۔6کے اے ایس افسر وں کا تبادلہ

سرینگر//حکومت نے انتظامیہ میں تبادلوں و تقرریوں کے احکامات جاری کرتے ہوئے6  جونیئرکے اے ایس افسران کو تبدیل کیا۔محکمہ عمومی انتظامی کے ایڈیشنل سیکریٹری چرن دیپ سنگھ کی طرف سے  ایک حکم نامہ زیر نمبر 614- JK(GAD)of 2020 محرر2جون جاری کیا گیا۔حکم نامہ کے مطابق ضلع صنعتی مرکز بڈگام میں کارگزار منیجر جونیئر کے ایس افسر بلال حسین نجار کو تبدیل کرکے محکمہ امور صارفین و شہری رسدات میں اسسٹنٹ ڈائریکٹر بانڈی پورہ کے عہدے پر تعینات کیا گیا۔ ضلع صنعتی مرکز اننت ناگ میں کار گزار منیجر و جونیئر کے اے ایس افسر شیخ عنایت اللہ کو تبدیل کرکے محکمہ امور صارفین و شہری رسدات میں اسسٹنٹ ڈائریکٹر پلوامہ کے عہدے پر تعینات کیا گیا۔حکم نامہ کے تحت چائلڈ ڈیولپمنٹ پروجیکٹ افسر گاندربل وجونیئر کے اے ایس افسر نصیر احمد بابا کو تبدیل کرکے محکمہ امور صارفین و شہری رسدات میں اسسٹنٹ ڈائریکٹر گاندربل کے عہدے پ

موسم نے لی کروٹ

سرینگر//وادی میں موسم نے ایک بار پھر کروٹ لی اور دوپہر بعد متعدد علاقوں میں تیز ہوائوں کے ساتھ ژالہ باری بھی ہوئی جس کے نتیجے میں گلاس، اور دیگر میوہ فضلوں کو نقصان پہنچا ۔اس دوران محکمہ موسمیات نے بدھ سے موسم بہتر رہنے کی پیش گوئی کی ہے ۔منگل کو بعد دوپہر اچانک مطلع ابرآلود ہوا اور شمالی ، جنوبی اور وسطی کشمیرمیں تیز ہوائوں کے ساتھ ساتھ شدید ژالہ باری اور بارش ہوئی جس کی وجہ سے دھان کی پنیری اور دیگرفصلوں کے ساتھ ساتھ گلاس کی فصل کو نقصان ہونے کی اطلاعات ہیں ۔ گاندربل سے نمائندے ارشاد احمد نے اطلاع دی ہے کہ ضلع میں تین بجے سے پانچ بجے تک تیز ہوائوں کے ساتھ موسلادھار بارش ہوئی جس کی وجہ سے گوٹلی باغ ، لار ، وتہ لار ،چونٹھ ولی وار ، کرہامہ ، واکورہ ،ززنہ اور بٹہ وینہ میں گلاس او ر میوہ فصل کو نقصان ہوا جبکہ سونہ مرگ ، کلن ، گنڈ میں بعد دوپہر سے تیز بارشوں کا سلسلہ شروع ہوا جو قریب دو گ

وزیراعظم کے بیانات تاریخ کو مسخ کرنے کی کوشش:اکبر لون

سرینگر// نیشنل کانفرنس نے وزیر اعظم پر الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ نریند مودی حقیقت و،صداقت پر مبنی اور تاریخی دستاویزات سے ہٹ کر اپنے بیانات سے تاریخ کو مسخ کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔ پارٹی کے سینئر لیڈر اور پارلیمنٹ ممبر محمد اکبر لون نے جموں کشمیر کی خصوصی پوزیشن کے خاتمے کو مودی سرکاری کی تاریخی غلطی سے تعبیر کرتے ہوئے کہا کہ یہ عمل ہندوستان کی جمہوریت پر ایک کاری ضرب ہے اور جمہوریت کے جڑوں کو اکھاڑنے کے مترادف ہے۔ انہوں نے کہا کہ جموں کشمیر کی خصوصی پوزیشن کو ختم کرنے کے مودی سرکار کے فیصلے کو جموں کشمیر کے تینوں خطوں نے مسترد کیا۔انہوں نے کہا کہ اس فیصلے کا اختیار نا ہی صدر ہند اور ناہی کسی اور کو تھا،جبکہ آئین ہند کے مطابق بھی یہ فیصلہ بالکل غیر جمہوری اور غیر آئینی تھا۔ ایڈوکیٹ محمد اکبر لون نے وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ جموں کشمیر میں35اے یا دفعہ370 کو ختم کرنے کا اختیار صرف جموں

