تازہ ترین

کافی عرصہ بعدسنڈے مارکیٹ میں خریداروں کاہجوم | لوگوں کی کثیر تعداد نے مختلف اشیاء کی جم کرخریداری کی

سرینگر//سنڈے مارکیٹ آج ایک بار پھر کھل گیا جہاں لوگوں کی بڑی تعداد نے مختلف اشیاء  اورموسم سرماء قریب آنے کے پیش نظر گرم ملبوسات کی جم کر خریداری کی ۔ مارکیٹ میں خواتین اور بچوں کا بھاری رش دیکھنے کو ملا۔ادھر معلوم ہوا ہے کہ کووِڈ - 19کی وبائی بیماری نمودار ہونے کے بعد اس مارکیٹ میں لوگوںکی تعداد کم دیکھی جارہی تھی تاہم آج لوگوں کا کافی رش دیکھنے کو ملا۔ گزشتہ روز بارش کے بعد آج موسم میں بہتری کے ساتھ ہی سیاحوں کے استقبالیہ مرکزسے لیکر مہاراجہ بازار امیرا کدل تک سڑک کے دونوں جانب سینکڑوں چھاپڑی فروشوں نے مال سجایا جس میں گرم ملبوسات، کمبل اور دیگر سازوسامان شامل تھا ۔ موسم میں بہتری کے ساتھ ہی بعد دوپہر ہزاروں لوگ سنڈے مارکیٹ پہنچے جن میں خواتین اور بچے بھی شامل تھے ۔ سنڈے مارکیٹ میں خواتین نے کئی طرح کے چیزوں کی جم کر خریداری کی جن میں زیادہ تر گرم ملبوسات شامل ہیں ۔ سنڈے مار

کشمیری زبان کے معروف مصنف ڈاکٹر عزیز حاجنی فوت

سرینگر// معروف قلمکار ، کشمیری شاعر ،مصنف اور جموں کشمیر کلچرل اکادمی کے سابق سیکریٹری ڈاکٹر عزیر حاجنی64  برس کی عمر میں انتقال کرگئے۔ڈاکٹر حاجنی 1957 میں سوناواری کے حاجن علاقہ میں پیدا ہوئے تھے۔انہوں نے ابتدائی تعلیم حاجن میں حاصل کی اورگورنمنٹ ڈگری کالج بمنہ سے گریجویشن کی۔ انہوں نے کشمیر یونیورسٹی سے کشمیری زبان میں آنرز کی ڈگری حاصل کی۔ وہ کشمیری زبان کے زمرے میں یونیورسٹی سے گولڈ میڈل حاصل کرنے والوں میں پہلے سکالرتھے۔ڈاکٹر عزیز حاجنی نے 2017 میں کشمیر یونیورسٹی سے پی ایچ ڈی کی ڈگری حاصل کی۔ پی ایچ ڈی سے پہلے موصوف نے قومی اہلیت ٹیسٹ (این ای ٹی) کوالیفائی کیا۔ وہ ایک کشمیری مصنف ، شاعر ، نقاد اور نئی دہلی کے شمالی علاقائی بورڈ کے لئے ساہتیہ اکادمی کے کنوینر تھے۔ انہوںنے اسسٹنٹ پروفیسر کی حیثیت سے خدمات انجام دیں اور کشمیر یونیورسٹی کے شیخ العالمؒ مرکزمیں اپنی سبکدوشی 2019ت

کشمیری زبان کے معروف مصنف ڈاکٹر عزیز حاجنی فوت

سرینگر// معروف قلمکار ، کشمیری شاعر ،مصنف اور جموں کشمیر کلچرل اکادمی کے سابق سیکریٹری ڈاکٹر عزیر حاجنی64  برس کی عمر میں انتقال کرگئے۔ڈاکٹر حاجنی 1957 میں سوناواری کے حاجن علاقہ میں پیدا ہوئے تھے۔انہوں نے ابتدائی تعلیم حاجن میں حاصل کی اورگورنمنٹ ڈگری کالج بمنہ سے گریجویشن کی۔ انہوں نے کشمیر یونیورسٹی سے کشمیری زبان میں آنرز کی ڈگری حاصل کی۔ وہ کشمیری زبان کے زمرے میں یونیورسٹی سے گولڈ میڈل حاصل کرنے والوں میں پہلے سکالرتھے۔ڈاکٹر عزیز حاجنی نے 2017 میں کشمیر یونیورسٹی سے پی ایچ ڈی کی ڈگری حاصل کی۔ پی ایچ ڈی سے پہلے موصوف نے قومی اہلیت ٹیسٹ (این ای ٹی) کوالیفائی کیا۔ وہ ایک کشمیری مصنف ، شاعر ، نقاد اور نئی دہلی کے شمالی علاقائی بورڈ کے لئے ساہتیہ اکادمی کے کنوینر تھے۔ انہوںنے اسسٹنٹ پروفیسر کی حیثیت سے خدمات انجام دیں اور کشمیر یونیورسٹی کے شیخ العالمؒ مرکزمیں اپنی سبکدوشی 2019ت

کشمیری زبان کے معروف مصنف ڈاکٹر عزیز حاجنی فوت

سرینگر// معروف قلمکار ، کشمیری شاعر ،مصنف اور جموں کشمیر کلچرل اکادمی کے سابق سیکریٹری ڈاکٹر عزیر حاجنی64  برس کی عمر میں انتقال کرگئے۔ڈاکٹر حاجنی 1957 میں سوناواری کے حاجن علاقہ میں پیدا ہوئے تھے۔انہوں نے ابتدائی تعلیم حاجن میں حاصل کی اورگورنمنٹ ڈگری کالج بمنہ سے گریجویشن کی۔ انہوں نے کشمیر یونیورسٹی سے کشمیری زبان میں آنرز کی ڈگری حاصل کی۔ وہ کشمیری زبان کے زمرے میں یونیورسٹی سے گولڈ میڈل حاصل کرنے والوں میں پہلے سکالرتھے۔ڈاکٹر عزیز حاجنی نے 2017 میں کشمیر یونیورسٹی سے پی ایچ ڈی کی ڈگری حاصل کی۔ پی ایچ ڈی سے پہلے موصوف نے قومی اہلیت ٹیسٹ (این ای ٹی) کوالیفائی کیا۔ وہ ایک کشمیری مصنف ، شاعر ، نقاد اور نئی دہلی کے شمالی علاقائی بورڈ کے لئے ساہتیہ اکادمی کے کنوینر تھے۔ انہوںنے اسسٹنٹ پروفیسر کی حیثیت سے خدمات انجام دیں اور کشمیر یونیورسٹی کے شیخ العالمؒ مرکزمیں اپنی سبکدوشی 2019ت

تازہ ترین