تازہ ترین

خشک موسم کے بیچ پیرپنچال کے آرپار سخت سردی

سری نگر// وادی کشمیر میں خشک موسم کے بیچ درجہ حرارت نقطہ انجماد نیچے درج ہوا ہے جس سے سردی کی شدت میں اضافہ ہوا ہے ۔محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ وادی کشمیر میں مطلع صاف رہنے کی وجہ سے درجہ حرارت میں مزید گراوٹ درج ہوئی ہے ۔انہوں نے کہا وادی میں اگلے پانچ روز کے دوران موسم مجموعی طور پر خشک رہنے کی توقع ہے ۔متعلقہ محکمہ کے ایک ترجمان نے بتایا کہ شہرہ آفاق سیاحتی مقام گلمرگ میں گذشتہ شب درجہ حرارت منفی 5.6 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا جبکہ دوسرے مشہور سیاحتی مقام پہلگام میں کم سے کم درجہ حرارت منفی 5.2 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ ہوا ہے ۔گرمائی دارالحکومت سری نگر میں کم سے کم درجہ حرارت منفی 2.2 ڈگری سینٹی گریڈ جبکہ قاضی گنڈ میں کم سے کم درجہ حرارت منفی 1.8 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ ہوا ہے ۔سرحدی ضلع کپوارہ میں کم سے کم درجہ حرارت منفی 1.0 سینٹی گریڈ جبکہ کوکر ناگ میں کم سے کم درجہ حرارت منفی

سمبل میںبجلی کاعارضی ملازم اورٹپر ڈرائیورکرنٹ لگنے سے ہلاک

بانڈی پورہ +گاندربل +سوپور //مرکنڈل سمبل میں محکمہ بجلی کاایک عارضی ملازم بجلی کی ترسیلی لائنوں کی مرمت کرنے کے دوران کرنٹ لگنے سے ہلاک ہواجبکہ شادی پورہ سوناواری میں ٹپرگاڑی کے ہائی ٹینشن ترسیلی لائن چھو جانے سے ٹپر ڈرائیور موقعہ پر ہی ہلاک ہوگیا۔ ادھر سوپورمیں تیزرفتار کار نے ایک راہگیر کو کچل کر ہلاک کردیا۔مرکنڈل سمبل سوناواری میں محکمہ بجلی میں تعینات ایک عارضی ملازم 43برس کااسداللہ پرے ولدعبدالجبارساکنہ مرکنڈل اُس وقت کرنے لگنے سے لقمہ اجل بن گیا جب وہ ٹرانسفارمر کی ترسیلی لائنوں کو ٹھیک کررہاتھا اوراس دوران رسیونگ اسٹیشن سے منقطع کی گئی برقی رو بحال کردی گئی جس کے سبب مذکورہ ملازم بجلی کاشدید کرنٹ لگنے سے زخمی ہوگیا۔اس موقعہ پراگر چہ اُسے فوری طور دیگر ملازمین اور مقامی لوگوں نے پبلک ہیلتھ سینٹر سمبل منتقل کیا تاہم ڈاکٹروں نے اُسے وہاں مردہ قراردیا۔پولیس نے معاملے کی نسبت کیس درج

اغوا کی گئی دوشیزہ آہوں اور سسکیوںکے بیچ پیوند خاک

کولگام//اکہال کولگام میں چھبیس روزقبل اغواکی گئی لڑکی، شیرکشمیرمیڈیکل انسٹی چیوٹ صورہ میں زیرعلاج رہنے کے بعد فوت ہوئی اورسنیچر کواُسے آہوں اور سسکیوں کے بیچ سپرد خا ک کیاگیا جبکہ مقامی لوگوںنے زور دار احتجاجی مظاہرے کرتے ہوئے ملوثین کو سخت سزا دینے کی مانگ کی۔ تفصیلات کے مطابق جمعہ کی شام دیر گئے سکمز صورہ میں گزشتہ تقریباً چھبیس روز سے زیر علاج پانیواہ کولگام کی دوشیزہ زندگی کی جنگ ہار گئی جس کے بعد اس کی میت تمام قانونی لوازمات پوری کرنے کے بعد آخری رسومات ادا کرنے کیلئے لواحقین کے سپردکی گئی ۔ 21سالہ لڑکی کی لاش  جب اُس کے آبائی گائوں پانیواہ پہنچائی گئی توہاں کہرام مچ گیا اور یہ خبر سنتے ہی سینکڑوں لوگ نہ صرف مقامی بلکہ اردگرد کی بستیوں سے ستم زدہ گھر کی طرف دوڑ پڑے۔ اس موقع پر سینکڑوں ں لوگ بستی کے وسط سے گزرنے والی سڑک پر دھرنے پر بیٹھ گئے اور احتجاجی مظاہروں کے بیچ اس و

