تازہ ترین

بوٹنگو سوپورمیں 12برس کی لڑکی نے خودکو پھانسی دی

سوپور//غلا م محمد//جمعہ شام کو سوپور میں ایک بارہ برس کی لڑکی نے خودکوپھانسی پرلٹکاکراپناکام تمام کیا۔اطلاعات کے مطابق بوٹنگو سوپورکی(نام مخفی) لڑکی نے اپنے گھر میں جمعہ شام کو خودکو پھانسی پر لٹکایا۔گھر کے افراد نے اُسے فوری طور سب ضلع اسپتال سوپرپہنچایا جہاں ڈاکٹروں نے اُسے مردہ قراردیا۔پولیس کے مطابق اس سلسلے میں کیس رجسٹر کرکے تحقیقات شروع کی گئی ہے ۔اس دوران مقامی لوگوں کے مطابق اس لڑکی کاباپ گزشتہ برس فوت ہوااوراس کی ماں نے دوسری شادی کرلی اوراُسے گھر میں اکیلے چھوڑا۔ذرائع کے مطابق لڑکی کے اس انتہائی قدم کی وجہ مایوسی ہوسکتی ہے۔

سڑک پروجیکٹوں کی تعمیر میں سرعت لانے کی بھٹناگر کی ہدایت

سری نگر//لیفٹیننٹ گورنر کے مشیر راجیو رائے بھٹناگر نے  اعلیٰ سطحی میٹنگ کی صدارت کے دوران جموںوکشمیر میں مختلف ایجنسیوں کی جانب سے تعمیر کی جارہی پی ایم ڈی پی سڑک پروجیکٹوں پر جاری کام کی پیش رفت کا جائزہ لیا۔ میٹنگ میں پبلک ورکس ڈیپارٹمنٹ کے پرنسپل سیکرٹری شیلندر کمار ، چیف انجینئر آر اینڈ بی کشمیر شوکت جیلانی ، آر او  این ایچ اے آئی ہیم راج، بی آر  او  اور دیگر اَفسران  موجود تھے جبکہ این ایچ آئی ڈی سی ایل ، بیکن اور دیگر متعلقہ اَفسران اور نمائندوں نے بذریعہ وِیڈیو کانفرنسنگ میٹنگ میں شرکت کی۔دوران میٹنگ بڑے شاہراہ پروجیکٹوں اور دیگر بڑی سڑکوں پر جاری موجودہ صورتحال پر مفصل غور و خوض ہوا اور ان پروجیکٹوں میں حائل رُکاوٹوں پر بھی بحث و تمحیص ہوئی۔ایم ایچ آئی ڈی سی ایل کی جانب سے تعمیر کی جارہی جموں ۔ اکھنور سڑک، چنانی ۔ سدھ مہادیو ۔گوہا سڑک ، بٹوت ۔ کھی

ملازمین کی جبری سبکدوشی پر سیاسی رہنمائوں کا شدید ردعمل

سری نگر//جموں کشمیر کے ملازمین کو 48برس کی عمر یا22سال نوکری کرنے کے بعد حکومت کی طرف سے سبکدوش کئے جاسکنے کے حالیہ فیصلے کی سیاسی رہنمائوں نے شدید مذمت کرتے ہوئے اِسے آمرانہ اور ملازمین کے مفادات کے منافی قرار دیا ہے ۔نیشنل کانفرنس کے جنرل سیکریڑی علی محمد ساگر نے کہاملازمین کواڑتالیس سال کی عمر میں سبکدوش کرنے کرسکنے کاحکومت کا حالیہ فیصلہ کوئی معمولی کارروائی نہیں بلکہ ایک منصوبہ بند سازش کا حصہ ہے اور اِسے سنجیدگی سے نہ لینا بہت بڑی غلطی ہوگی۔انہوں نے کہا کہ کل ایک اور حکمانے کے ذریعے حکومت کو اس بات کا مجاز بنایا گیا کہ وہ ملازمین کو 48سال کی عمر میں سبکدوش کرسکتی ہے۔ یہ فیصلہ کوئی معمول کی کارروائی نہیں بلکہ ایک منصوبہ بند سازش کا حصہ ہے اور اسے سنجیدگی سے نہ لینا بہت بڑی غلطی ہوگی۔ انہوں نے کہاکہ آئے روز ایسے فیصلوں سے لوگ زبردست پریشانیوں میں مبتلا ہوگئے ہیں۔ کمیونسٹ پارٹی آ

