ٹرک ، ایمبولنس اور سومو کو حادثے | مریض خاتون اور کنڈیکٹر لقمۂ اجل ، 10افراد زخمی

بانہال+کپوارہ // رام بن اور بٹوت میں  سڑک کے دو حادثات میں خاتون اور ٹرک کا کنڈیکٹر لقمہ اجل جبکہ ایک شخص زخمی ہوا۔ادھر بڈ نمبل چوکی بل کپوارہ میں اسی طرح کے حادثے میں 9مسافر زخمی ہوئے۔سیمنٹ سے بھراٹرک زیر نمبر JK14E/6413 اتوار کی صبح ساڑھے 7بجے منکی موڑ رام بن شاہراہ پر گہری کھائی میں جاگرا۔ حادثہ میں ٹرک کا کنڈیکٹر موقع پر ہی لقمہ اجل بن گیا جبکہ ڈرائیور زخمی ہوگیا۔یس ایس پی رام بن پی ڈی نتیا کاکہنا ہے کہ انہیںساڑھے7بجے اطلاع موصول ہوئی کہ سیمنٹ سے بھرے ٹرک کو شاہراہ پر حادثہ پیش آیا ہے۔ انہوںنے کہاکہ حادثہ میں کنڈیکٹر رتن سنگھ ولد شیر سنگھ ساکن بھاگہ ریاسی کی موقع پر ہی موت واقع ہوئی جبکہ ڈرائیور شلیندر سنگھ ولد کاکا رام ساکن سیواناسٹیالٹہ ادھمپور شدید طور پر زخمی ہوا اور اسے ضلع ہسپتال رام بن پہنچایاگیا۔ ادھرسنیچر کی شام گورنمنٹ میڈیکل ڈوڈہ سے شیر کشمیر انسٹیٹیوٹ آف میڈیکل سا

ملکیتی اراضی پر سکول تعمیر کرنے والے زمیندار وں کی کون سنے ؟ | محکمہ تعلیم رقومات کی ادائیگی میں ناکام ،متعدد عمارات برسوں سے تشنہ تکمیل

بانہال // ایس ایس اے سکیم کے تحت اپنے ہی پیسے سے اپنی ملکیتی آرضی پر سکول تعمیر کرنے والے لوگوں کو محکمہ تعلیم کی جانب سے ایک بھی پیسہ ادا نہیں کیا گیا ہے ،جس کی وجہ سے ان لوگوں کی جان پر بن آئی ہے۔ایسے  زمیندار نما ٹھیکداروںکا کہنا ہے کہ ایس ایس اے کی جانب سے انہیں بقایا رقومات ادا ہی نہیں کی گئی ہیں۔ضلع رام بن کے درجنوں ایسے افراد محکمہ تعلیم جموں اور رام بن دفاتر کے چکر کاٹ کاٹ کرتھک ہار چکے ہیں اور محکمہ کے عہدیداران ٹال مٹول سے کام لے رہے ہیں ۔ سکولوں کیلئے اپنی زمینیں عطیہ کرنے والے کئی زمینداروں نے کشمیر عظمیٰ ٰسے بات کرتے ہوئے کہا کہ 2014 سے 2018 تک ضلع رام بن کے کئی علاقوں کیلئے سکولی عمارتوں کو تعمیر کرنے کی منظوری دی گئی اور سکول کی اِن عمارتوں کو تیار کرنے کا کام یا ٹھیکہ اپنی ملکیتی آراضی دینے والے زمینداروں کو ہی دیا گیا اور انہوں نے قرض لیکربیشتر سکولی عمارتوں کو

بجلی پروجیکٹوں کی تعمیر کیلئے مقامی بیروزگار انجینئروں کی تعیناتی کا معاملہ | اثر رسوخ رکھنے والوں کو ترجیحی دینے سے انتظامیہ گریز کرے : پی ڈی پی

