آبی پناہ گاہ شالہ بگ گاندربل میں پرندوں کا شکار

گاندربل//شالہ بگ گاندربل میں موجود ویٹ لینڈ کشمیر کی واحد آبی پرندوں کی پناہ گاہ ہے جہاں کئی اقسام کے پرندے واپس سائبیریایا وسطی ایشیائی ممالک میں جانے کی بجائے پورے سال اسی آبی پناہ گاہ میں قیام کرتے ہیں اور موسمی تبدیلی کے باوجود اس آبی پناہ گاہ میں ان کو آب و ہوا کے ایسی تمام سہولیات دستیاب ہیں جنکی وجہ سے وہ ہجرت نہیں کرتے ہیں۔شالہ بگ آبی پناہ گاہ میں موجود آبی پرندے آج کل نئے بچوں کو جنم دینے میں مصروف ہیں لیکن چند خودغرض اور شرپسند افراد روزانہ شالہ بگ آبی پناہ گاہ میں جاکر غیر قانونی اور انسانیت سوز طریقے سے ان پرندوں کا شکار کررہے ہیں جس کی وجہ سے ان پرندوں کی آنے والی نسل نابود ہوکر رہ جائے گی ۔مقامی شہری عرفان احمد نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ ہر روز درجنوں افراد شالہ بگ آبی پناہ گاہ میں شکار کرنے والی بندوقیں لاکر ان آبی پرندوں کا شکار کرتے ہیں جو کہ سراسر زیادتی او

کشمیر عظمیٰ کے نامہ نگار اشرف چراغ کو صدمہ

سرینگر //کشمیر عظمیٰ کے سینئر نامہ نگار برائے کپوارہ اشرف چراغ کی والدہ محترمہ بدھ کی دوپہر انتقال کر گئیں ۔وہ گذشتہ کئی ماہ سے علیل تھیں ،ان کی عمر 90سال تھی ۔بدھ کو قریب چار بجے ان کی نماز جنازہ گزریال کپوارہ میں انجام دی گئی جس میں لوگوں کی بھاری تعداد نے شرکت کی ،شام دیر گئے انہیں اپنی آبائی مقبرہ میں سپردخاک کیا گیا ۔مرحومہ انتہائی نیک سیرت خاتون تھی ۔ کشمیر عظمیٰ کے جملہ ارکین نے اپنے ساتھی کے ساتھ تعزیت کا اظہار کرتے ہوئے مرحومہ کی جنت نشی کیلئے دعا کی ہے ۔اس دوران مختلف سیاسی سماجی اور ادبی تنظیموں کے علاوہ صحافتی برادری نے بھی اشرف چراغ کے ساتھ دلی ہمدردی کا اظہار کیا ہے ۔انجمن اردو صحافت کشمیر کے صدر ریاض ملک ، جنرل سکریٹری امتیاز احمد خان نے بھی اشرف چراغ کے ساتھ دلی ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے مرحومہ کی جنت نشینی کیلئے دعا کی ہے ۔، کپوارہ جرنلسٹ ایسوسی ایشن  اورکرناہ می

ایل جی کے مشیرفاروق خان سے وفود کی ملاقات

سرینگر//کشمیر کے مختلف علاقوں سے آئے متعدد وفود یہاں لیفٹیننٹ گورنر کے مشیر فاروق خان سے ملے اور انہیں اپنے مسائل او رمانگوں سے آگاہ کیا۔ انٹگریٹیڈ چائلیڈ ڈیولپمنٹ سروزکے ایک وفد نے سینیارٹی لسٹ کو حتمی شکل دینے، ڈی پی سی منعقد کرنے اور اُن کی ملازمت سے متعلقہ دیگر معاملات سے متعلق مانگیں پیش کیں۔اِسی طرح آئی سی ڈی ایس کے آنگن واڑی ورکروں کے ایک وفد نے اُن کے ایک ماہ سے اِلتوا ٔمیں پڑی مشاہراہ واگزار کرنے ، ان کی نوکریوں کو باقاعدہ بنانے اور دیگر مسائل مشیر کے گوش گزار کئے۔رہبرجنگلات کا ایک وفد بھی مشیر خان سے ملااور انہیں ان کی نوکریوں کو باقاعدہ بنانے اور دیگرمعاملات اٹھائے۔ رہبر کھیل کا ایک وفد بھی مشیر سے ملا اور ان کی ملازمت سے متعلق مختلف معاملا ت اُٹھائے۔صوبہ کشمیر کے مختلف علاقوں سے آئے دیگر وفود بھی مشیر سے ملے اور انہیں پینے کے صاف پانی ،گندے پانی کانکاسی نظام ، سڑک رابط