زوجیلہ پر برفانی توداکار پر گرآیا

کنگن//کرگل جانے والی ایک گاڑی میںسوار چار افراد سنیچروار کو اس وقت معجزاتی طور بچ گئے جب زوجیلا پہاڑپر کپٹین موڈ کے قریب ان کی Xylo کارJK07-4604برفانی تودے کی زدمیں آکر دب گئی۔اس موقعہ پر بیکن اور پولیس کے اہلکاروں نے چابکدستی کا مظاہرہ کرتے ہوئے برف میں دبی گاڑی میں پھنسے افراد کو بغیر کسی گزند کے باہر نکال کر محفوظ مقام پر پہنچایا۔ایس ایچ او دراس منظور حسین نے بتایا کہ برف میں دبی گاڑی کو نکالنے کی بیکن اور پولیس کی کوششیں بارآور ثابت نہیں ہوئی کیونکہ وہاں تیز ہوائوں کے چلنے کی وجہ سے بچائوکارکنوں کیلئے کام کرناممکن نہ تھا۔انہوں نے کہا کہ موسم سازگار ہونے کی صورت میں برفانی تودے میں دبی گاڑی کو کل باہر نکالنے کی کوشش کی جائے گی۔ادھر ڈپٹی سپرانٹنڈنٹ ٹریفک رورل گاندربل کے محافظ اور ان کی گاڑی بھی برفانی تودا گرآنے کے باعٹ اُس پار پھنس گئے ہیں ۔  

فقیرگجری میں3 خواتین امیدواروں کے درمیان مقابلہ

سری نگر // تین بہنوں میں سب سے چھوڑی اور فائنل ایئر کی طالبعلم23سالہ شائستہ اپنے اہلخانہ کے ہمراہ ووٹ ڈالنے کیلئے نکلی ۔ وہ بطور ایک آزاد اُمید وار انتخابات میں حصہ لی رہی ہیںاور ان کا کہنا ہے کہ ان کے طبقے کو درپیش مسائل نے انہیں انتخابات میں حصہ لینے پر مجبور کیا ہے۔ شائستہ نے بتایا،’’پہلے تو میں انتخابات میں حصہ لینے سے کترارہی تھی لیکن کنبہ کی حمایت اور میرے طبقے کی آوازکوآگے پہنچانے کے مقصدنے مجھے انتخابات میں حصہ لینے پرمجبور کیا ‘‘۔  انہوں نے مزید کہا، ’’آپ خود دیکھ سکتے ہیں کہ سری نگر کا حصہ ہونے کے باوجود ہم باقی سری نگر سے کئی دہائیاں پیچھے ہیں۔ یہی ایک وجہ ہے کہ میں نے اپنے علاقے کی ترقی میں اپنا کردار ادا کرنے کا فیصلہ کیا ‘‘۔انہوں نے کہا،’’ہماری برادری پر ظلم کیا جاتا ہے اور ہماری خواتین کو بہت سارے معامل

