تازہ ترین

کورانا سے اموات کا سلسلہ تھم گیا،24گھنٹوں میں کوئی فوت نہیں ہوا

 سرینگر // 26مارچ 2020کو جموں و کشمیر میں کورونا وائرس سے ہونے والی اموات کا سلسلہ بدھ کو تھم گیا ہے۔10ماہ بعد جموں و کشمیر کے دونوں صوبے میں کورونا وائرس سے کسی کی موت نہیں ہوئی ہے۔ ابتک وائرس سے 1912افراد فوت ہوئے ہیں جن میں 712افراد جموں صوبے میں جبکہ کشمیر میں وبائی وائرس نے 1200افراد کی جان لی ہے۔ پچھلے 24گھنٹوں کے دوران جموں و کشمیر میں وائرس کی تشخیص کیلئے 26ہزار 140تشخیصی ٹیسٹ کئے گئے جن میں 121افراد کی رپورٹیں مثبت آئیں اور اسطرح متاثرین کی مجموعی تعداد 1لاکھ 22ہزار 885ہوگئی ہے۔ ان میں 50ہزار933افراد جموں جبکہ 71ہزار 952افراد کشمیر صوبے میں فوت ہوئے ہیں۔  نئے 121معاملات میں سے 55جموں جبکہ 66کشمیر سے تعلق رکھتے ہیں۔ کشمیر میں متاثر ہونے والے 66افراد میں 35سرینگر، 8بارہمولہ، 7بڈگام، 5پلوامہ، 3کپوارہ، 0اننت ناگ، 1بانڈی پورہ، 5گاندربل ، 0کولگام اور 1شوپیان سے تعلق رکھتا

کرگل کے 75درماندہ مسافر ائر لفٹ

سرینگر //بھارتی ایئر فورس کی اے این  32نے بدھ کو 75 مسافرکرگل سے ایئر لفٹ کئے ۔ ان میں 21مسافروں کو کرگل سے سرینگر،2بچوں سمیت 27 مسافروں کو سرینگر سے کرگل جبکہ 27 مسافروں کو کرگل سے جموں ایئر لفٹ کیا گیا ۔ مسافروںکو لیزان آفیسر کرگل انور حسین، لیزان آفیسر سرینگر محمد رضا اور لیزان آفیسر جموں محمد یوسف کے علاوہ دیگر عملہ نے روانہ کیا ۔ کرگل کوریئر نامی پرواز 14جنوری بروز جمعرات موسم ٹھیک رہنے کی صورت میں کرگل سے سرینگر پرواز کرے گی۔         

گاندربل ضلع ہسپتال میں دس ماہ کے بعد کام کاج شروع | گزشتہ سال کورونا متاثرین کیلئے مخصوص کیا گیا تھا

گاندربل//ضلع ہسپتال گاندربل مسلسل دس ماہ تک کوڈ - 19 مریضوں کے لئے مخصوص رہنے کے بعد مختلف امراض میں مبتلا مریضوں کیلئے کھول دیا گیا جس کے باعث گاندربل کے عوام نے راحت کی سانس لی۔گزشتہ سال عالمی سطح پر کوروناوائرس وبائی بیماری نے خوف و ہراس کا ماحول قائم کردیا جس کے نتیجے میں 27 مارچ 2020 کو گاندربل میں قائم ضلع ہسپتال کو عام مریضوں کے لئے بند کرتے ہوئے کوروناوائرس میں مبتلا مریضوں کے لئے قرنطین مرکز میں تبدیل کردیا گیاجس کے سبب دیگر امراض میں مبتلا مریضوں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔اگرچہ محکمہ صحت نے پرائمری ہیلتھ سنٹر کچھن بیماروں کے لئے وقف کیا تھا تاہم وہاں بنیادی سہولیات کا فقدان ہونے کے نتیجے میں مریضوں کو گوناگوں مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا تھا۔اس دوران پانچ روز قبل محکمہ صحت کے کمشنر سیکریٹری اتل ڈلو نے اعلان کیا کہ گاندربل ضلع ہسپتال اب کورونا مریضوں کیلئے مختص نہیں رہے

