تازہ ترین

غربت مٹائیں ،غریبوں کو نہیں

 غریبی کی سطح سے نیچے زندگی گزربسر کرنے والے جموں وکشمیر کے 13لاکھ لوگ موجودہ مہنگائی کے دور میں بنیادی اشیاء کے حصول کیلئے جدوجہد کر رہے ہیں اور حکومت ان کے مسائل سے لاتعلق ہے۔ اعدادوشمار کے مطابق جہاں 2009-10میں جموںوکشمیر میں غربت کی شرح 9.4فیصد تھی وہیں2011-12میں یہ شرح بڑھ کر 10.35فیصد تک پہنچ گئی ۔تشویشناک امر یہ ہے کہ سطح افلاس سے نیچے گزر بسر کرنے والوں کی تعداد میں زیادہ اضافہ دیہی علاقوں میں دیکھنے کو ملا ہے جہاں پہلے یہ شرح محض8.1فیصد تھی اور اب یہ بڑھ کر11.5فیصد تک پہنچ گئی ۔رپورٹ میں کہاگیا ہے کہ جموں و کشمیر میں 23.27لاکھ لوگ غریبی کی سطح سے نیچے زندگی بسر کررہے ہیں جن میں سے 10.73دیہی اور2.53لاکھ شہری علاقوں میں آباد ہیں۔سوال پیداہوتا ہے کہ غریبی کے خاتمہ کے لئے مرکز کی جانب سے چلائی جارہی کئی اسکیموں کے باوجود ریاست میں غرباء کی تعداد میں کمی کے بجائے اضافہ کیوں ہ

تازہ ترین