تازہ ترین

مکانوں اور عمارت کی تعمیرکے اجازت ناموں میں تاخیر | ایس ایم سی میں سینکڑوں درخواستیں منظوری کیلئے دھول چاٹ رہی ہیں

سرینگر //سرینگر شہر میں مکانات کی تعمیر کیلئے اجازت نامہ جاری کرنے میں غیر ضروری تاخیر سے لوگوں کو سخت مشکلات کا سامنا کرناپڑرہاہے۔ تعمیراتی کاموں کیلئے اجازت نامہ میں تاخیر جموں و کشمیر مونسپل کارپوریشن ایکٹ کی خلاف ورزی ہے جس میں دائر درخواست دینے کے بعد صرف 2ماہ کے اندر اندر اجازت نامہ دینا لازمی ہے۔ سرینگر میونسپل کارپوریشن میںسینکڑوں کیس پچھلے کئی ماہ سے التواء میں پڑے ہوئے ہیں جبکہ چند فائلیں پچھلے ایک سال سے دفتر میں دھول چاٹ رہی ہیں۔ ایس ایم سی کو سرینگر میں رہائشی اور کمرشیل مقاصد کیلئے تعمیر ہونے والی عمارتوں کیلئے اجازت نامہ جاری کرنا ہوتا ہے لیکن اجازت نامہ حاصل کرنے کیلئے لوگوں کو کئی ماہ تک میونسپلٹی میں دھکے کھانے پڑتے ہیں۔ ایک درخواست دہندہ نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بتایا ’’منظور شدہ فارم پر میں نے 8ماہ قبل درخواست دی ہے، تمام لوازمات پوری کی گئی اور تما

سرینگرمیں شہریوں کو پینے کے صاف پانی کی فراہمی خواب | 5 سکیموں پر برسوںسے کام ٹھپ،عوام حالات کے رحم وکرم پر

سرینگر// سرینگر میں پینے کے پانی کی قلت کے بیچ اس بات کا انکشاف ہوا ہے کہ محکمہ کی جانب سے شہر اور اس کے مضافات میںپانی کی 5اسکیموں پر کام ٹھپ ہے۔ وادی کے دیگر اضلاع سمیت سرینگر میں گزشتہ2ماہ سے پینے کے پانی کی قلت کا سامنا ہے تاہم حکام کی جانب سے شہر میں پینے کے پانی کی قلت کو دور کرنے کیلئے شروع کی گئی پانی کی 5اسکیموں پر یا تو کام ٹھپ ہوگیا ہے یا ان میں سست رفتاری سے کام جاری ہے۔کشمیر عظمیٰ کے پاس موجود سرکاری دستاویزات کے مطابق یہ اسکیمیں متعلقہ محکمہ نے اپریل2018سے اگست2020کے درمیان شروع کی۔ان اسکیموں میں سعد پورہ درباغ، فقیر گجری دارا،رکھ زکورہ، تکیہ سنگرشی اور چک دارا شامل ہیں۔ دستیاب اعداد وشمار کے مطابق سعد پورہ در باغ میں پینے کے پانی کی اسکیم کی منظوری 1کروڑ 28 لاکھ 26ہزار روپے کی لاگت سے منظور کی گئی تھی تاہم ابھی تک اس اسکیم پر ایک روپیہ بھی خرچ نہیں کیا گیا۔ دستاویزات کے