دفعہ370اور35اے کی تنسیخ مرتے دم تک قبول نہیں:عمرعبداللہ

 سرینگر//نیشنل کانفرنس کے نائب صدر اور جموں وکشمیر کے سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ نے5اگست 2019کو مرکزی حکومت کی جانب سے جموں وکشمیر سے متعلق لئے گئے فیصلہ جات کو یکسر مسترد کرتے ہوئے کہا کہ دفعہ370،35A کی تنسیخ اور جموں وکشمیر کی تقسیم و تنظیم نو کو وہ ( عمر عبد اللہ ) مرتے دم تک قبول نہیں کریں گے ۔ انہوں نے 5اگست کو ’یوم سوگ ‘ منا نے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ جموں وکشمیر کے عوام کو انصاف فراہم کرنے کیلئے وہ کسی بھی حد تک جائیں گے ۔دفعہ370کی تنسیخ کے بعد کشمیر نیوز سروس کیساتھ ایک مفصل انٹر ویو کے دوران عمر عبداللہ تلخ سولات کے جوابات بے باکی سے دیئے ۔جب عمر عبداللہ سے پوچھا گیا کہ بعض لوگ الزام عائد کررہے ہیںکہ نیشنل کانفرنس نے دفعہ370کی بحالی پر خاموشی اختیار ہوئی ہے ،کیا یہ سچ ہے ،تو اس کے جواب میں عمر عبداللہ نے کہا ،’’جو لوگ آج یہ کہہ رہے ہیں ہم آرٹی

لاک ڈاون میں نرمی| خریداری کیلئے سڑکوں پر بھاری بھیڑ اُمڈ آئی

سرینگر//عید سے قبل انتظامیہ کی جانب سے لاک ڈائون کے دوران اشیائے ضروریہ کی دکانوں کو کھولنے کی2روزہ بندشوں میں نرمی کے دوران شہر میں بڑے پیمانے پر خریداری کی گئی اور شام دیر گئے تک لوگ بازاروں میں کریداری کرتے رہے۔تقریباً سبھی بازاروں میں لوگوں کی بھیڑ امڈ آئی اور لوگ جم کر خرید فروخت میں مصروف رہے۔صوبائی انتظامیہ نے عید سے قبل منگل سے لاک ڈائون میں سہ روزہ ڈھیل کا اعلان کیا تھا تاہم سرینگر میں منگل کو دکانیں نہیں کھلیںاور ضلع انتظامیہ نے بدھ سے اشیائے ضروریہ کی دکانوں کو کھولنے کی اجازت دی۔شہر میں صبح کے وقت اگرچہ بیشتر بازاروں میں ضروری اشیاء کی دکانیں کھلیں تاہم بعد دوپہر لالچوک اور اس کے گر دونواح میں دیگر دکانیں بھی کھل گئیں۔نجی ٹرانسپورٹ کی آمد و رفت بھی اچھی خاصی دیکھی گئی جس کی وجہ سے کئی جگہوں پر ٹریفک جام کے منا ظر بھی دیکھنے کو ملے۔ہر ایک بازار میں ہر طرح کی دکانوں کے باہر

ٹھیکیداروں کا جموں کشمیر کنسٹرکشن کارپوریشن کے خلاف احتجاج

سرینگر// 30کروڑ روپے واجب الادارقومات کی عدم ادائیگی کیخلاف جموں کشمیرپروجیکٹ کنسٹرکشن کارپوریشن سے منسلک ٹھیکیداروں نے کارپوریشن کے صدردفتر پر تالہ چڑھا کر زبردست احتجاج کیا۔احتجاج میں ٹھیکیداروں کے مطابق سال2018سے انہوں نے کشمیرکے ہرضلع میں بڑے بڑے ترقیاتی منصوبوں کے تحت کام انجام دیئے،لیکن دوبرس گرزجانے کے باوجود بھی ان کی واجبات کوواگزار نہیں کیا جارہا ہے،جس کی وجہ سے وہ احتجاج کرنے پر مجبور ہوئے۔.اس موقع پر گاندربل سے وابستہ ٹھکیداروں نے بتایا کہ ضلع گاندربل میں ہم نے ڈسٹرکٹ ہسپتال، فزیکل کالج، انجینئرنگ کالج،پل سمیت دیگر اہم پروجیکٹوں کو بینک سے قرضہ حاصل کرکے مکمل کیا لیکن دو سال گزرنے کے باوجود بھی ان کی واجب الادا بلیں واگزار نہیں کی جارہی ہیں۔اسی طرح دیگر اضلاع جن میں بارہمولہ،کپواڑہ،بانڈی پورہ ،پلوامہ،اننت ناگ،کولگام شوپیان میں بڑے بڑے زیر تعمیر پروجیکٹ کو مکمل کیا ہے لیکن ہ

