جنگلی جانوروں کے حملے | محکمہ وائلڈ لائف خاموش تماشائی کیوں؟

گزشتہ دنوںکولگام میں تیندوے کے حملہ میں زخمی ہوا معمر شہری زخموںکی تاب نہ لاکر ایک روز چل بسا جبکہ کل بھی کولگام ضلع میں ایک تیندوا پکڑا گیا جس نے علاقہ میں ادھم مچا کر رکھی تھی۔ یہ تو کولگام کی بات ہوئی ۔حد تو یہ ہے کہ شہر کے مختلف علاقوں میں بھی گزشتہ کچھ عرصہ سے جنگلی جانوروں کی موجودگی کی خبریں آرہی ہے۔ گزشتہ دنوںسرینگر کے بالائی علاقہ باغ مہتاب میں تیندوے کو دن کے اجالے میں گلی کوچوں میں گھومتے ہوئے دیکھاگیاتھا جبکہ اس کے بعد ہمہامہ علاقہ میں بھی ایسی ہی صورتحال درپیش آئی جہاں تیندوے نے ایک کمسن بچی کو اپنا نوالہ بنایا۔ ستم ظریفی یہ ہے کہ یہ پہلا واقعہ نہیں ہے جب شہر میں بھی جنگلی جانوروں کو دیکھاگیا ہو بلکہ گزشتہ ایک سال کے دوران کئی بار شہر اور ا س کے مضافات میں جنگلی جانوروں کو دیکھاگیا ہے جبکہ دیہات کا خدا ہی حافظ ہے لیکن وائلڈ لائف محکمہ اپنے روائتی انداز میں محض زبانی جمع

تازہ ترین