کھمبرحضرتبل میں امناک حادثہ | چنار کی شاخ گرنے سے نوجوان لقمۂ اجل

سرینگر///کھمبرحضرت بل میں ایک المناک حادثہ میں بوسیدہ چنار کی شاخ گرنے سے 32 سالہ آٹو ڈرائیور لقمہ اجل بن گیا۔ عینی شاہد شبیر احمد ریشی نے اس بارے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ کھمبر میں موجود خلفائے راشدین جامع مسجد کے قریب آٹو ڈرائیور روف احمد بٹ ولد غلام محمد ساکنہ دلال محلہ زینہ کدل سرینگر آٹو میں ریڈی میڈ کپڑے لاکر فروخت کررہا تھا کہ ڈیڑھ بجے دوپہر اچانک چنار سے ایک بوسیدہ شاخ آٹو پر گرآیا جس کے نتیجہ میں مذکورہ شہری کی موقع پر ہی موت واقع ہوگئی۔ اس موقعہ پر پولیس کو اطلاع دی گئی جنہوں نے لاش کو اپنی تحویل میں لیکر قانونی لوازمات مکمل کرکے لاش وارثین کے سپرد کردی۔مذکورہ نوجوان کی نعش جب زینہ کدل لائی گئی تو وہاں کہرام مچ گیا۔  

سخت سردی میں سنڈے مارکیٹ میں لوگوں کا رش | گرم ملبوسات اوردیگر اشیائے ضروریہ کی جم کر خریداری کی

 سرینگر//سردی کے باوجود سنڈے مارکیٹ میں لوگوں نے ملبوسات اور دیگر سازوسامان کی جم کرخریداری کی۔ لالچوک، گھنٹہ گھر، ہری سنگھ ہائی اسٹریٹ اور پولو گراونڈ کے علاوہ دیگر علاقوں کے بازاروں میں لوگوں کا کافی رش تھا ۔سڑکوں پر جگہ جگہ چھاپڑی فروشوںنے چھاپڑیاں لگائی تھیں جن پر ملبوسات کے ساتھ ساتھ کھلونے کی چیزیں سجائی گئی تھیں۔ لالچوک میں لوگ صبح سے ہی خریداری کرنے میں مصروف رہے ۔چنانچہ دن گزرنے کیساتھ ساتھ لوگوں کی آمد میں اضافہ ہوا اور عوام ضرورت کے مطابق چیزیں خریدنے میں دکھائی دیئے۔ بھاری رش کی وجہ سے سڑکوں پر ٹریفک جام کے مناظر دیکھنے کو ملے جس کی وجہ سے لوگوں کو چلنے پھرنے میں دشواریوں کا سامنا کرنا پڑا۔شام ہوتے ہی قریب ساڑھے 5بجے پولیس کی گاڑی لالچوک میں آگئی اور چھاپڑی فروشوںکو اپنا سامنا سمیٹنے کا حکم دیا۔ اس موقعہ پر چھاپڑی فروشوں میں کھلبلی مچ گئی اور وہ اپنا سامان سمیٹنے لگے

شہرمیں گوشت نایاب | حکومت کے مقرر کردہ نرخوں کا شاخسانہ، گاہک پریشان

سرینگر //شہر سرینگرمیں گوشت نایاب ہے اور لوگوں کا قصابوں پر من مانی قیمتوںپر گوشت فروخت کرنے کا الزام ہے۔ صوبائی انتظامیہ کی جانب سے گوشت کی نرخیں مقرر کرنے کے بعد بازاروں سے غائب قصاب پوشیدہ جگہوں پر گوشت کو فروخت کررہے ہیں۔کشمیر نیوزٹرسٹ کے مطابق قصابوں کو جوابدہ بنانے اور سرکاری نرخ ناموں کی خلاف ورزی کی پاداش میں تادیبی کاروائی عمل میں لانے کے ساتھ ہی وادی میں گوشت نایاب ہوگیا ہے۔قصبوں اور بازاروں میں اکثر قصابوں کی دکانیں بند ہیںجبکہ مرغ گوشت کے کے نرخوں میں اضافہ ہونے سے صارفین پریشان ہوگئے ہیں۔ صوبائی انتظامیہ کی جانب سے گوشت کی قیمتیں مقرر کرنے اور ان نرخ ناموں کی خلاف ورزی کرنے والے قصابوں کے خلاف کاروائی عمل میں لانے کے بعد شہرمیں گوشت نایاب ہوگیا ہے۔ قصاب زائد از نرخوں پر گوشت بیچتے ہیں اور اب تک انتظامیہ نے متعدد قصابوں کے خلاف مقدمہ درج کیا ہے۔ ڈائریکٹر انفورسمنٹ مشتاق احم