پاکستانی زیر انتظام کشمیر کے تعلیمی ادارے بھارت میں غیر تسلیم شدہ

سرینگر// مرکزی زیرانتظام علاقوں جموں وکشمیر اور لداخ کے طلبا سے کہا گیا ہے کہ وہ پاکستان زیر انتظام کشمیر کے تکنیکی و غیر تکنیکی تعلیمی اداروں میں داخلہ نہ لیں کیونکہ یہ تعلیمی ادارے ہندوستان میں تسلیم شدہ نہیں ہیں۔آل انڈیا کونسل برائے تکنیکی ایجوکیشن کی طرف سے جاری ایک پبلک نوٹس، جس کو منگل کے روز جموں وکشمیر کے کئی روزناموں میں شائع کیا گیا، میں جموں و کشمیر اور لداخ مرکزی زیرانتظام علاقوں کے طلبا کو ہدایت دی گئی ہے کہ وہ پاکستان زیرانتظام کشمیر کے تعلیمی اداروں بشمول یونیورسٹیوں، میڈیکل کالجوں اورتکنیکی تعلیمی اداروں میں داخلہ لینے سے گریز کریں کیونکہ یہ تعلیمی ادارے نہ ہی بھارتی حکومت نے قائم کئے ہیں اور نہ انہیں متعلقہ اتھارٹیز تسلیم کرتی ہیں۔اے آئی سی ٹی ای کی پبلک نوٹس میں کہا گیا ہے،’’'پاکستان زیرانتظام کشمیر بھارت کا اٹوٹ انگ ہے اور وہاں قائم تعلیمی ادارے بشم

شوپیان میں4سالہ بچہ ندی میں غرقآب

شوپیان+اننت ناگ//شوپیاں میں4سالہ بچہ ندی میں غرقآب ہوا جبکہ اشاجی پورہ میں سڑک حادثہ میں زخمی تاجر زندگی کی جنگ ہار گیا۔جنوبی کشمیر کے شوپیان ضلع میں 4 سالہ کمسن بچے کی پانی میں ڈوبنے سے موت واقع ہوئی جسکی وجہ اس بچے کے آبائی گاؤں میں کہرام مچ گیا۔تفصیلات کے مطابق جنوبی کشمیر کے شوپیان ضلع کے دانگام علاقے کا رہنے والا چار سالہ کمسن بچہ حازم رفیق ملک ولد رفیق احمد ملک منگل دوپہرکو اپنے گھر سے باہر نکلا جسکے بعد وہ گھر واپس نہیں لوٹا۔ گھروالوں نے اس کی تلاش شروع کی اور گاؤں والوں سے کمسن بچہ کے بارے میں دریافت کیامگر کسی کو اِس کمسن بچہ کے بارے میں کوئی علمیت نہیں تھی۔ تاہم شام کے قریب بچہ کی لاش کو ہالوپورہ پل کے پاس گزرنے والی ندی سے برآمد کیا گیا۔کمسن بچہ کی نعش کو جوں ہی اسکے آبائی گاؤں پہنچایا گیا تو وہاں کہرام مچ گیا خواتین سینہ کوبی کرنے لگی اور ہر طرح کہرام کا ماحول پیدا ہ