 کشتواڑ // پی ڈی پی نے کہا ہے کہ ضلع کشتواڑ میں بے روز گاری کا مسئلہ دن بدن بڑھتا جارہا ہے جبکہ بے روزگار انجینئروں کی تعداد بھی مسلسل بڑھتی جارہی ہے جو اس اُمید میں تھے کہ ضلع کے اندر تعمیر ہورہے پاور پروجیکٹوں میں انہیں کام ملے گا ،لیکن ضلع انتظامیہ نے جس طرح کا رویہ اختیار کیا ہے ،وہ ناقابل یقین ہے اور ان بیروز گاروں کے ساتھ ناانصافی ہے۔ پی ڈی پی کے ریاستی سکریٹری ایڈوکیٹ شیخ ناصر حسین نے کہا حکام کی عدم توجہی کی وجہ سے تمام انجینئروں میں شدید غم وغصہ پایا جا رہا ہے کیونکہ انتظامیہ نے منظور نظر افراد کو ہی ترجیحی دی ہے اور ان ہی افراد کوانٹرویو کیلئے بلایا گیا ہے جو اثر رسوخ رکھتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ اس تعلق سے انہوں نے پروجیکٹوں کو تعمیر کرنے والی کمپنیوں جن میں افکان ، پٹیل ، جے پرکاش شامل ہیں کے حکام سے بات کی تو انہوں نے بتایا کہ ضلع انتظامیہ نے چند ہفتے قبل ایک ایپ ضلع م

بدناڑ کا عارضی پل یا موت کا کنوں | آمدورفت کے دوران متعدد لوگ بہہ گئے، انتظامیہ کی نیند پھر بھی نہیں ٹوٹی

مہور//سب ڈویژن مہور کے بدناڑ میں لکڑی کا بنا ہوا ایک عارضی لوگوں کیلئے موت کا کنوں ثابت ہو رہا ہے کیونکہ اس پل سے ابھی تک متعدد افراد اپنی جانیں گنوں چکے ہیں اور آج بھی اس پل سے مقامی لوگ جان کو جوکھم میں ڈال کر سفر کرتے ہیں ۔مقامی لوگوں کا کہنا ہے کہ اس پل کے نیچے سے ایک بہت بڑا دریا گزرتا ہے اور اس پل کے اُپر سے ہی شبراس اور اڑبیس کے لوگ گزرتے ہیں جنہیں اس پل کو عبور کرنے میں کافی دقتیں پیش آتی ہیں ۔مقامی لوگوں نے کہا کہ اس پل سے ابھی تک کئی ایک لوگ نالہ میں بہہ گئے ہیں لیکن پھر بھی انتظامیہ کی نیند نہیں ٹوٹ رہی ہے کیونکہ اگر انتظامیہ سنجیدہ ہوتی تو علاقے کے لوگوں کے عبور ومرور کیلئے ایک پل کی تعمیر کا کام ہاتھ میں لیا گیا ہوتا لیکن انتظامیہ خاموش لوگوں کے مشکلات کا تماشہ دیکھ رہی ہے ۔مقامی لوگوں نے مزید کہا کہ برسات کے موسم میں جب پانی کا بہائو بڑھ جاتا ہے تو پانی عاضی پل کے اوپر

جنگلات کی حفاظت صحت مند ماحول کیلئے ضروری | سرنا بھدرواہ میں سی آر پی ایف نے 4500 لگائے

