سڑک حادثات … انسانی جانوں کا ضیاع کب رُکے گا؟

 سرکاری اعدادوشمار کے مطابق جموں سرینگر قومی شاہراہ پر گزشتہ ایک دہائی کے دوران 8ہزار سڑک حادثات رونما ہوئے ہیں جن میں1750انسانی جانیں تلف ہوئی ہیںجبکہ12,131لوگ ان حادثات میں زخمی ہوچکے ہیں۔یہ اعداد وشمار اپنے آپ میں بتارہے ہیں کہ جموں وکشمیر میں ٹریفک کنٹرول کا نظام اپنی ابتری کی انتہاء کو پہنچ چکاہے۔ایسا کوئی دن نہیں گزرتا جب کسی نہ کسی علاقے سے سڑک حادثات میں انسانی زندگیوں کے اتلاف کی خبریں موصول نہ ہوتی ہوں۔اس طرح کی اموات اب معمول اور معمولات کا حصہ بنتا جارہا ہے اور یہی وجہ ہے کہ اخبارات میں بھی حادثاتی اموات کی خبریں سرسری طور شائع کی جاتی ہیں۔ایسا نہیں ہے کہ سڑک حادثات صرف ہمارے یہاں ہی رونما ہورہے ہیں۔ سڑک حادثات دنیا کے ہر خطے میں رونما ہوتے ہیں اور ان میں انسانی جانوں کا اتلاف بھی ہوجاتا ہے لیکن پریشان کن بات یہ ہے کہ جموںوکشمیر میں تسلسل کے ساتھ ہر دن حادثاتی اموات ک

تازہ ترین