پینے کے پانی اور بجلی کی عدم دستیابی | شار شالی پانپور میں لوگوں کا احتجاج

ترال//ضلع پلوامہ کے شار شالی پانپور علاقہ میں پینے کے پانی اور بجلی کی عدم دستیابی کے پیش نظر لوگوں نے متعلقہ محکموں کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا ۔احتجاجی مظاہرین نے بتایاکہ علاقے میں پینے کے پانی کی شدید قلت پائی جا رہی ہے ۔انہوں نے بتایاکہ علاقے میں بجلی کی وولٹیج بھی بہت کم ہے ۔فاروق احمد نامی ایک شہری نے بتایا کہ لوگ پانی کی عدم دستیابی کے پیش نظربرف استعمال میں لاتے ہیں ۔ احتجاج میں شامل لوگوں نے بتایا کہ علاقہ میں بجلی کی وولٹیج بہت کم ہے جس سے اُن کے مسائل میں مزید اضافہ ہوتا ہے۔احتجاجی لوگوں کے مطابق  علاقے میں یہی حال رابطہ سڑکوں کا بھی ہے۔انہوں نے کہا کہ سڑکیں خستہ ہونے کی وجہ سے وہ سخت مشکلات سے دوچار ہیں۔انہوں نے بتایاکہ کئی دفعہ یہ معاملات حکام کی نوٹس میں لائے گئے لیکن کوئی کارروائی نہیں کی گئی ۔انہوں نے جل شکتی اور بجلی محکمہ سے مداخلت کی اپیل کی ہے ۔  

منشیات مخالف مہم | اونتی پورہ، گاندربل اور بارہمولہ میںچار افرادگرفتار

 سرینگر// پولیس نے منشیات مخالف مہم کے دوران ترال میں دوافراد جبکہ گاندربل میں ایک شخص کو گرفتار کرلیا ہے۔اونتی پورہ پولیس نے گنکوچہ ترال کے علاقے میں ایک ’آئی 10‘گاڈی زیر نمبر JK03H-6312 کو روک کر تلاشی شروع لی ۔ دوران تلاشی گاڑی میں 6 کوڈین بوتلیں اور 270نشیلی ٹکیاں برآمد کر لی گئیںاور اویس اشرف تراگ ساکن ترال پائین کو گرفتار کرلیا۔اس جرم میں جو گاڑی استعمال میں لائی گئی اُسے بھی ضبط کر لیا گیا ۔ اونتی پورہ پولیس نے ایک اورکارروائی کے دوران لرگام ترال میں ناکہ چیکنگ کے دوران شبیر احمد گنائی ساکن لرگام کے قبضے سے 3 کلو بھنگ اور 300 گرام چرس بر آمد کیا ۔ اس سلسلے میں ترال تھانہ میں قانون کے متعلقہ دفعات کے تحت ایف آئی آر نمبر 02/2021، 03/2021کے تحت مقدمہ درج کرکے مزید تفتیش شروع کردی گئی ہے۔ ادھر گاندربل پولیس نے منشیات کے خلاف کارروائی کرتے ہوئے پیر پورہ گاندربل میں

سریکلچر ایمپلائز یونین کا وفد ڈائریکٹر سے ملاقی | کیجول ملازمین سمیت دیگر معاملات پر تبادلہ خیال