بھدروہ// سی آر پی ایف کی 33 ویں بٹالین نے اتوار کے روز بھدرواہ کے سرنا پنچایت میں 19 اقسام کے 4 ہزار سے زیادہ پودے لگائے۔ یہ مہم سی آر پی ایف کے ’ ڈپٹی کمانڈ نیرج تیاگی کی سربراہی میں انجام دی گئی۔ حکام نے بتایا کہ 33 ویں بٹالین سی آر پی ایف کی ڈپٹی کمانڈر سمیت یونٹ کے دیگر افسران اور جوانوں نے مل کر 4ہزار 5سو پودے لگائے ۔جوانوں سے خطاب کے دوران 33 بٹالین کے ڈپٹی کمانڈنٹ نیرج تیاگی نے کہا کہ موجودہ ترقی یافتہ دور میں ہم سرسبز سونے کو تیزی سے کھو رہے ہیں ۔تیاگی نے مزید کہا ’’درخت ہمیں آکسیجن دیتے ہیں جو شہری علاقوں میں رہنے والے لوگوں کے لئے ایک نایاب چیز بن چکی ہے۔انہوں نے کہا کہ اس اقدام سے نہ صرف سبز احاطہ کی بحالی اور آلودگی کے مسائل سے دوچار افراد کو خالص آکسیجن فراہم کرنے میں مدد ملے گی بلکہ اس سے ان کو فائدہ بھی پہنچے گا ۔انہوں نے سب پر زور دیا کہ جنگلات ک

مزید خبریں

اشتعال انگیز ویڈیو شیرکرنے کا شاخسانہ |  گاندربل کا شہری کشتواڑ میں گرفتار  عاصف بٹ کشتواڑ //کشتواڑ پولیس نے سماجی رابطہ کی وئب گاہوں پر اشتعال انگیز ویڈیو اپ لوڈ کرنے کی پاداش میں گاندربل کے ایک شہری کی گرفتاری عمل میں لائی ہے ۔جمعہ کے روز رات دیر گئے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ پر ایک ویڈیو گردش کر رہا تھا جس میںکچھ افراد کو جانوار ذبح کرتے ہوئے دیکھا گیا تھا ۔ ویڈیو کلپ کی حساسیت اور علاقے میں فرقہ وارانہ ہم آہنگی کے معاملے کو دیکھتے ہوئے پولیس نے قانون کے متعلق متعدد دفعات کے تحت پولیس تھانہ کشتواڑ میں ایف آئی آر نمبر 167 /2021 درج کرنے کے بعد سائبر سیل کو متحرک کیاگیا اور ملزم کی گرفتاری کیلئے ٹیمیں تشکیل دی گی۔ جسکے بعد پولیس نے دوگھنٹوں کے اندر منظور احمد رینہ ولد غلام نبی رینہ ساکن خانان کنگن گاندربل کو ڈول سے گرفتار کرلیا ۔ پولیس کے مطابق ابتدائی تفتیش سے معل

بٹوٹ کے نزدیک ایمبولینس کو حادثہ

 بانہال // سنیچر کی شام گورنمنٹ میڈیکل کالج ڈوڈہ سے شیر کشمیر انسٹیٹیوٹ آف میڈیکل سائنسز صورہ سرینگر کی طرف آنے والی ایک ایمبولینس گاڑی بٹوٹ کے نزدیک حادثے کا شکار ہو کر کھائی میں جا گری جس کے نتیجے میں گاڑی میں سوارمریض خاتون لقمہ اجل بن گئی جبکہ اس کے ساتھ دیگر دو تیماردار زخمی ہوئے ہیں ۔پولیس نے اس حادثے میں مرنے والی بیمار خاتون کی شناخت 73 سالہ حسینہ بیگم، زوجہ مرحوم بہادر ملک ،ساکن ٹانٹنا ڈوڈہ کے طور کی ہے۔ ایس ایچ او بٹوٹ رنجیت سنگھ نے بتایا کہ اس ایمبولینس میں ڈوڈہ سے سرینگر لی جارہی مریضہ کی موت موقع پر ہی واقع ہوگئی تھی، جبکہ اس خاتون کے ساتھ زخمی تیماردار محمد امین ملک اور ان کی اہلیہ فریدہ بیگم ساکنہ ٹانٹنا ڈوڈہ کو ایمرجنسی ہسپتال بٹوٹ میں داخل کیا گیا ہے۔ انہوں نے کہاکہ پولیس نے ضابطے کے تحت کارروائی شروع کی ہے۔بتایا جاتا ہے کہ ایمبولینس ڈرائیور اس حادثے میں معمولی زخ