حضرتبل سے لالچوک کے بس کرایہ میں یکطرفہ اضافہ | ٹرانسپورٹروں پر مسافروں کو دو دو ہاتھوںسے لوٹنے کاالزام

سرینگر //حضرت بل سے لالچوک تک مسافر گاڑیوں میں سفر کرنے والے لوگوں کو دو دو ہاتھ سے لوٹا جارہا ہے۔ حضرت بل سے لالچوک تک کے راستے جانے والے مسافروں کا کہنا ہے کہ ایک طرف مسافر گاڑیوں میں اوور لوڈنگ سے لوگوں کی جانوں کے ساتھ کھلواڑ کیا جارہا ہے تو دوسری جانب اضافی کرایہ وصول کیا جاتاہے۔ ان علاقوں میں رہنے والے لوگوں نے بتایا کہ حضرت بل سے رعناواری تک مسافر گاڑیوںکا کوئی مقرر ہ کرایہ نہیں ہے اور کنڈیکٹر اپنی مرضی سے کرایہ وصول کرتاہے ۔ سعیدہ کدل سے تعلق رکھنے والے ایک شہری مشتاق احمد نے بتایا ’’ کورونا وائرس سے قبل سعیدہ کدل سے حضرت بل تک 3کلو میٹر کے سفرکیلئے صرف 6روپے کرایہ تھا جس کو بس مالکان نے اپنے مرضی سے 13روپے کردیا ہے‘‘۔مشتاق احمد نے بتایا ’’ حکومت نے مسافر گاڑیوں کے مالکان کو ہدایت دی تھی کہ وہ صرف 50فیصد سواریاں اٹھانے کی صورت میں مسافروں سے

شاہ محلہ چھتہ بل میں اوڑی کے شہری کی پُراسرارموت | قانونی لوازمات مکمل کرکے میت وارثین کے سپرد

سرینگر//شاہ محلہ چھتہ بل میں اوڑی بارہمولہ کا 35 سالہ شہری پراسرار حالات میں مردہ پایا گیا۔شاہ محلہ چھتہ بل میں عبدالعزیز بٹ ولد غلام رسول کے مکان میں پچھلے دو ماہ سے منظور احمد میر ولد عبدالمجید ساکنہ اوڑی بارہمولہ کرایہ دار کی حیثیت سے رہائش پذیر تھا،ایتوار کی صبح پراسرار حالت میں مردہ پایاگیا۔اس موقعہ پر پولیس کو اطلاع دی گئی جنہوں نے موقع پر پہنچ کر لاش کو اپنی تحویل میں لیکر قانونی لوازمات مکمل کرنے کے لئے ہسپتال منتقل کردی۔پولیس نے تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ شاہ محلہ چھتہ بل میں ضلع بارہمولہ کے اوڑی کاشہری منظور احمد میر پچھلے دو ماہ سے کرایہ دار کے طور پررہائش پذیر تھا ،کمرے میں پراسرار طور پر مردہ حالت میں پایا گیا جو  کرن نگر علاقہ میں چائے کی دوکان چلاتا تھا۔قانونی لوازمات مکمل کرکے لاش وارثین کے سپرد کردی گئی اور ابتدائی طور پر 174 کے تحت کیس درج کرکے مزید تحقیقات شروع کردی