’فریب کاروں‘ اوربھاجپاکے ترقیاتی ایجنڈے کے درمیان انتخاب

جموں کشمیرکی سیاست کے تمام جعلساز بے نقاب:درخشاں اندرابی اوڑی//جموں کشمیرکے دورافتادہ سرحدی علاقوں کو نظر اندازکیاگیاتھا کیوں کہ لوگوں کی نمائندگی کرنے والے صرف اپنی ترقی چاہتے تھے اور اب لوگوں کی مرضی ہے کہ وہ بھاجپا کے ترقی کے ایجنڈے یا ’فریب کاروں‘ کاانتخاب کریں۔اس بات کااظہار بھارتیہ جنتاپارٹی کے قومی ترجمان سیدشاہنوازحسین نے پٹن اوڑی میں ایک عوامی جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہا ،’’مودی حکومت کے جموں کشمیرکے بارے میں تاریخی فیصلے سے سیاستدانوں کاحقیقی بدصورت چہرہ سامنے آیا ہے اوریہ جموں کشمیرکے لوگوں کی خوش قسمتی ہے کہ انہیں اب ان جعلسازوں اوردوراندیش رہنما نریندرمودی کے ترقیاتی ایجنڈے کی نمائندگی کرنے والے دوراندیش سیاستدانوں کے درمیان پسند کرنے کا حق ہے۔ انہوں نے لوگوں سے کہا کہ وہ کشمیرکی ترقی ،خوشحالی اور بہبودی کیلئے بھارتیہ جنتاپارٹی کے ا

ناجائز منافع خوروں کے خلاف محکمہ امورصارفین متحرک

سرینگر// محکمہ شہری رسدات، امور صارفین و عوامی تقسیم کاری نے رواں ماہ کے دوران قوانین کی خلاف ورزی کرنے والے دکانداروں سے قریب5لاکھ65ہزار کا جرمانہ کا وصول کیا۔محکمہ نے کہا ہے کہ ہر ایک شہری پر ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ وہ معصوم خریداروں کو لوٹنے والے دکانداروں پر سخت نگاہ رکھے۔ محکمہ کے اسسٹنٹ ڈائریکٹر انفورسمنٹ مشتاق احمد نے تفصیلات فراہم کرتے ہوئے کہا کہ رواں ماہ کے دوران محکمہ کی ٹیموں نے سرینگر میں1980مقامات کا معائنہ کیا جس کے دوران قوانین کی خلاف ورزی کرنے والے دکانداروں سے2 لاکھ 99 ہزار 600روپے کی رقم بطور جرمانہ وصول کیا گیا۔ انہوں نے مزید بتایا کہ مجموعی طور گوشت،مرغ، بیکری،میوہ،دودھ اور سبزی فروخت کرنے والے 446 دکانداروں کے خلاف کاروائی عمل میں لائی گئی۔ان کا مزید کہنا تھا کہ اس دوران اشیائے ضروریہ قانون مجریہ1955کے تحت مزید74دکانداروں کے خلاف کیس بھی درج کئے گئے۔ محکمہ کے اس

دلباغ سنگھ نے ورکشاپ اور ہسپتال میںکا کاج کا جائزہ لیا

سرینگر// پولیس کے ڈائریکٹر جنرل جموں و کشمیر دلباغ سنگھ نے سنیچرکو پولیس ورکشاپ اور پولیس ہسپتال سرینگر میں کام کاج کا جائزہ لیا۔انہوں نے پولیس ہسپتال کے ٹراما سینٹر میں جاری تعمیراتی کام کا بھی معائنہ کیا۔ پولیس ورکشاپ کا معائنہ کرتے ہوئے اور اس کے کام کاج کا جائزہ لیتے ہوئے اپنی صلاحیت میں اضافے پر زور دیا۔ ڈی جی پی نے محکمہ کو زیادہ سے زیادہ خدمات کو یقینی بنانے کے لئے دستیاب وسائل کا زیادہ سے زیادہ استعمال کرنے پر زور دیا۔ انہوں نے گاڑیوں کا معائنہ کیا جن میں اضافی حفاظتی خصوصیات کے ساتھ ورکشاپ میں ترمیم کی گئی ۔ڈی جی پی نے ورکشاپ میں تعینات پولیس کی تکنیکی ٹیم کے ساتھ بات چیت کی اور زمینی طور پر اہلکاروں کے لئے حفاظتی ضروریات کو بہتر بنانے میں ان کی کاوشوں کی تعریف کی۔ انہوں نے ورکشاپ کے مختلف یونٹوں کا معائنہ بھی کیا اور ان پر زور دیا کہ وہ اہلکاروں اور محکمہ کو ضروری خدمات کی فر