مسافر کرایہ میں اضافہ

 بانہال// ضلع رام بن کے متعدد روٹوں اور جواہر ٹنل کے آر پار چلنے والی مسافر گاڑی نے مسافروں کی ناک میں دم کر دیا ہے اور من مرضی سے مسافر کرایہ کو بڑھا کر مسافروں کےلئے پریشانیاں پیدا کی ہیں ۔ منگت سے بانہال تک 35 کلومیٹر کی مسافت پر 2سو روپے ، بانہالی سے کھنہ بل تک 50 کلومیٹر کی مسافت پر اڑھائی سو ، بانہال سے رام بن تک 35 کلومیٹر کی مسافت پر اڑھائی سو روپئے ، مہو سے بانہال تک دو سو روپئے شخ اور راجگڑھ سے چندر کوٹ تک 17 کلومیٹر کیلئے ایک سو روپئے کی رقم بطور کرایہ وصولی جاتی ہے۔ یہاں سرکار کی طرف سے مسافر کرایہ کیلئے جاری ریٹ لسٹ پر کوئی عمل نہیں ہورہا ہے اور عملے کی شدید قلت سے دوچار محکمہ موٹر وہیکلز ڈیپارٹمنٹ روزانہ لوگوں کی شکایتوں اور ڈرائیوروں کے خلاف کاروائیوں کے باوجود مسافر کرایہ کے من مانے اضافے پر کوئی خاص قابو نہیں پاسکا ہے۔منگت سے بانہال تک دو سو روپئے کرایہ وصولنے کے

ڈوڈہ میں ہفتہ وار کورونا کرفیو نافذ

 ڈوڈہ //ڈوڈہ ضلع میں ہفتہ وار کورونا کرفیو کے سلسلے میں بندشیں عائد رہیں جس دوران نجی کاروباری ادارے بند رہے اور معمولات زندگی متاثر ہوئی۔ اطلاعات کے مطابق سنیچر کو ڈوڈہ، بھدرواہ، ٹھاٹھری ،گندوہ و عسر میں ہفتہ وار کورونا کرفیو نافذ رہا،تاہم پبلک ٹرانسپورٹ جاری رہا۔ ایس او پیز پر عمل درآمد کرنے و امن و قانون کی صورتحال برقرار رکھنے کےلئے پولیس و سیکورٹی فورسز کی نفری بھی تعینات رہی۔ ادھر سیول سوسائٹی نے انتظامیہ کی جانب سے جاری ہفتہ وار کورونا کرفیو کو فضول مشق قرار دیا ہے۔انتظامیہ نے لوگوں سے احتیاطی تدابیر اختیار کرنے و ایس او پیز پر عمل کرنے کی اپیل کی ہے۔ ۔۔۔۔۔۔۔

لاک ڈاﺅن سے مزدور طبقہ پریشان

 ڈوڈہ //ڈوڈہ ضلع میں ہفتہ وار کورونا کرفیو کو لے کر تجارت پیشہ افراد نے احتجاج کرتے ہوئے بندشیں ہٹانے کا حکام سے مطالبہ کیا ہے۔ اطلاعات کے مطابق ہفتہ کے روز سیول سوسائٹی و بیوپار منڈل کی جانب سے ڈوڈہ کی تحصیل گندوہ و چلی پنگل کے ملکپورہ میں احتجاجی مظاہرہ کیا جس دوران مظاہرین نے ہفتہ وار کورونا کرفیو پر حیرت کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ عرصہ ڈیڑھ سال سے کاروباری افراد و مزدو طبقہ بری طرح متاثر ہوا ہے جبکہ مسلسل لاک ڈاﺅن میں سبزی فروشوں، چکن، گوشت و دودھ سپلائی کرنے والے افراد کو لاکھوں کی مالیت کا سامان تباہ ہوا ہے لیکن اس کی کسی نے بھرپائی نہیں کی۔ چیئرمین یونائٹڈ فرنٹ بھلیسہ محمد حنیف ملک نے اس موقع پر بولتے ہوئے کہا کہ ڈوڈہ ضلع اور باالخصوص بھلیسہ سب ڈویژن میں کوو¿ڈ 19 کے کافی عرصہ سے کوئی کیس نہیں آرہے ہیں لیکن اس کے باوجود ہفتہ وار کورونا کرفیو کے سلسلے میں بندشیں عائد ہ