کووِڈ- 19انفیکشن سے ڈاکٹر کی موت تشویشناک:ڈاک

سرینگر//ڈاکٹرس ایسوسی ایشن کشمیر نے بتایا ہے کہ کوروناوائرس سے صحتیاب ہونے والے مریضوںمیں دوبارہ یہ انفیکشن ہوتا ہے جس کی تازہ مثال بانڈی پورہ میں ایک ڈاکٹر کی موت سے ہے جو کووڈ سے صحتیاب ہوا تھا اور پھر اس انفیکشن میں مبتلاء ہوکر ازجا ن ہوااور یہ معاملہ انتہائی حساس ہے جس کالوگوں کو بہت زیادہ خیال رکھنا چاہئے ۔سی این آئی کے مطابق بانڈی پورہ میں  ایک ڈاکٹر کی کوروناوائرس کی وجہ سے موت ہونے پر ڈاکٹرس ایسوسی ایشن کشمیر کے صدر ڈاکٹر نثارالحسن نے اپنے ایک بیان میں سخت افسوس اوردکھ کااظہار کیا ہے ۔ جبکہ انہوں نے اس معاملے کو ’’reinfection‘‘قراردیکر اس کو کافی خطرناک معاملہ بتایا ہے ۔ انہوںنے کہا کہ ضلع بانڈی پورہ کے سمبل علاقے سے تعلق رکھنے والا 46برس کا ڈاکٹر جس کو کوروناوائرس انفیکشن ہوا تھا اور اس سلسلے میں 4جولائی کو اس کا ٹیسٹ مثبت آیا اور علاج و معالجہ ک

کولگام میں پولیس کی جانب سے ماسک تقسیم

سرینگر //کولگام پولیس نے مقامی لوگوں میں ماسک تقسیم کئے اور ضلع انتظامہ کی جانب سے ہدایات کی خلاف ورزی کے مرتکب 75 افراد سے 14,600 جرمانہ کے بطور وصول کئے ۔کولگام پولیس نے مقامی لوگوں کی مدد کیلئے چوکی پولیس افسر میر بازار کی سربراہی میں میر بازار میں لوگوں میں ماسک تقسیم کئے اور لوگوں سے تلقین کی وہ کورونا وائرس کے پیش نظر انتظامیہ کی طرف سے وضع کئے گئے رہنما خطوط پر عمل کریں تاکہ اس وبائی بیماری سے بچا جائے۔ پولیس نے لوگو ں سے گزارش کی کہ سماجی دوری اور صحت وصفائی کا خاص خیال رکھیں اور ماسک استعمال کریں۔

بڈگام میں محرم انتظامات کا جائزہ لیا گیا

بڈگام//ضلع ترقیاتی کمشنر بڈگام شہباز احمد مرزا نے ایک اعلیٰ سطحی میٹنگ میں محرم انتظامات کا جائزہ لیا۔انہوں نے بجلی، پانی،گیس اور صحت و صفائی کے بارے میں جانکاری ھاصل کی ۔انہوں نے پی ڈی ڈی حکام کو ہدایت دی کہ اہم مقامات پر روشی کا بہتر انتظام کیا جائے اور سٹریٹ لائٹس نصب کی جائیں تاکہ عزاداروں کو کسی تکلیف کا سامنا نہ کرنا پڑے۔انہوں نے جنریٹر دستیاب رکھنے کی بھی ہدایت دی۔جل شکتی محکمہ کو ہدایت دی گئی کہ پانی کی ٹینکیاں مناسب جگہوں پر رکھیں اور پینے کے پانی کی بلا خلل سپلائی بھی یقینی بنائیں۔آر اینڈ بی محکمہ سے کہا گیا کہ سڑکوں کی فوری مرمت کیلئے اقدامات کئے جائیںجبکہ ایس ایف سی اور دیگر محکمہ جات کو اپنے اپنے کام خوش اسلوبی سے انجام دینے کی تاکید کی گئی۔   