آرینز کالج کے اہتمام سے یوم آئین منایا گیا

سرینگر//آرینز کالج کے اہتمام سے آئین کی اہمیت کو فروغ دینے کے لئے کئی سرگرمیوں کا اہتمام کیاگیاجس مین کالج کے مختلف شعبوں میں زیر تعلیم طالب علموں نے شرکت کی۔ آریانز گروپ کے چیئرمین ڈاکٹر انشو کٹاریہ نے تمام طلبہ کو پوری طرح سے مقابلوں میں حصہ لینے پر ان کی تعریف کی اور آئندہ اس طرح کے پروگراموں میں زیادہ سے زیادہ حصہ لینے کی تحریک دی۔اس موقع پر ایڈوکیٹ گگن پردیپ ایس بال نے آرینزکے طلبہ اور فیکلٹی ممبروں سے بات چیت کی۔ انہوں نے کہا کہ قومی یوم آئین کو ’سمودان دیوس‘ کے نام سے بھی جانا جاتا ہے اور اس کی اہمیت اس حقیقت میں ہے کہ سال 1949 میں اس دن دستور ساز اسمبلی کے ذریعہ آئین کا مسودہ تیار کیا گیا تھا جس نے 9 دسمبر 1946 کو ڈاکٹر بی آر امبیڈکر کی سربراہی میں کام شروع کیا تھا۔ انہوں نے بتایا کہ 2 سال ، 11 ماہ اور 17 دن کے عرصہ کے بعد آئین مکمل ہوا۔انہوں نے کہا کہ ہندو

گاندربل ہسپتال میں ڈاکٹروں کی کمی سے عوام پریشان

سرینگر// سب ضلع ہسپتال گاندربل میں ڈاکٹروں کی عدم دستیابی کی وجہ سے ہسپتال آنے والے مریضوں کو سخت مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ مذکورہ ہسپتال میں گاندربل ، کنگن ، فقیر گجری اور دیگر دور درازعلاقوں سے مریض علاج ومعالجہ کیلئے پہنچتے ہیں جو انہیںفراہم نہیں ہوتاہے ۔ ہسپتال میں ادویات کی کمی بھی لوگوں کیلئے پریشانی کا سبب بن جاتا ہے ۔ ہسپتال میں صفائی کا فقدان بھی پایا جارہا ہے بلکہ صفائی نہ ہونے کے سبب علاج کیلئے آنے والے مریض ذہنی کوفت کا شکار ہورہے ہیں ۔سی این آئی  

بجلی اور پانی کی عدم دستیابی

سرینگر//بجلی اور پانی کی عدم دستیابی کے باعث شہر ودیہات میں لوگوں کو گوناگوں مسائل کا سامنا ہے۔سرینگر سمیت دیگر اضلاع میں بجلی کی لوڈ شیڈنگ سے سنگین صورتحال درپیش ہے جس کے نتیجے میں حکومت و انتظامیہ کے خلاف زبردست غم وغصے کا اظہارکیا جارہا ہے۔اکثر علاقوں میں کئی کئی گھنٹے بجلی کی غیر اعلانیہ کٹوتی معمول بن گئی ہے ،ٹرانسفامروں کی خرابی کی شکایات روز سننے کو مل رہی ہیں اورصارفین کوکئی کئی گھنٹے گھپ اندھیرے کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔اس دوران سرینگر سمیت مختلف اضلاع میں پینے کے پانی کا مسئلہ بھی سنگین صورتحال اختیار کرچکا ہے اور شہر سرینگر کے کئی علاقوں سمیت دیگر قصبہ جات کے علاقے بھی پانی سے محروم ہیں ۔ اننت ناگ کے بجبہاڑہ ،سڈروہ،ویری ناگ ،قاضی گنڈ،پہلگام ،نیپورہ،کوکرناگ ،اچھ بل اور شانگس کے مختلف علاقوں میں بجلی کی عدم دستیابی سے صارفین کو زبردست مشکلات کا سامنا ہے ۔کئی علاقوں میں ترسیلی لائ

