الیکشن کمیشن بھاجپا کے اشارے پر ہی جموں وکشمیر میں انتخابات کرائے گا:محبوبہ مفتی

سری نگر// پی ڈی پی صدر اور سابق وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی کا کہنا ہے کہ الیکشن کمیشن بی جے پی کا ایک کٹھ پتلی ہے اور اسی پارٹی کے اشارے پر جموں وکشمیر میں انتخابات کے انعقاد کا اعلان کرے گا۔
انہوں نے کہا کہ موجودہ سرکار صرف ووٹ بٹورنے کے لئے کشمیری پنڈتوں کے دکھ درد کا استعمال کرتی ہے ورنہ اس پارٹی کو کسی کی کوئی فکر نہیں ہے۔
ان کا کہنا تھا کہ کشمیری پنڈت پچھلے کئی ماہ سے جموں میں احتجاج کر رہے ہیں تو کبھی ان کی تنخواہ بند کی جاتی ہے تو کبھی راشن بند کیا جاتا ہے۔
موصوف سابق وزیر اعلیٰ نے ان باتوں کا اظہار ہفتے کو جنوبی کشمیر کے بجبہاڑہ علاقے میں نامہ نگاروں کے سوالوں کا جواب دینے کے دوران کیا۔
انہوں نے کہا،”موجودہ سرکار نے ہر چیز کو الٹ پلٹ کرکے رکھا دیا ہے ہمارے کشمیری پنڈت پچھلے کئی ماہ سے جموں میں در بدر ہیں کبھی ان کی تنخواہ بند کی جاتی ہے تو کبھی ان کا راشن بند کیا جاتا ہے”۔
ان کا کہنا تھا،”بی جے پی صرف ووٹ بٹورنے کے لئے ان کے دکھ درد کا استعمال کرتی ہے ورنہ اس جماعت کو کسی کی کوئی فکر نہیں ہے، یہ لوگ صرف الیکشن جیتنا چاہتے ہیں اس کے علاوہ ان کی کوئی سیاست نہیں ہے”۔
جموں وکشمیر میں انتخابات کے انعقاد کے بارے میں پوچھے گئے ایک سوال کے جواب میں محبوبہ مفتی نے کہا یہ الیکشن کمیشن کا کام ہے اور اس سے زیادہ بی جے پی کا کام ہے کیونکہ الیکشن کمیشن بی جے پی کا ایک برانچ بن گیا ہے۔
انہوں نے کہا،”الیکشن الیکشن کمیشن بی جے پی کا کٹھ پتلی بن گیا ہے جب بی جے پی اس کو اشارہ کرے گی تب وہ یہاں الیکشن منعقد کرانے کے لئے اعلان کرے گا”۔
ان کا کہنا تھا کہ ہمارے الیکشن کمیشن پر ملک کو فخر تھا کیونکہ اس کو باہر کے ممالک بلاتے تھے کہ الیکشن کیسے کرانے ہیں۔