اسی دوران، جانچ ٹیموں نے مختلف دفاتر کے 162 ملازمین کو یا تو غیر مجاز طور پر اپنی ڈیوٹی سے غیر حاضر پایا یا کچھ دفتر میں دیر سے پہنچے۔
ڈپٹی کمشنر نے ملازمین کی غیر مجاز غیر حاضری اور دفتر میں دیر سے پہنچنے کا سخت نوٹس لیتے ہوئے تمام 162 ملازمین کی تنخواہیں روکنے کا حکم دیا ہے۔ مذکورہ ملازمین سے اس معاملے میں وضاحت بھی طلب کی۔
ڈپٹی کمشنر سری نگر نے کہا کہ سرکاری دفاتر میں اس طرح کے معائنے مستقبل میں بھی جاری رہیں گے اور ڈیوٹی میں غفلت برتنے بشمول غیر مجاز غیر حاضری اور دیر سے دفتر پہنچنے کو کسی صورت برداشت نہیں کیا جائے گا۔
انہوں نے متعلقہ ضلعی سربراہان کو کسی بھی ملازم کے اجازت کے بغیر غیر حاضر رہنے کے خلاف سخت کاروائی اور دفتری اوقات کی پابندی کو یقینی بنانے کی ہدایت بھی دی۔