جبڑی کرناہ میں بائیکاٹ

کپوارہ//بنیادی سہولیات کی عدم دستیابی کیخلاف احتجاج کرتے ہوئے،جبڑی گائوں کرناہ کے لوگوں نے ضلع ترقیاتی کونسل انتخاب کا مکمل بائیکاٹ کیااور یہاں شام دیر گئے تک کوئی بھی ووٹ نہیں ڈالا گیا تھا۔ حدمتارکہ پرواقع گائوں جبڑی بجلدار کے لوگوں نے بنیادی سہولیات کی عدم دستیابی کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے ضلع ترقیاتی کونسل انتخاب میں حصہ لینے سے انکار کیااورسنیچرکوہونے والی پہلے مرحلے کی پولنگ میں یہاں پولنگ مراکز سنسان رہے اور کسی نے بھی کوئی ووٹ نہیں ڈالا۔ ریٹرننگ آفیسر 13 -ٹنگڈار ڈی ڈی سی کپوارہ کے دفتر کے ذریعہ جو عداد وشمار سامنے آئے ہیں، ان کے مطابق جبڑی گائوں میں ووٹروں کی کل تعداد 336ہیں جن میں 175 مرد اور 165 خواتین شامل ہیں، تاہم شام دیر گئے تک اس علاقے میں کوئی بھی ووٹ نہیں ڈالا گیا تھا ۔  

لیہہ اورکرگل جانے والی گاڑیاں واپس سونہ مرگ لائی گئیں

کنگن//سرینگر لداخ شاہراہ کو سنیچر کویکطرفہ ٹریفک کیلئے کھول دیاگیاتاہم کئی مقامات پرپھسلن اور برفانی تودے گرآنے کی وجہ سے کئی گاڑیوں کو واپس سونہ مرگ لایا گیا۔ٹریفک پولیس کے مطابق سنیچروارکو سونہ مرگ سے لداخ اور کرگل کیلئے مال اور مسافر بردار گاڑیوں کوروانہ کیاگیا۔ڈپٹی سپرانٹنڈنٹ ٹریفک (رورل)گاندربل فہیم علی نے کشمیرعظمیٰ کو بتایا کہ سنیچروار کوسونہ مرگ سے لداخ اور کرگل کیلئے مال اور مسافر بردارگاڑیوں کوروانہ کیاگیا۔انہوں نے کہاکہ سونہ مرگ سے220چھوٹی بڑی گاڑیوں کو روانہ کیاگیاتھالیکن پھسلن اورکنی پتھری اوردیال مقام پربرفانی تودے گرآنے کی وجہ سے کئی چھوٹی بڑی گاڑیوں کوسونہ مرگ واپس لایا گیا۔انہوں نے کہا کہ سڑک پر سے برفانی تودوں کو ہٹانے کا کام جاری ہے اورسڑک کے صاف ہوتے ہی گاڑیوں کو آگے جانے کی اجازت دی جائے گی۔

مزید خبرں

ٹنگمرگ  میں 100 سالہ خاتون نے ووٹ ڈالا فیاض بخاری  بارہمولہ //ضلع ترقیاتی کونسل (ڈی ڈی سی) کے انتخابات کے پہلے مرحلے میں سنیچر کو ٹنگمرگ بارہمولہ میں ایک سو سالہ خاتون اپنا حق رائے دہی استعمال کرنے کیلئے  ایک پولنگ اسٹیشن پر قطار میں کھڑی تھیں۔ نادری گنڈ علاقے میں پولنگ بوتھ کے باہر 100 سالہ زائنہ بیگم نے کہا مجھے امید ہے کہ میرا ووٹ اس بار تبدیلی لائے گا ، "بیگم نے کہا کہ وہ پچھلے کئی سالوں سے ووٹ ڈال رہی ہیں۔ انہوں نے کہا ، "لیکن اس بار میں نے اس اس لئے ووٹ ڈالہ ہے کہ ہم ڈی ڈی سی امیدواروں سے براہ راست رابطے میں رہیں گے اور وہ ہماری شکایات اعلی حکام تک لے جاسکتے ہیں۔"بیگم نے کہا ، "اسمبلی انتخابات میں اکثر اوقات ہم وزراتک پہنچنے سے قاصر رہتے ہیں لیکن یہ رائے دہندگان بہت مختلف ہیں ،" انہوں نے کہا کہ میں نے آزاد امیدوار کو ووٹ ڈلا ہے۔انہ