ہوپ کلاسز’’این ای ای ٹی‘‘طلاب کواعزاز سے نوازا

سرینگر//ہوپ کلاسس پرے پورہ نے اتوار کے روز 2019 اور 2020 میں ’’این ای ای ٹی‘‘ کے امتحانات میں اپنا نام درج کرنے والے130طلابکو اعزاز سے نوازا۔ شہر کے ایک ہوٹل میں منعقدہ تقریب کے دوران نے کامیابی کا جشن منایا۔اس موقعہ پر صورہ میڈیکل انسٹی چیوٹ کے ڈائریکٹر ڈاکٹر اے جی آہنگر نے اپنے خطاب میں طلباء کو اعزاز سے نوازنے کے بعد کہا کہ ’’یہ فخر کی بات ہے کہ ہوپ کلاس کے طلبا نے’’این ای ای ٹی‘‘ امتحانات میں بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کیا۔انہوں نے کہا’’ہمیں فخر ہے کہ طلبا نے امتحانات میں شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے اور ان کا مستقبل ایک نئی سمت کی طرف بڑا ہے۔ انہوں نے کہا کہ مجھے یقین ہے کہ جن طلبا کو یہاں اعزاز سے نوازا جا رہا ہے وہ نہ صرف طب میں مستقبل تلاش کر رہے ہیںبلکہ انجینئرنگ ، ٹکنالوجی ، صحافت ، آئی ٹی ، بزنس مین

کشمیر پنڈت سنگھرش سمیتی کی تادم مرگ بھوک ہڑتال کا پہلا مرحلہ ختم | حکومت پر مطالبات کو پورا کرنے میں لیت ولعل کرنے کا الزام

سرینگر//کشمیر پنڈت سنگھرش سمیتی کے ممبران نے دوسرے مرحلے میں مبینہ طور پر جموں کشمیر کی انتظامیہ کی جانب سے اعلی انتظامیہ،مرکزی حکومت ،ہائیکورٹ اور اعلیٰ حکام کی جانب سے سفارشات اور ہدایات کو سبوثاژ کرنے کے خلاف تا دم مرگ بھوک ہڑتال کے168گھنٹے مکمل کئے۔کشمیر پنڈت سنگھرش سمیتی کا کہنا ہے کہ مرکزی زیر انتظام علاقے کی انتظامیہ کی جانب سے یقین دہانی کرائی جانے کے بعد ہی انہوں نے بھوک ہڑتال تا دم مرگ کا پہلا مرحلہ ختم کیا تھا۔انہوں نے کہا کہ انتظامیہ نے تمام مطالبات کو تسلیم کیا تھا اور غیر مہاجر کشمیری پنڈت طبقے کے وسیع تر مفاد میںان پر زمینی سطح پر صفر پر عملدرآمد کیا گیا۔ان کا کہنا ہے کہ وہ کشمیرمیں گذشتہ 30 برسوں کے دوران تمام مشکلات کا سامنا کر رہے ہیں۔کشمیر پنڈت سنگرش سمھتی اس بات پر برہم ہے کہ جموں کشمیر انتظامیہ اس معاملے کو جس طرح نپٹ رہی ہے، اس سے واضح طور پر وادی کشمیر میں مقیم

حریت (ع) کا میرواعظ عمر فاروق کے چچا کے انتقال پر اظہار رنج

سرینگر//حریت کانفرنس (ع)نے نظر بند رکھے گئے حریت چیئرمین میرواعظ عمر فاروق کے چچا مولوی علی محمد جان سکونت کرسو راجباغ سرینگر کی وفات پر رنج و غم اور افسوس کااظہارکیا ہے۔ مولوی علی محمد جان میرواعظ محمد فاروق کے برادر اکبر تھے۔حریت (ع) نے اس سانحہ پر میرواعظ اور مرحوم مولوی علی محمد جان کے فرزندان مولوی خالد عمر اور مولوی حامد علی کے ساتھ تعزیت اور تسلیت کا اظہار کیا ہے۔بیان میں کہا گیا کہ میرواعظ خاندان کے اکابرین نے روز اول سے جموںوکشمیر کے عوام میں دینی ،سیاسی، سماجی اور تعلیمی شعور بیدار کرنے میں ایک تاریخ ساز کردار رہا ہے جس کی وجہ سے اس موقر خاندان کو قدرو منزلت کی نگاہ سے دیکھا جاتا ہے۔بیان میں مولوی علی محمد جان کی سماج کے تئیں خدمات کو زبردست خراج عقیدت ادا کرتے ہوئے بارگاہ رب ایزدی میں دعا کی گئی کہ و ہ میرواعظ سمیت مرحوم کے فرزندان اور پسماندگان کو یہ صدمہ برداشت کرنے کی توف

تازہ ترین