تارت پورہ ہیلتھ سینٹرکی ایمبولینس کاذاتی استعمال

کپوارہ//تارت پورہ رامحال کے پرائمری ہیلتھ سینٹر کی ایمبولینس گاڑی کوڈرائیورکی طرف سے ذاتی استعمال میں لانے کی وجہ سے دردزہ میں مبتلاء خاتون کو ضلع اسپتال ہندوارہ پہنچانے میں مشکلات پیش آئی جس کی بناپرایمبولینس ڈرائیور کو ویلگام اسپتال کے ساتھ منسلک کیاگیا۔ تفصیلات کے مطابق منگل کے روزوگہ بل کی دردزہ میں مبتلاء خاتون شمیمہ کوگھروالوں نے پرائمری ہیلتھ سینٹر تارت پورہ پہنچایا جہاں ڈاکٹروں نے اُسے ضلع اسپتال ہندوارہ منتقل کرنے کی صلاح دی ،تاہم تارت پورہ کے پرائمری ہیلتھ سینٹر میں ایمبولینس گاڑی موجود نہ تھی  جوڈارئیورنے مبینہ طور اپنے ذاتی کام کیلئے لی تھی،جس کی وجہ سے دردزہ میں مبتلاء خاتون کو اسپتال پہنچانے میں مشکلات پیش آئیں اور گھر والوں کو اُسے ایک پرائیویٹ سوموگاڑی میں ضلع اسپتال پہنچانا پڑا۔اس حوالے سے بلاک میڈیکل افسر ویلگام ڈاکٹر فریدشاہین نے کشمیرعظمیٰ کو بتایا کہ جب دردز

زینہ گیر نہر میںگندگی کے ڈھیر

سوپور//شمالی قصبہ سوپور کے زینہ گیر علاقہ میں ہزاروں کنال زرعی اراضی کو سیراب کرنے والی’ زینہ گیر نہر‘ متعلقہ محکمہ کی لاپرواہی کی وجہ سے کوڑے دان میں تبدیل ہوچکی ہے ۔مقامی لوگوں اور زمینداروں کا کہنا ہے کہ محکمہ اریگیشن کی عدم توجہی کی وجہ سے ہزاروں کنال زرعی اراضی کو سیراب کرنے میں مشکلات درپیش ہیں بلکہ کئی علاقوں میںپانی کی عدم دستیابی کا سامنا بھی کرنا پڑتا ہے۔نہر کے گرد نواح میں آباد  بستیوں میں رہائش پذیر لوگوں کا کہنا ہے کہ چند سال قبل اس آبپاشی نہر سے انتہائی صاف وشفاف پانی فراہم ہوتا تھا اور مقامی لوگ آبپاشی کے علاوہ کھانے پینے کے لئے بھی اس کا پانی استعمال میں لاتے تھے۔ آج یہ نہر گندگی وغلاظت سے بھری پڑی ہے اور نہر نے کوڑے دان کی شکل اختیار کرلی ہے۔ اس بارے میں صدیق کالونی کے لوگوں کا مزید کہنا ہے کہ گرمیوں کے ایام شروع ہوتے ہی اس نہر میں موجود گندگی سے ب

اکہال میں جنگلات اراضی سے قبضہ چھڑالیا گیا

گاندربل//محکمہ جنگلات نے سندھ فارسٹ ڈویژن گاندربل کے کمپارٹمنٹ نمبر 1 نجون بلاک اکہال سے 1.50 ہیکٹر جنگلات اراضی سے قبضہ چھڑالیا ۔محکمہ جنگلات کے مطابق گزشتہ کئی برسوں کے دوران خودغرض عناصر نے جنگلات اراضی پر قبضہ جماکر سینکڑوں کنال ہڑپ لئے ہیں۔اس سلسلے میں رینج آفیسر سندھ کی قیادت میں فارسٹ پروٹیکش فورس کے اسسٹنٹ ڈائریکٹر اور جنگلات کے ملازمین نے منگلوار کو کمپارٹمنٹ نمبر 1 نجون بلاک اکہال سے 1.50 ہیکٹر جنگلات اراضی سے قبضہ ہٹا کر جنگلات اراضی کو اپنی تحویل میں لیا۔  

اقوام متحدہ سلامتی کونسل

سرینگر/ /اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی5 نئے غیر مستقل ارکان کا انتخاب 17 جون کو ہو گا جس میں کورونا وائرس کی وبا کے باوجود رکن ممالک کے مندوبین ذاتی طور پر ووٹنگ کے عمل میں شریک ہوں گے اور الیکٹرانیک ووٹنگ نہیں ہوگی۔ جنرل اسمبلی کے صدر تجانی محمد بندے نے گزشتہ روزاقوام متحدہ کے رکن ممالک کے نام جاری خط میں کہا کہ ووٹ ڈالنے والے ممبران کو رائے شماری کے لئے مقررہ وقت اور مقام کے بارے میں پیشگی اطلاع دی جائے گی تاکہ وہ اپنا حق رائے دہی استعمال کریں۔میکسیکو اور بھارت کا انتخاب یقینی ہے کیونکہ یہ بالترتیب لاطینی امریکہ اور ایشیا سے دو ممالک ہیں۔ ووٹنگ کے دوران ائرلینڈ، ناروے اور کینیڈا کے درمیان2 سیٹوں پر مقابلہ ہو گا جبکہ افریقی نمائندگی کے لیے کینیا اور جبوتی کے درمیان ایک سیٹ پر مقابلہ ہو گا۔ سلامتی کونسل کے غیر مستقل ارکان کا انتخاب 17 جون کو ہونا تھا لیکن کورونا وائرس کے باعث تاریخ کا