ترال اور شوپیان کے کئی دیہات کامحاصرہ ، گھرگھرتلاشی

ترال//ترال اور شوپیان کے کئی دیہات کا جمعہ کو فورسزنے محاصرہ کرکے گھرگھر تلاشی لی ،تاہم اس دوران کسی کو گرفتار کئے جانے کی کوئی اطلاع نہیں ہے۔جمعہ صبح سب ضلع ترال کے مندورہ اور نارستان علاقوں کو فوج کے42آر آر،سی آر پی ایف180 بٹالین اور پولیس اہلکاروںنے محاصرے میں لیا اور علاقے میں گھر گھر تلاشی کارروائیوں کا سلسلہ شروع کیا ۔ صبح ساڑے نو بجے تک جاری تلاشی کارروائی کے دوران تاہم کسی کی گرفتاری عمل میں نہیں لائی گئی ہے۔ ادھر شوپیان میں44راشٹریہ رائفلز،1RR، سی آر پی ایف کی178 بٹالین اور پولیس کے سپیشل آپریشن گروپ نے مشترکہ طور پہنو، اورربن علاقوں کو محاصرے میں لے کر جنگجو مخالف آپریشن شروع کیا۔مقامی لوگوں نے بتایا فورسز نے یہاں دونوں گائوں کو دوران شب ہی محاصرے میںلیا تھا اور صبح ہوتے ہی گھرگھرتلاشی کارروائی کا سلسلہ شروع کیا ۔اس دوران یہاں بھی دن کے گیارہ بجے کے قریب تک کارروائیوں ک

’روشنی ایکٹ میں ملوث نہیں ہوں‘

سرینگر//سینئرکانگریس رہنمااور سابق وزیر تاج محی الدین نے روشنی ایکٹ سکینڈل میں ملوث ہونے کے الزام کو رد کرتے ہوئے اس معاملے کی سی بی آئی کے ذریعے تحقیقات کاخیرمقدم کیا ہے ۔کے این ایس کے مطابق کانگریس کے سینئر رہنما اور سابق وزیر تاج محی الدین ،جن کا نام مبینہ طور روشنی ایکٹ اسکینڈل میں آیا،نے جمعہ کو بتایا کہ روشنی ایکٹ سکینڈل میں ملوث نہیں ہیں ۔انہوں نے اس معاملے کی سی بی آئی کے ذریعے تحقیقات کئے جانے کا خیرمقد م بھی کیا۔تاج محی الدین نے کہا کہ ماضی میں اس معاملہ کو ویجی لینس آرگنائزیشن نے نمٹاکر بند کیاتھاجس کو اب موجودہ حکومت نے سی بی آئی کو سونپ دیاہے۔انہوں نے کہا کہ مجھے امید ہے کہ سی بی آئی حقائق کو اصل شکل میں سامنے لائے گی۔انہوں نے کہا کہ اس قانون کے تحت کوئی بھی اراضی ان کے نام منتقل نہیں ہوئی ہے ۔    

سرینگر لداخ شاہراہ کوآج گاڑیوں کیلئے کھول دیئے جانے کاامکان

گاندربل//جمعرات کو زوجیلا پر پسیاں اور برفانی تودے گرآنے کی وجہ سے سرینگر لداخ شاہراہ جمعہ کوپانچوں روزبھی ٹریفک کیلئے بند رہی جبکہ شمالی ضلع کپوارہ کے سرحدی علاقوں کو جانے والی سڑکوں پر سے بھی برف ہٹاکر اُنہیں گاڑیوں کی آمدورفت کیلئے بحال کیا گیا۔23نومبرکو ہوئی برف باری کے نتیجے میں حکام نے434کلومیٹرطویل سرینگرلداخ شاہراہ کواحتیاطی طور گاڑیوں کی نقل وحمل کیلئے بند کردیاتھاجس کی وجہ سے کرگل ،دراس اور سونہ مرگ کے مختلف مقامات پرسینکڑوں مال اور مسافر گاڑیاں درماندہ ہوگئیں تھی۔اس شاہراہ کوآمدورفت کے قابل بنانے کیلئے پروجیکٹ وجیک اور بارڈس روڈس آرگنائزیشن نے ہنگامی بنیادوں پر جمعہ کوبرف ہٹانے کا کام مکمل کیاجس کے بعد دراس اور گومری سے200فوجی گاڑیوں کو سونہ مرگ کیلئے روانہ کیاگیا۔آئی جی پی ٹریفک کشمیر پی نمگیال نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ سنیچروار کو اگر موسم صاف رہا اورسڑک پر پھسلن پید