انتظامیہ کے قول وفعل میں تضاد:این سی

سرینگر// جموں وکشمیر کے لوگ اس وقت گوناگوں مسائل اور مشکلات سے دوچار ہیں ، تعمیر و ترقی کا کہیں نام و نشان نہیں، بجلی اور پانی کی سپلائی بد سے بدتر ہوتی جارہی ہے،بے روزگاری اور بے کاری عروج پر ہے جبکہ مہنگائی اور کساد بازاری نے عوام کی کمر توڑ کر رکھ دی ہے۔ انتظامیہ کی طرف سے ذرائع ابلاغ میں خبروں اور شترمرغ نما اشتہارات میں جو بلند بانگ دعوے کئے جارہے ہیں ،وہ سب فرضی ہے۔اس بات کااظہار نیشنل کانفرنس کے جنرل سیکریٹری علی محمدساگر نے پارٹی ہیڈکوارٹر پر مختلف اضلاع سے آئے وفود کے ساتھ تبادلہ خیال کرنے کے دوران کیا۔ علی محمد ساگر نے کہا کہ انتظامیہ کے قول و فعل میں آئے روز تضاد دیکھنے کو مل رہا ہے، آئے روز نت نئے حکمانے اور فیصلے لئے جارہے ہیں اور پھر واپس لئے جاتے ہیں۔ پہلے پراپرٹی ٹیکس کیلئے راہ ہموار کی گئی اور بعد میں یہ کہاگیا کہ پراپرٹی ٹیکس نہیں لیاجائیگا۔ اگر ایسا ہے تو پھر اس ک

ای اسٹامپنگ میں مقامی اسٹامپ فروشوں کو شامل کیا جائے:اپنی پارٹی

سرینگر//اپنی پارٹی کے سینئر نائب صدر غلام حسن میر نے غیر منصوبہ بند اور غلط طریقہ سے ای اسٹامپنگ کے اطلاق پر گہری تشویش کا اظہار کیا ہے جس کی وجہ سے  پورے جموں وکشمیر میں 28000سے زائد کنبہ جات کی روزی روٹی چھن گئی ہے۔ ایک بیان میں میر نے کہاکہ ای اسٹامپنگ کو متعارف کرنے سے جموں وکشمیر میں ہزاروں کنبے متاثر ہوئے ہیں، کیونکہ مقامی اسٹامپ فروشوں کا انحصار اسٹامپ فروخت کی کمائی پر تھا، جو اب بے روزگار ہوگئے ہیں۔ میر نے کہاکہ اگرچہ تکنیکی ترقی کی وجہ سے ای اسٹامپنگ عمل وقت کی ضرورت ہے جو محفوظ ہے اور اِس میں چھیڑچھاڑ کی گنجائش نہیں ہوتی ،اس سے گھوٹالوں کے علاوہ محصولات کے نقصانات کو روکاجا سکتا ہے ، لیکن حکومت کو چاہئے کہ الیکٹرانک اسٹامپنگ پروجیکٹ میں تبدیل ہونے سے پہلے مقامی اسٹامپ فروشوں کے روزگار کے مفادات کا تحفظ کرے۔ انہوں نے کہاکہ پالیسی سازوں کو ای اسٹامپنگ میں مقامی اسٹامپ فرو

جماعت اسلامی کے 2رہنما ضمانت پررہا

 سرینگر//عدالت کی طرف سے ضمانتی عرضی منظور ہونے کے بعد جماعت اسلامی  کے دورہنمائوں کو جیل سے رہا کر دیا گیا ۔ سی این آئی کے مطابق جماعت اسلامی کے ضلع صدر بانڈی پورہ محمد سکندر ملک ساکنہ گوڈی پورہ اور تحصیل صدر علی محمد شیخ ساکنہ اشٹنگو بانڈی پورہ کی ضمانتی عرضی منظور ہونے کے بعد انہیں جیل سے رہا کر دیا گیا ہے ۔ خیال رہے کہ دونوںرہنما سنیٹرل جیل سرینگر اور سب جیل بارہمولہ میںمقید تھے  اورد ونوں لیڈران کو غیر قانونی سرگرمیوں کی پاداش میںگرفتار کر لیا گیا تھا جس کے بعد انہیں پولیس اسٹیشن بانڈی پورہ سے ایک کو سب جیل بارہمولہ جبکہ دوسرے کو سنیٹرل جیل سرینگر منتقل کر دیا گیا تھا ۔ دونوں کے گھروالوں نے عدالت میں ان کی گرفتاری کو چیلنج کیا تھا جس کے بعد عدالت نے دونوں کی ضمانتی عرضی کو منظور کرکے ان کی رہائی کا حکم دیا تھا ۔