سوزکا وزیرخارجہ کو مکتوب

سرینگر//سابق مرکزی وزیراورکانگریس رہنما پروفیسر سیف الدین سوز نے ایک مکتوب میںوزیرخارجہ ڈاکٹر ایس جے شنکرپرزوردیا ہے کہ وہ قازقستان کے الماتی اور نورسلطان (آستانہ)شہروں میں درماندہ 80کشمیری طلبہ کو واپس کشمیر لانے میں مدد کریں۔ایک بیان کے مطابق پروفیسر سوزنے وزیرخارجہ ایس جے شنکر کوبتایا کہ کچھ طلبہ کے والدین نے اُن کے ساتھ رابطہ کیاا ور اپنے بچوں کی گھر واپسی کیلئے ان کی مددطلب کی۔پروفیسر سوزنے کہا ،’’میں نے اپنے مکتوب میں وزیرخارجہ کوبتایا کہ ان طلبہ کے پاس روپے پیسے بھی ختم ہوگئے ہیں اور وہ کشمیر واپس لوٹنے کیلئے بہت پریشان ہیں۔‘‘بیان کے مطابق پروفیسر سوز نے وزارت خارجہ کے ایک سینئر افسر منیش پربھات سے بھی بات کی اور ان کی توجہ خصوصی طور اس مسئلہ کی طرف مبذول کرائی ،تاکہ اس مسئلہ کو حل کرانے کیلئے عملی اقدام کئے جائیں۔سوزنے بتایا کہ منیش پربھات نے انہیں یقین

لنگیٹ قرنطین مرکز میں سہولیات کا فقدان

کپوارہ//لنگیٹ کے قرنطین مرکزمیں سہولیات کی عدم دستیابی کیخلاف یہاں قرنطینہ میں رکھے گئے لوگوں نے سخت احتجاج کیااورالزام لگایا کہ انتظامیہ ان کی جانوں کے ساتھ کھلواڑ کررہی ہے۔اطلاعات کے مطابق اس قرنطینہ مرکز میں اس وقت دوحاملہ خواتین اورنوبچوں سمیت34افراد داخل ہیں۔ہائراسکینڈری اسکول لنگیٹ میں قائم اس قرنطین مرکز میں داخل افراد نے منگل کو احتجاج کیا۔انہوں نے کہا کہ 23مئی کو مہاراشٹر سے50افرادکویہاںلایا گیا اور25مئی کو انہیں قرنطینہ مرکز لنگیٹ میں رکھاگیااورکوروناوائرس کی جانچ کیلئے ان کے نمونے حاصل کئے گئے۔انہوں نے کہا کہ اس میں سے14افراد کے نمونے مثبت پائے گئے جنہیں کسی دوسری جگہ منتقل کیا گیالیکن تب سے نہ ان کا کوئی دوسراٹیسٹ کیا گیا اور نہ کوئی ڈاکٹر انہیں دیکھنے آیا۔انہوں نے کہا کہ جن افراد کاٹیسٹ مثبت آیا وہ ان کے ساتھ تین روزتک رابطے میں رہے،جس کی وجہ سے انہیں سخت تشویش ہے ۔ انہو

