سرینگر میں قصاب اور مرغ فروش حاکم بن گئے

سرینگر// لاک ڈائون کے بیچ عید الفطرکی آمد کے پیش نظر جیسے شہر سرینگر میں انتظامیہ تھک گئی ہے اور اس نے شہر میں مرغ اور گوشت کی من مانے ڈھنگ سے فروخت کرنے کی کھلی ڈھیل دی ہے۔ فروغ فروشوں اور قصابوں نے شہر میں عام لوگوں کی گردنوں پر چھری چلانے کا سلسلہ شروع کردیا ہے اور ایسا سرینگر کے سبھی علاقوں میں کیا گیا ہے۔سرینگر میں گوشت 600یا 650کے نرخ سے فروخت ہورہا ہے جبکہ مرغ کی قیمت فی کلو 175روپے رکھی گئی ہے۔حالانکہ گوشت کی سرکاری نرخ فی کلو 440روپے اور مرغ کی فی کلو قیمت 110روپے مقرر ہے۔ مئی کے وسط سے قصابوں نے دکانوں کے بجائے اپنے گھروں میں گوشت بیچنے کا عمل شروع کیا اور پائین شہر میں کہیں 700روپے بھی فی کلو گوشت فروخت کیا گیا۔اسکے بعد قصابوں نے مال کی کمی کا رونا رو کر 50روپے کم کر کے 650روپے کا نرخ مقرر کیا اور اب پورے شہر سرینگر میں ہر جگہ 600روپے کے حساب سے گوشت فروخت ہورہا ہے۔ صارفین

تازہ ترین