تُجرشریف سوپور میں ریسونگ سٹیشن کا اِفتتاح کیاگیا

بارہمولہ //آئندہ سردیوں کے موسم میں بجلی کی بلاتعطل فراہمی کی دستیابی کے ایک قدم کے طور پرلیفٹیننٹ گورنر کے مشیر لیفٹیننٹ بصیر احمد خان کے ہمراہ ضلع ترقیاتی کمشنر بارہمولہ ڈاکٹر جی این ایتو اور دیگر اعلیٰ افسران نے سوپور کے گائوں تُجر شر یف کا دورہ کیا ۔ اُنہوں نے وہاں6.3 ایم وی اے پاور ریسونگ سٹیشن کا اِفتتاح کیا ۔یہ دورہ عوامی رسائی پروگرام کے تحت لوگوں کو بنیادی سہولیات کی فرہاہی کے لئے حکومت کی کوششوں کا ایک حصہ ہے ۔مقامی لوگوں نے مشیر اور اِنتظامیہ کا اس منصوبے کی تعمیر اور مقررہ وقت پر مکمل کرنے پر شکریہ اَداکیا ہے ۔اس موقعہ پر چیف انجینئر کے پی ڈی سی ایل اعجاز احمد ڈار نے جانکاری دی کہ6.3  ایم وی اے گنجائش والاریسونگ سٹیشن 3.54 کروڑ روپے کی لاگت سے مکمل کیا گیا ہے ۔ اُنہوں نے کہا کہ یہ کام دو برس کی قلیل مدت میں مکمل کیا گیا ہے اور اس سے ملحقہ چار بڑے دیہاتوں کو بجلی فراہم

سوشل میڈیا پر بچوں کے بار ے میں فحش مواد پھیلانے کے مرتکبین کے خلاف کارروائی ہوگی:پولیس

سرینگر//سوشل میڈیا پر بچوں کی فحاشی سے متعلق مواد پھیلانے کے الزام میں سائبرپولیس سرینگر عنقریب کارروائی کررہی ہے ۔پولیس ذرائع کے مطابق سائبر پولیس اسٹیشن سرینگر کوگم ہوئے اوراستحصال کئے ہوئے بچوں کے قومی مرکزجو امریکہ کی ایک غیرسرکاری رضاکار تنظیم ہے ،کی طرف سے کشمیرمیں رہ رہے افراد کیخلاف شکایات موصول ہوئی ہیں کہ وہ سوشل میڈیا (فیس بک،انسٹاگرام،وٹس ایپ وغیرہ) پربچوں کی فحاشی کو پھیلا رہے ہیں۔گم ہوئے اور استحصال کئے ہوئے بچوں کے قومی مرکز(این سی ایم ای سی) کوشہریوں،خدمات فراہم کرنے والوں اوردیگر کی طرف سے اطلاعات موصول ہوتی ہیں جنہیں پھر قانون نافذکرنے والے اداروں کے ساتھ شیئر کیاجاتا ہے ۔ان شکایات کی بنیاد پر قانون کے متعلقہ دفعات کے تحت ایف آئی آر زیرنمبر21/2020سائبرپولیس اسٹیشن کشمیرمیں درج کیاگیااورتحقیقات شروع کی گئی ۔تحقیقات کے دوران یہ بات سامنے آئی کہ کشمیرمیںبچہ بازوں کی ک

ٹکر کپوارہ میں خواتین سڑکوں پر

کپوارہ// ٹکر کپوارہ میں خواتین نے پینے کے پانی کی عدم دستیابی کو لیکر احتجاج کیا، جس کے دوران کپوارہ کرالہ پورہ سڑک پر گا ڑیو ں کی آمد و رفت کئی گھنٹوں تک مسدود ہو کر رہ گئی ۔ ٹکر علاقے میں پہلے ہی پینے کے صاف پانی کی شدید قلت پیدا ہو گئی ہے، تاہم جمعہ کی صبح چوپان محلہ ٹکر کی خواتین اپنے گھرو ں سے باہر آئیں اور محکمہ جل شکتی کے خلاف زور دار احتجاج کیا ۔احتجاج میں شامل خواتین نے کشمیر عظمیٰ کو بتا یا کہ چو پان محلہ ٹکر گزشتہ ایک ہفتہ سے پینے کے پانی سے محروم ہے جس کی وجہ سے آبادی پانی کی ایک ایک بوند کیلئے ترس رہی ہے ۔احتجاجی خواتین کا کہنا تھا کہ انہوں نے اپنے گھرو ں کے سامنے چند کنویں پانی کے حصول کیلئے کھودے تھے ،لیکن امسال کی خشک سالی کی وجہ سے یہ کنویں بھی پوری طرح خشک ہو گئے ہیں ۔ان خواتین کا کہنا ہے کہ پانی کی عدم دستیابی کے نتیجے میں وہ ندی نالو ں سے گندہ پانی حاصل کرنے پر م