نالہ سندھ سے ریت باجری کا غیرقانونی نکاس

کنگن//نالہ سندھ سے غیرقانونی طور ریت اور باجری نکالنے کی پاداش میں کنگن کے مختلف مقامات پر حکام نے تین ٹریکٹر اور ایک ٹپر کوضبط کرکے پولیس کے سپردکیا۔ تفصیلات کے مطابق ضلع انتظامیہ گاندربل کی ہدایت پر محکمہ جیالوجی اینڈ مائننگ کے ڈسٹرکٹ منرل افسر منظور احمد ڈار نے اکہال کنگن، ہاین، ریرون میں نالہ سندھ سے غیر قانونی طور پر ریت اور باجری نکالنے کی پاداش میں تین ٹریکٹر اور ایک ٹپر کو ضبط کرکے کنگن پولیس کے سپرد کردیا۔ مذکورہ افسر نے کہا کہ نالہ سندھ سے غیر قانونی طور پر ریت اور باجری نکالنے والوں کے خلاف سخت کاروائی کی جائے گی۔ انہوں نے بتایا کہ لوگوں کی طرف سے یہ شکایات مسلسل موصول ہورہی تھیں کہ تحصیل کنگن اور تحصیل گنڈ کے مختلف علاقوں میں نالہ سندھ سے غیر قانونی طور پر ریت اور باجری نکالنے کا سلسلہ جاری ہے جس کے بعد کنگن، اکہال، اورژیرون میں تین ٹریکٹر اور ایک ٹپر کو ضبط کرکے کنگن پولیس

ریڈ زون علاقوں میں نمونے لینے میں سرعت لائیں:بصیر خان

اننت ناگ//ریڈ زون علاقوں میں تمام سہولیات بہم رکھنے پر زور دیتے ہوئے لیفٹینٹ گورنر کے مشیر بصیر خان نے ان علاقوں میں رہنے والوں کیلئے بلا خلل بجلی ، پانی فراہم کرنے اور رسوئی گیس ، راشن اور ادویات بہم رکھنے کی متعلقہ حکام کو ہدایت دی ۔ ضلع افسران کے ساتھ ایک جائیزہ میٹنگ کی صدارت کے دوران بصیر خان نے ریڈ زون علاقوں میں نمونے لینے میں سرعت لانے پر زور دیتے ہوئے سماج کے حساس طبقوں بشمول دائمی امراض جیسے سرطان ،ذیابطیس اور نظامِ تنفس کے دائمی امراض میں مبتلاء اور عمر رسیدہ افراد پر توجہ مرکوز کرنے کی ہدایت دی ۔ انہوں نے کہا کہ نمونے لینے میں سرعت لانے اور لاک ڈاؤن پر سختی سے کاربند رہنے سے ہی ضلع میں اس مہلک وباء کی روکتھام ممکن ہو سکے گی ۔ انہوں نے کہا کہ انتظامیہ کو ریڈ زون علاقوں میں رہنے والوں کی جائیز ضروریات کا خیال رکھنا ہو گا اور ان علاقوں میں عوام کی سہولت کیلئے ایک فعال نظام مر

مزید خبرں

سِکل ڈیولپمنٹ کریش کورس کا آن لائن افتتاح  ۔750اُمیدواروں کو تربیت دی جائیگی سرینگر//جموں کشمیر سکل ڈیولپمنٹ مشن نے یہاں کووِڈ- 19 خصوصی ’لیٹ اَس سِکل آئی ٹی، آن لائین پروگرام‘ کا ای افتتاح کیا ۔ پروگرام کے تحت 750 منتخب اُمیدواروں کو سائیبر سیکورٹی ، جی ایس ٹی ، ٹیلرنگ ( ماسک اور پی پی ای بنانے ) ، انٹر نیٹ ویب ڈیزائیننگ ، ریسپشنسٹ ڈیوٹی میک اپ  وغیرہ پیشوں میں خصوصی تربیت دی جائے گی ۔ پروگرام کا افتتاح پرنسپل سیکرٹری محکمہ تعلیم اور سکل ڈیولپمنٹ ڈاکٹر اصغر حسن سامون نے جے کے ایس ڈی ایم کے اعلیٰ افسران اور مشن ڈائریکٹر جے کے ایس ڈی ایم کی موجودگی میں کیا ۔ افتتاحی تقریب کے دوران پرنسپل سیکرٹری نے تربیت فراہم کرنے والوں اور اُمیدواروں کے ساتھ آن لائین تبادلہ خیال کیا ۔ تقریب کے اختتام پر پرنسپل سیکرٹری نے جے کے ایس ڈی ایم کے افسروں کو کووِڈ- 19 سپیشل س