سرینگر//جموں و کشمیر سریکلچر ایمپلائز اینڈ ورکرس یونین کا ایک اعلیٰ سطحی وفد چیئرمین مقصود احمد بٹ کی قیادت میںمحکمہ کے سربراہ منظور احمد قادری سے ملاقی ہوا ۔یونین نے ایک بیان میں کہا ہے کہ محکمہ کو ایک ایماندار ،ملازم دوست،با صلاحیت و ہمدرد سربراہ ملا ہے جس کی محکمہ دوست اور ملازم دوست پالسیوں کی وجہ سے محکمہ کی کھو ئی ہوئی ساخت بحال ہو رہی ہے۔بیان کے مطابق وفد نے ایک میٹنگ میں وفد نے  چند اہم امور پر مدلل بات کی جس میں محکمہ میں کام کررہے کیجول مزدورو ں کا خاص کر ذکر کیا گیا اور باقی ملازمین کے چند اہم معاملات پر بھی بات ہوئی ۔ڈائریکٹر موصوف نے وفد کو یقین دلایا کی محکمہ کی ترقی کے لئے ضروری اقدامات کئے جائیں گے۔اور ملازمین و دیگر کیجول لیبروں کے مشکلات دور کرنے کے لئے کام شروع کیاجاچکا ہے اور بہت جلد کارکردگی منظر عام پر آئی گی ۔ منظور احمد قادری نے وفد کو ہمہ جہت کام کرنے کی

کپوارہ میںغریب کنبوںمیں کووڈ 19سیفٹی کٹ تقسیم

سرینگر//کپوارہ پولیس نے ضرورت مند لوگوں تک کوویڈ 19 سیفٹی کٹ پہنچانے کے لئے اپنی کوششوں کو جاری رکھتے ہوئے پولیس لائنزکپوارہ میں سویک ایکشن پروگرام کا انعقاد کیا۔ تقریب پرڈی وائی ایس پی ڈی اے آر سرفرازاحمد نے ضرورتمند افراد میںیہ سیفٹی کٹ تقسیم کئے جن میں آکسی میٹر ، ڈیجیٹل تھرمامیٹر ، ماسک ، سینی ٹائزر ، دستانے ،ماسک اور دیگر ضروری چیزیں شامل تھیں ۔اس موقعہ پرڈی ایس پی نے ضرورت مند اور غریب کنبوں کی طرف معاشرے کو اپنی ذمہ داریوں کے بارے میں سنجیدہ رہنے کی ضرورت پر زور دیا۔  

ڈی ڈی سی ممبرنے ترال میںموسمی صورتحال کا جائزہ لیا

ترال//پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی کے ترجمان اعلیٰ اورڈی ڈی سی ممبر ترال ڈاکٹر ہر بخش سنگھ(شنٹی) نے ترال کے مختلف علاقوں کا دورہ کر کے یہاں برف باری سے پیدا شدہ صورت حال کا جائزہ لیا۔اس دوران مذکورہ لیڈر نے گوجر بستی میں ضرورت مند افراد میں کمبل تقسیم کئے ۔ڈاکٹر ہر بخش سنگھ نے علاقے کے دور افتادہ گائوںبٹنور،کار مولہ ،پنیر جاگیر،ناگواڑی ، پنگلش اور مندورہ علاقوں کا دورہ کر کے یہاں حالیہ برف باری سے پیدا شدہ صورتحال کا جائزہ  ۔دورے کے دوران انہوں نے امرت ٹرسٹ کے تحت ایک سو غریب کنبوں میں کمبل تقسیم کئے ۔ڈاکٹر سنگھ نے بتایا کہ وہ ترال کی تعمیر و ترقی اور عوامی خد مت کے لئے کام کریں گے ۔   

۔26جنوری کے پیش نظروسطی اورجنوبی کشمیرمیں تلاشیاں اورمحاصرے | سرینگرجموں شاہراہ پر اضافی ناکے،گاڑیوں اور مسافروں کی چیکنگ

