اقامتی سند کی اجرائی کے قواعد وضوابط

بالآخر وہ ہو کر ہی رہ گیا جس کا 5اگست2019سے انتظار کیاجارہا ہے۔ پشتینی باشندگی سند بالآخر ختم کردی گئی اور اس کی جگہ اقامتی سند متعارف ہوگئی جس کی اجرائی کیلئے گزشتہ روز باضابطہ گیزٹ نوٹیفکیشن کے ذریعہ قواعد وضوابط جاری کئے گئے ۔یہ قواعد و ضوابط کم و بیش وہی ہیں جو مرکزی حکومت نے اقامتی سند کی اجرائی کے قانون میں وضع کئے تھے ۔فرق صرف اتنا ہے کہ اب صراحت کے ساتھ بیان کیاگیا ہے کہ نوکریوںکے حصول کیلئے اقامتی اسناد کی حصولی کیسے ممکن بن پائے گی اور اس کی اجرائی کا کیا طریقہ کار رہے گا۔قواعد و ضوابط کے مطابق31اکتوبر2019تک جن افراد کے حق میں جموںوکشمیر میں پشتینی باشندگی اسناد جاری کی گئیں، وہ اقامتی سند کے حصول کے اہل ہونگے اور انہیں صرف یہ سند دکھانا ہوگی، جس کے عوض انہیں اقامتی سند ملے جبکہ انکے بچوں کو والدین کی پشتینی باشندگی سند اور اپنی سندِ تاریخ پیدائش دکھا نا ہوگی جس کے عوض وہ ا

تازہ ترین