درجہ چہارم کی بھرتیوں کی تجویز | 60ہزار عارضی ملازمین کے حقوق پر شب خون:ایجیک

سرینگر// ملازمین کے مشترکہ اتحاد ایمپلائز جوائنٹ ایکشن کمیٹی نے درجہ چہارم کی نئی اسامیوں کی تازہ بھرتیوں کی تجویز کو عارضی ملازمین کے حقوق پر شب خون مارنے کے مترادف قرار دیا۔سرینگر کے پی ایچ ای دفتر میں پریس کانفرنس ے خطاب کرتے ہوئے ایجیک کے صدر فیاض شبنم نے کہا کہ عارضی ملازمین کی مستقلی کا نہ صرف جواز بنتا ہے بلکہ انصاف کے تقاضوں کو پورا کرنے کیلئے بھی ضروری ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایجیک نے ہمیشہ ملازمین جموں کشمیر کے جائز مطالبات کی حمایت کی ہے جبکہ عارضی ملازمین کی مستقلی کا جواب بھی بنتا ہے کیونکہ انہوں نے طویل عرصہ سے عوامی خدمات کو انجام دیا ہے۔ان کا کہنا تھا’’حال ہی میں انتظامیہ نے جو دس ہزار ملازموں کی بھرتی کی پالیسی مرتب کی ہے اس سے قبل یہاں بیس پچیس برسوں سے مختلف محکموں میں کام کرنے والے عارضی ملازمین کی نوکریوں کو مستقل کرنے کے لئے ایک پالیسی بنائی جانی چاہئے&lsq

بجلی کی عدم دستیابی | گوگلوسہ گزریال معقول سپلائی سے محروم

کپوارہ//شمالی کشمیر کے کرالہ پورہ علاقہ میں بجلی کے بحران نے سنگین رخ اختیار کیا ہے اور علاقہ میں ابھی تک7مہینہ قبل مرتب دئے گئے شیڈول کے مطابق صارفین کو بجلی فراہم کی جاتی ہے تاہم گوگلوسہ گزریال فیڈر گزشتہ ایک سال سے خراب ہے جس کی وجہ سے گوگلوسہ گزریال فیڈر کو دو حصوں میں تقسیم کیا گیا اوربجلی نہ ہونے کے برابر ہے ۔صارفین کا کہنا ہے کہ فیڈر کی خرابی کی وجہ سے آلوسہ ،مزگام ،شولورہ سلامت واری ،گوفہ بل ،شمناگ ،گوگلوسہ بالا ،دردسن ،ریشی گنڈ ،گزریال اوروارسن معقول بجلی سپلائی سے محروم ہیں ۔ان علاقوں کے لوگو ں کا کہنا ہے کہ ان علاقوں میں محکمہ نے انوکھا بجلی شیڈول ترتیب دیاہے جس کی وجہ سے ان علاقوں کو ایک دن میں 3اور ارت کے دوران 7گھنٹہ بجلی نصیب ہوتی ہے ۔ادھر ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ محکمہ کو گوگلو سہ گزریال علاقوں میں بجلی بحران کو ختم کرنے کے لئے رسیونگ اسٹیشن کرالہ پورہ سے ایک الگ پینل

مدارس اسلامیہ فی الحال بند ہی رہیں گے :مولانا رحمت اللہ

سرینگر//رابطہ مدارس اسلامیہ کے صدر مولانامحمد رحمت اللہ قاسمی نے کہا کہ اب جبکہ لاک ڈاؤن کے پانچویں مرحلے کا اعلان ہوا ہے اورجموں و کشمیر میں سکولوں، کالجوں، یونیورسٹیوں اور ٹیکنیکل اداروں کے کھولنے کی اجازت کا اعلان نہیں ہوا ہے۔لہذافی الحال رابطہ مداراس اسلامیہ عربیہ سے متعلق جملہ مدارس میں بھی تعلیم وتدریس کا کوئی سلسلہ قائم نہیں ہو سکے گا۔انہوں نے کہا کہ طلبہ کو ہدایت دی جاتی ہے کہ وہ اپنے مقامات پر قیام کر کے وقت کو تعلیمی مشاغل میں مصروف کریںجبکہ جملہ مدارس کے طلبہ اپنے اپنے مدارس کے دفاتر اور ذمہ داران کے ساتھ فون پر رابطہ رکھیں۔  

محکمہ بجلی کی نجکاری کا معاملہ | انجینئروں ودیگر ملازمین کا بازئوں پر سیاہ پٹیاں باندھ کر خاموش احتجاج