اوقاف و سیول انتظامیہ کی عدم توجیحی

کشتواڑ // کشتواڑ میں پانی کے نکاس کےلئے تعمیر کی جا رہی ڈرین مرکزی قبرستان کےلئے خطرہ بن گئی ہے ۔مقامی لوگوں نے ضلع انتظامیہ اور متعلقہ محکمہ جات سے مطالبہ کیا ہے کہ اس ڈرین کی تعمیر جلد مکمل کی جائے او ر اگر متعلقہ محکمہ ایسا کرنے میں ناکام رہا تو قبرستان کے ڈہہ جانے کا خطرہ لاحق ہو سکتا ہے ۔معلوم رہے کہ قصبہ میں گندے پانی کے نکاس کےلئے سرکار نے ایک منصوبہ بنایا ہے اور متعدد علاقوں میں ان کی تعمیر کا کام بھی چل رہا ہے لیکن مقامی لوگوں کا الزام ہے کہ کئی جگہوں پر ان کا کام ادھورا چھوڑا گیا ہے جبکہ کئی ایک جگہوں پر کام سست رفتاری سے بھی جاری ہے اور اب اس میں گندہ پانی جمع ہو رہا ہے ۔مقامی لوگوں کا کہنا ہے کہ اس سے نہ صرف بدبھو پھیل رہی ہے بلکہ مقامی مرکزی قبرستان کے ڈھہ جانے کا بھی شدید خطرہ لاحق ہو گیا ہے ۔ مقامی لوگوں نے تشویش کا اظہار کرتے ہوے کہا کہ انتظامیہ کی عدم توجہی کے سبب کام

غیر قانونی کان کنی

 ریاسی //غیر قانونی کان کنی میں ملوث افراد کے خلاف ریاسی پولیس نے سخت کارروائی عمل میں لاتے ہوئے 12گاڑیوں کو ضبط کیا ہے ۔ پولیس ذرائع کے مطابق عوامی نمائندوں کی مدد سے ریاسی پولیس کی متعدد ٹیموں نے گذشتہ دو ہفتوں کے دوران مختلف مقامات پرچھاپے مار کارروائی عمل میں لائی اور اس دوران غیر قانونی کان کنی میں مصروف 12 گاڑیاں ضبط کیں۔پولیس کے مطابق رات بھر کے تعجب خیز آپریشن میں ان گاڑیوں کو ضبط کیا گیا ۔یہ کارروائی ضلع کے مختلف نالوں پر انجام دی گئی ۔پولیس کے مطابق کچھ ایک افراد اندھیرے کا فائدہ اٹھا کر نالوں سے غیرقانونی طور پر پتھر باجری اور ریت نکال رہے تھے ۔پولیس کا کہنا ہے کہ ان گاڑیوں کو ضبط کر کے ان کے مالکان کے خلاف کیس درج کیا گیا ہے۔پولیس نے لوگوں سے اپیل کی ہے کہ وہ غیر قانونی کان کنی سے پریز کریں ورنہ ان کے خلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے گی ۔معلوم رہے کہ ریاسی پولیس نے