کورونا وائرس| 8شہری فوت ، متوفین کی تعداد1676

سرینگر //جمعہ کو جموں کشمیرمیں کوروناوائرس سے مزید آٹھ افراد فوت ہوگئے ۔جموں و کشمیر میں پچھلے24گھنٹوں کے دوران 27ہزار 476تشخیصی ٹیسٹ کئے گئے جن میں 565کی رپورٹیں مثبت آئیں اور اسطرح متاثرین کی مجموعی تعداد108871تک پہنچ گئی ہے جن میں 43ہزار648جموں جبکہ کشمیر میں یہ تعداد65ہزارکا ہندسہ پار کرکے 65223ہوگئی۔ جمعہ کومزید 8افراد کورونا وائرس سے فوت ہوگئے۔متوفین کی مجموعی تعداد1676ہوگئی۔ ان میں 579 جموںجبکہ کشمیر میں فوت ہونے والے افراد کی تعداد1097ہوگئی ہے۔نئے 565معاملات میں  238کشمیر جبکہ327متاثرین کا تعلق جموں صوبے سے ہے۔ کشمیر صوبے کے 238متاثرین میں 88سرینگر،35بارہمولہ، 23بڈگام، 21پلوامہ، 29کپوارہ، 8اننت ناگ، 9بانڈی پورہ، 14گانڈربل، 5کولگام اور 6شوپیان سے تعلق رکھتے ہیں۔ جموں صوبے کے 327متاثرین میں 142جموں، 19راجوری، 49ادھمپور، 36ڈوڈہ، 17کٹھوعہ، 1پونچھ، 15سانبہ، 28کشتواڑ، 13رام بن

پلوامہ کے شہری پر سیفٹی ایکٹ کالعدم

سرینگر// جموں کشمیر ہائی کورٹ نے2018میں جنوبی کشمیر کے پلوامہ سے تعلق رکھنے والے ایک نوجوان پر عائد پی ایس اے کو کالعدم قرار دیا۔ نثار احمد قاضی ساکن ٹکن پلوامہ پر عائد پی ایس ائے معاملے میں سنگل بنچ احکامات کو یک طرف کرکے جسٹس سنجیو کمار اور جسٹس راجنیش اوسوال کی سربراہی والے ڈبل بینچ نے قاضی پر عائد پی ایس کو منسوخ کیا۔ نظار احمد قاضی نے ایڈوکیٹ جی این شاہین کی وساطت سے سنگل بینچ جج کے احکامات کو ڈبل بینچ میں چلینج کرنے کیلئے اپیل کی تھی،جس میں نظربند رکھنے والے حکام کے ان بنیادوں پر اعتراض کیا تھا کہ انہیں(حکام)کو معلوم  ہے کہ نظربند اس وقت پہلے ہی جیل میں تھا اور ضمانت کیلئے عدالت کا دروازہ نہیں کھٹکھٹایا تھا۔  

ضلع ترقیاتی کونسل اور پنچائتی چنائو

۔8سر پنچ اور 79پنچ نشستو ں کیلئے بالترتیب 20اور 96امیدوار مد امقابل  کپوارہ//ضلع ترقیاتی کونسل انتخا بات کیلئے شمالی ضلع کپوارہ کی 3 نشستو ں کے لئے آج ووٹ ڈالے جارہے ہیں جن میں انتخابی حلقہ کرالہ پورہ ،ٹنگڈار اور کلاروس شامل ہے ۔کرالہ پورہ نشست بلاک کرالہ پورہ ،میلیال اور کیرن پر مشتمل ہے جبکہ ٹنگڈار نشست ٹیٹوال اور ٹنگڈار بلا ک اور کلاروس نشست مژھل اور کلاروس بلا کوں پر مشتمل ہیں ۔سرکاری اعداد و شمار کے مطابق ان 3 نشستو ں کیلئے کل 76554رائے دہندگان ہیں ۔کرالہ پورہ حلقہ میں 21757رائے دہندگان اپنے من پسند امیدواروں کے لئے ووٹ ڈالے گے جن میں 11276مرد اور 10483خواتین شامل ہیںاوریہاں کل 10امیدوار میدان میں ہیں، جن میں پیپلز الائنس کا 1،اپنی پارٹی 1،بی جے پی 1اور7آ زاد امیدوار شامل ہیں ۔کلاروس حلقہ میں 21115رائے دہند گان اپنے ووٹ کا استعمال کریں گے جن میں11242مرد اور 9872خواتین و