سرینگر/ مرکزی حکومت کی طرف سے بجلی شعبے کی نجی کاری کے مجوزہ فیصلے اور بجلی ترمیمی بل کے خلاف محکمہ بجلی کے انجینئروں اور ملازمین نے پیر کو اپنے بازئوں پر سیاہ رنگ کی پٹیاں باندھ کر علامتی احتجاج کیا۔پائور انجینئرس اینڈ ایمپلائز کارڈی نیشن کمیٹی کی کال پر بجلی ملازمین اور انجینئر سرینگر کے بمنہ،بسنت باغ اورراجباغ میں جمع ہوئے اور اپنی بازوئوں پر پٹیاں باندھ کر خاموش احتجاج کیا۔مظاہرین نے الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ جموں کشمیر میں بجلی محکمہ کو کمپنیوں میں تبدیل کرنے سے پہلے ہی اس محکمہ کی ساخت کو کمزور کیا گیا اور اب ایک اور ضرب مارنے کی کوشش کی جارہی ہے۔ اس موقعہ پرالیکٹرک ایمپلائز یونین کے صدر محمد مقبول نجار نے کہا کہ بجلی شعبہ کی نجی کاری کے نتیجے میں جموں کشمیر سخت مشکلات کے نرغے میں آئے گی،کیونکہ بجلی شعبہ کی اصلاحات کا سلسلہ ابھی تک جاری ہے اور اس کیلئے ابھی تک ڈھانچہ بھی مکمل

مزید خبریں

سابق مرکزی وزیر پی نمگیال فوت  کانگریس ،نیشنل کانفرنس اور پی ڈی پی قیادت کا اظہار رنج  سرینگر//سابق مرکزی وزیر اور کانگریس کے سینئر لیڈر پی نمگیال سوموار کو فوت ہوگئے ۔ کانگریس قیادت سونیا گاندھی ،راہل گاندھی اورجموں کشمیر پردیش کانگریس کمیٹی کے صدر غلام احمد میرسمیت کانگریس کی قیادت نے رنج وغم کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ پارٹی میں ایک خلا پیدا ہوگیا ۔میر نے کہا کہ نمگیال نے ہمیشہ غریب طبقے کی خدمت کو اپنا شعار بنایا تھا ۔ادھر نیشنل کانفرنس صدر ڈاکٹر فاروق عبداللہ اور نائب صدر عمر عبداللہ نے نمگیال کے فوت ہونے پر گہرے صدمے اور دکھ کا اظہار کیا ہے۔انہوں نے اس سانحہ ارتحال پر آنجہانی کے جملہ سوگواران کے ساتھ تعزیت کا اظہار کیا ہے۔پارٹی کے دیگر لیڈران بابو رام پال، برج موہن شرما،محمد حسین، دپندر کور،نصر خان،بھوشن لال بھٹ اورمحمد اقبال بٹ نے بھی تعزیت کا اظہار کیا ہے۔ان

پٹن میں 3 منشیات فروش نوشہرہ اور پلہالن میں7 قمار باز گرفتار

 بارہمولہ//بارہمولہ پولیس نے منشیات مخالف مہم کے دوران شوکت احمد وانی ساکن وانی گام بالاکو گرفتارکرکے اس کی تحویل سے چرس برآمدکرلیا ہے۔ادھر پٹن قصبہ میں پولیس نے مین بازار پٹن میں چیکنگ کے دوران محمد یعقوب بٹ اور مقصود احمد وانی ساکنان پٹن کے قبضے سے کوڈین کی 8 بوتلیں برآمد کیں۔جس کے بعد د دونوں افراد کو گرفتار کیا گیا ۔ ادھر پولیس نے رائی پورہ  پلہالن علاقے سے چارقماربازوں کو گرفتار کیا ہے جن کے قبضے سے12270روپئے،ایک چک اور تاش کے پتے بھی برآمد کرلئے۔ سرینگر پولیس نے صورہ علاقے میں3قمارباز گرفتار کرلئے جن سے 17,640روپئے اور تاش کے پتے برآمد کئے گئے۔پولیس تھانہ صورہ نے نوشہرہ میں قمار بازوں کے ایک اڈے پر چھاپہ مار کر تینوں قمار بازوں کورنگے ہاتھوں گرفتار کرلیا۔ اُن کے خلاف ایک کیس زیر ایف آئی آر نمبر 13/2020  درج کیا گیا ۔  

تازہ ترین