کرناہ کے سرکاری محکموں میں بنیادی ڈھانچے اور عملہ کی قلت

سرینگر // کرناہ کے سرکاری محکمہ جات میں سربراہاں اور فیلڈ عملے کی عدم موجودگی کے سبب نہ صرف تعمیراتی کام بری طرح سے متاثر ہو چکے ہیں، بلکہ فیلڈ عملہ بھی نہ ہونے کے نتیجے میں لوگوں کو طرح طرح کی مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے اور حکام اس پسماندہ علاقے میں عملے کو تعینات کرنے میں مکمل طور پر ناکام ہے ۔کرناہ میں تحصیلدار کی کرسی کئی ہفتوں سے خالی پڑی ہے ،گزشتہ ماہ سابق تحصیلدار کی سبکدوشی کے بعد ابھی تک نئے تحصیلدار کی تقرری عمل میں نہیں لائی گئی، جس کے نتیجے میں مقامی لوگوں خاص کر طلاب کو پہاڑی سپیکنگ، پوسٹ میٹرک ، اوراسکالر شپ کیلئے ضروری اثناد کی اجر ائی میں تاخیر ہو رہی ہے۔ مقامی لوگوں کا یہ مطالبہ ہے کہ علاقے میں تحصیلدار کو تعینات کیا جائے، تاکہ لوگوں کو مشکلات کا سامنا نہ کرنا پڑے۔اسی طرح بلاک ٹیٹوال میں بلاک ڈیولپمنٹ افسر کی کرسی بھی خالی ہے اور محکمہ دیہی ترقی اس اسامی کو پُر کرن

ترال کاعوام محکمہ تعمیرات عامہ سے خفا

ترال //جہاں ایک طرف گور نر انتظامیہ عوام کو آسائش پہنچانے کیلئے مختلف قسم کے اقداما اٹھا رہی ہے، وہیں دوسری جانب جنوبی کشمیر کے ترال میں عوامی اہمیت کے حامل کئی پروجیکٹ منظوری کے بعد محکمہ آر اینڈ بی کی نا اہلی کی وجہ سے منسوخ ہو ئے ہیں یا کئی سال گزر جانے کے باوجوو ان پر کام شروع نہیں کیا گیا ،جس پر مقامی لوگوں نے سخت غم و غصے کا اظہار کر کے گورنر انتظامیہ سے فوری مداخلت کی اپیل کی ہے ۔سب ضلع کے تحصیل آر پل کے تحت آنے والے علاقے دیدارپورہ (گٹنگو) اور جواہر پورہ لام نالے پر پل کی عدم دستیابی کی وجہ سے علاقے کی آبادی کو طرح طرح کے مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے ۔اس دوران مزکورہ آبادی کے مسائل کو کئی مرتبہ میڈیا میں بھی اُجا گر کیا گیا ہے ،جس کے بعد 2سال قبل انتظامیہ نے خبروں کا سنجیدہ نوٹس لیتے ہوئے نالہ لام پر پل تعمیر کرنے کیلئے ایک ٹنڈر  جاری کیا اور کام ایک مقامی ٹھیکہ دا

مزید خبرں

کامگاروں کے لواحقین کے حق میں اڑھائی کروڑ کی مالی مدد کومنظوری سری نگر//لیفٹیننٹ گور نرکے مشیر فاروق خان نے تعمیراتی کامگاروں او ران کے لواحقین کے حق میں موت و آخری رسومات امداد او ردائمی امراض کے لئے مالی معاونت سکیم کے تحت 2.50کروڑ روپے کی مالی معاونت منظور کی۔سکیم کے تحت خان نے 90اَموات معاملات، 20دائمی امراض اور زخمی معاملات کو منظوری دی ۔منظور کی گئی رقم عنقریب جموںوکشمیر عمارتی اور دیگر تعمیراتی ورکرس ویلفیئر بورڈکی جانب سے واگزار کی جائے گی۔اس موقعہ پر اپنے خیالا ت کا اِظہا رکرتے ہوئے مشیر خان نے کہا کہ تمام اِلتوا ٔمیں پڑے معاملات کو منظور کرنے کا عمل شروع کی گیا ہے اور گزشتہ تین ماہ کے دوران زیادہ سے زیادہ اِلتوأمیں پڑے معاملات کو نمٹایا گیا۔      ٹریڈ الائنس کامحکمہ اسٹیٹ ٹیکس پر تاجروں کو ہراساں کرنے کا الزام  سرینگر//کشمیر ٹریڈ الائ

تازہ ترین