بارہمولہ حلقے میں 5 بجے تک 54.57 فیصد، لداخ میں 67.15 فیصد پولنگ

عظمیٰ ویب ڈیسک

بارہمولہ// شمالی کشمیر کے بارہمولہ لوک سبھا حلقہ پر 5 بجے تک کل 54.57 فیصد پولنگ ریکارڈ کی گئی ہے۔ ووٹنگ صبح 7 بجے شروع ہوئی تھی جو شام 6 بجے تک جاری رہے گی۔
اسی بیچ لداخ لوک سبھا سیٹ پر 5 بجے تک 67.15 فیصد ٹرن آوٹ ریکارڈ کیا گیا۔
ذرائع کے مطابق پولنگ مراکز پر صبح سے ہی رائے دہندگان جن میں مرد و زن اور جوان شامل تھے، کو لمبی قطاروں میں ووٹ ڈالنے کے لئے اپنی اپنی بھاریوں کے انتظار میں دیکھا گیا۔
سرکاری ذرائع کے مطابق چار اضلاع بارہمولہ، بانڈی پورہ، کپوارہ اور بڈگام کے 18 اسمبلی حلقوں پر مشتمل اس لوک سبھا سیٹ کے لئے رائے دہندگان کی کل تعداد 17 لاکھ 38 ہزار ہے۔
انہوں نے کہا کہ رائے دہندگان کی سہولیت اور ہموار پولنگ کو یقینی بنانے کے لئے 2 ہزار 1 سو 3 پولنگ مراکز قائم کئے گئے ہیں۔
بتادیں کہ ان پولنگ مراکز میں تین مراکز کی سرحد پاکستان زیر قبضہ کشمیر کے ساتھ ملتی ہے۔
حکام نے پر امن پولنگ کے لئے جہاں سیکورٹی کے سخت انتظامات کئے ہیں وہیں پپولنگ مراکز پر بھی پولنگ عملے کے لئے تمام تر سہولیات کو دستیاب رکھا گیا ہے۔
گرچہ اس لوک سبھا نشست کے لئے 22 امید وار میدان میں ہیں تاہم اصل مقابلہ نیشنل کانفرنس کے نائب صدر عمر عبداللہ، پیپلز کانفرنس کے سجاد لون، محبوس سابق قانون ساز انجینئر رشید اور پی ڈی پی کے فیاض میر کے درمیان ہی ہوگا۔
بارہمولہ لوک سبھا باقی سیٹوں کے مقابلے اچھے ووٹر ٹرن آوٹ کے لئے جانی جاتی ہے۔ سال 2019 میں اس لوک سبھا سیٹ کے لئے 34.17 فیصد پولنگ ریکارڈ ہوئی تھی۔