سرینگر// وادی میں26جنوری کی آمد سے قبل ہی وسطی اور جنوبی کشمیر میں بڑے پیمانے پر تلاشیوں اور محاصروں کا سلسلہ شروع کیا گیا  جبکہ سرینگر جموں شاہراہ پر بھی بڑے پیمانے پر گاڑیوں اور راہگیروں کی تلاشیوں کا سلسلہ دراز کیا گیا ہے۔26جنوری سے دو ہفتے قبل ہی فورسز، پولیس اور فوج متحرک ہوگئی ہے اور جامع تلاشیوں کا سلسلہ شروع کیا گیا ہے۔ بدھ کو شہر کے مضافات زیون میں فوج نے تلاشیوں کا سلسلہ شروع کیا۔مقامی لوگوں کے مطابق50آرآر سے وابستہ اہلکاروں نے علاقے میں تلاشی کارروائیوں کا سلسلہ شروع کیا اور اس دوران گاڑیوں اور راہگیرئوں کی تلاشی  لی گئی۔ مقامی لوگوں کا کہنا تھا کہ انہوں نے جنوبی کشمیر سے سرینگر داخل ہونے والی گاڑیوں کی تلاشی شروع کی تاہم اس دوران کسی بھی شخص کی گرفتاری کی کوئی اطلاع نہیں ہے ۔ نامہ نگار سید اعجاز کے مطابق جنوبی کشمیر کے لدو ناگہ بل علاقے میں بھی فوج کی50آر آر

خانیارقتل کیس کا معمہ12گھنٹوں میں حل | دوبھائیوں سمیت تین ملزم گرفتار،7000روپے کالین دین وجہ قتل

سرینگر//خانیار پولیس نے قتل کی ایک واردات کا معمہ بارہ گھنٹے میں ہی حل کرکے ملزموں کو گرفتار کیا ہے۔ 11 جنوری کورات 9 بجکر 50 منٹ کو پولیس کو قابل اعتماد ذرائع سے اطلا ع ملی کہ دستگیرصاحب ؒ کی زیارت گاہ کے قریب کچھ نامعلوم افراد نے ایک نوجوان کو چاقو مارکر شدیدزخمی کردیا۔مذکورہ نوجوان جس کی شناخت زیان چستی ولدسیدمحمداشرف چستی ساکن رعناواری کے طور ہوئی ،کو تشویشناک حالت میں صدراسپتال سرینگر پہنچایا گیاجہاں ڈاکٹروں نے اُسے مردہ قراردیا۔پولیس تھانہ خانیار نے اس سلسلے میں کیس  زیر نمبر 03/2021 درج کرکے تحقیقات شروع کردی۔ دوران تحقیقات پولیس نے تیکنیکی اور جائے واردات سے دیگر شواہد اکٹھا کئے اور عینی شاہدین کی جانچ پڑتال شروع کی گئی۔ جس کے نتیجے میں تفتیشی افسر کواس گھنائونے جرم میں ملوث تین ملزموں کے بارے میں پختہ ثبوت ملے۔ ملزموں میں دوبھائی اور ایک اورنوجوان شامل ہے۔ پولیس نے ان کی

مزید خبریں

 ڈاکٹر درخشاں اَندرابی کی لیفٹیننٹ گورنر سے ملاقات  | کشمیرمیں منشیات کی بدعت کا قلع قمع کرنے کی اپیل سرینگر//ممبر مرکزی وقف کونسل اور چیئر پرسن وقف ڈیولپمنٹ کمیٹی ، مرکزی وزارت اقلیتی امور ڈاکٹر درخشاں اندرابی نے  یہاں راج بھون میں لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا سے ملاقات کی۔ڈاکٹر اندرابی نے حالیہ کچھ عرصہ میں جموں و کشمیر میں نئی صنعتی ترقیاتی سکیم سمیت متعدد ترقیاتی پروگراموں کے اعلان ، عمل درآمد اور شروع کرنے پر لیفٹیننٹ گورنر کا شکریہ اَدا کیا۔ڈاکٹر درخشاں اَندرابی نے عوامی اہمیت کے حامل مختلف امور پر تبادلہ خیال کیا جس میں لیفٹیننٹ گورنر سے جموں و کشمیر کے مختلف علاقوں میں زیارت گاہوں کی ترقی شامل ہے۔انہوں نے کشمیر میں منشیات کی بدعت کی تشویشناک صورتحال کا مسئلہ بھی اٹھایا اور کیسے نوجوان اس بدعت کا شکار ہوگئے۔انہوں نے لیفٹیننٹ گورنر سے اپیل کی کہ وہ اس بدعت سے نمٹن

تازہ ترین