لداخ سے جموں کشمیر کے ملازمین کو واپس لایاجائے

سرینگر//جموں وکشمیر اپنی پارٹی کے سینئرلیڈر اور سابق وزیر غلام حسن میر نے مرکزی زیر ِ انتظام علاقہ لداخ میں تعینات جموں وکشمیر کے ملازمین کی فوری واپسی سے متعلق پارٹی مطالبہ کو دہرایا ہے۔ ایک بیان میں میر نے کہا ہے کہ سینکڑوں ملازمین جوکہ جموں وکشمیر کے مختلف علاقوں میں رہتے ہیں، نے عمومی انتظامی محکمہ کے پاس پوسٹنگ کے لئے اپنی رضامندی بھی پیش کی ہے لیکن لداخ میں چار سال تک خدمات انجام دینے کے باوجود بھی ،ابھی تک انہیں لداخ یونین ٹیرٹری سے واپس نہ لیاگیا ہے ۔میر نے کہاکہ بدقسمتی سے ایسا لگتا ہے کہ جموں وکشمیر انتظامیہ اِن ملازمین کی حالتِ زار کو بھول چکی ہے جوکہ لداخ یوٹی کے اندر مشکل صورتحال میں کام کر رہے ہیں، جموں وکشمیر حکومت کے حکم نامہ کے مطابق اِ ن ملازمین نے عمومی انتظامی محکمہ (GAD) میں اپنی پسند کی تعیناتی کے لئے متبادل بھی دیئے تھے لیکن اِس کے باوجود ابھی تک انہیں وہیں تعینا

عید پرواجب الادا رقومات کی ادائیگی میں غیر ضروری اعتراضات

سرینگر//واجب الادا رقومات کی واگزری کیلئے سرکاری ٹریجریوں میں تعمیراتی ٹھیکیداروں کو تنگ و ہراساں کرنے کا الزام عائد کرتے ہوئے تعمیراتی ٹھیکداروں کے مشترکہ پلیٹ فارم سینٹرل کنٹریکٹرس کارڈی نیشن کمیٹی نے واضح کیا کہ گزشتہ برس گورنر کے مشیر،چیف سیکریٹری اور کمشنر خزانہ کے ساتھ کئی میٹنگوں کے بعد اصولی طور پر بغیر غیر ضروری اعتراضات رقومات کی واگزاری پر اتفاق ہوا ہے۔سینٹرل کنٹریکٹرس کارڈی نیشن کمیٹی کے جنرل سیکریٹری فاروق احمد ڈار نے کہا کہ2016کے بعد2019تک انتظامیہ اور اس وقت کی حکومت نے کئی تعمیراتی کاموں کو ہنگامی بنیادوں پر کیا، جن کے باضابطہ طور پر لوازمات پورے کئے گئے،تاہم بعد میں ان کاموں کے رقومات کو واگزار نہیں کیا گیا۔انہوں نے کہا کہ گزشتہ برس مارچ میں جب تعمیراتی ٹھیکیداروں نے واجب الادا رقومات واگزارنہ کرنے کیخلاف کام چھوڑ ہڑتال کے علاوہ ٹینڈروں میں شرکت کا سلسلہ بند کیا تو&nbs

مزید خبرں

قانون سازکونسل کے سابق لیفٹیننٹ گورنر سے ملاقی جموں//قانون سازکونسل کے سابق ممبر سریندر اَمباردارنے یہاں راج بھون میں لیفٹیننٹ گورنر گریش چندر مرمو کے ساتھ ملاقات کی ۔امباردار نے لیفٹیننٹ گورنر کی جانب سے شروع کی گئی حالیہ عوام تک رسائی کی کوششوں کو سراہا۔ اُنہوں نے کہا کہ اس نوعیت کی کوششیں زمینی سطح پر عوام کی ترقیاتی ضروریات اور توقعات کا تجزیہ کرنے کے لئے لازمی ہے۔اُنہوں نے کووِڈ۔19کے دوران پی ایم پیکیج ملازمین کو درپیش مسائل بھی اُن کے گوش گذار کئے اور نوجوانوں کو باہنر بنانے اور یونین ٹریٹری میں تعلیمی نظام کو توسیع دینے کی ضرورت پر زور دیا۔ لیفٹیننٹ گورنر نے اَمباردار کو یقین دِلایا کہ اُن کی جانب سے اُٹھائے گئے جائز مسائل کا تجزیہ کر کے اُنہیں ترجیحی بنیاد پر حل کیا جائے گا۔اُنہوں نے عوامی بہبود کے لئے ان کی جانب سے اُٹھائے جارہے اِقدامات کو جاری رکھنے کے لئے کہا۔  

تازہ ترین