پنچایتی راج ایکٹ کی واقفیت

کشتواڑ // ضلعی ترقیاتی کونسل کی چیئر پرسن کشتواڑ پوجا ٹھاکر نے ڈی ڈی سی وائس چیئرپرسن صائمہ شبیر لون کی موجودگی میں کونسل کے ممبران اور متعلقہ افسران کے اجلاس کی صدارت کی ۔نچلی سطح پر پنچایتی راج ایکٹ کے نفاذ سے متعلق تربیت پروگرام بھی منعقد ہوا۔ ایڈیشنل ڈسٹرکٹ ڈویلپمنٹ کمشنر شام لال ، اسسٹنٹ کمشنر پنچایت کے علاوہ بی ڈی اوز نے شرکاءکو پنچایتی راج ایکٹ کے مختلف پہلوو¿ں اور دفعات کے بارے میں تربیت دی اور ضلع میں پنچایت راج انسٹی ٹیوٹ کے ڈھانچے اور اس کے کام کے بارے میں تفصیلی تبادلہ خیال کیا۔ جانکاری پروگرام کے دوران شریک ڈی ڈی سی ممبران میں تربیتی کٹس تقسیم کی گئیں۔اسسٹنٹ کمشنر پنچایت اور دیگر مقررین نے ایکٹ کے نفاذ کے بارے میں آگاہی کے علاوہ نو تشکیل شدہ ضلعی ترقیاتی کونسل کی سہ ماہی میٹنگوں کے انعقاد میں رہنما اصول ، کردار اور ذمہ داریاں کے حوالے سے بھی جانکاری دی ۔قبل ازیں ڈی

مزید خبریں

ڈوڈہ میں ڈرونز پر پابندی عائد   نزدیکی پولیس تھانوں میں جمع کرنے کی ہدایت  ڈوڈہ //یوٹی کے دیگر اضلاع کی طرح ڈوڈہ ضلع میں بھی ڈرون طیاروں پر پابندی عائد کردی ہے۔اس سلسلے میں ہفتہ کے روز ڈپٹی کمشنر ڈوڈہ وکاس شرما کی جانب سے جاری حکمنامہ میں سی آر پی سی کے سیکشن 144 کی استدعا کرتے ہوئے ضلع میں ڈرون و اس طرح کی نامعلوم فضائی گاڑیوں کے اسٹوریج ، فروخت، قبضے ، استعمال اور نقل و حمل پر پابندی عائد کردی ہے۔ حکمنامہ میں محکمہ زراعت ، ماحولیاتی تحفظ اور آفات سے تخفیف کے شعبے میں نقشہ سازی ، سروے اور نگرانی کےلئے ڈرون کی ضرورت والے سرکاری محکموں کو عوامی مفاد میں اس طرح کی کوئی سرگرمی کرنے سے قبل مقامی پولیس اسٹیشن و ایگزیکٹو مجسٹریٹ کو مطلع کرنے کی ہدایت کی گئی ہے اور پہلے سے ہی ان لوگوں کے پاس ڈرون کیمرے ، اسی طرح کی ہوائی گاڑی اپنے پاس رکھے ہوئے ہیں ۔ انھیں مناسب رسید کے

مذہبی مقامات میں بھی پانی کا بحران،پائپیں زنگ آلودہ و حوض خستہ حال

خشک سالی پانی کی کمی کا سبب، نئے پروجیکٹوں پر کام شروع :حکام  ڈوڈہ //ڈوڈہ ضلع کے بیشتر علاقوں میں پینے کے صاف پانی کی کمی کے باعث مقامی آبادی کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ پانی کی عدم دستیابی سے عورتوں، بچوں و بزرگوں کو کوسوں دور جاکر نالوں سے پانی لانا پڑتا ہے اس دوران درجنوں مذہبی مقامات میں بھی پانی کی قلت پائی جاتی ہے۔ ڈوڈہ، گھٹ، گندنہ، کاستی گڑھ،مرمت، عسر، چرالہ کاہرہ، بھالہ، بھدرواہ، چلی پنگل، بھلیسہ و بونجواہ سے کئی عوامی وفود نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ سینکڑوں اسکیمیں ناکارہ ہو چکی ہیں جبکہ درجنوں پانی کے حوض و ٹنکیاں ناقابل استعمال بن چکے ہیں اور محکمہ جل شکتی سے بار بار رجوع کرنے کے بعد بھی عملی اقدامات نہیں کئے جا رہے ہیں جس کے نتیجے میں مقامی آبادی کو کافی پریشانی کا سامنا ہے۔ تحصیل کاہرہ سے آئے ایک وفد نے بتایا کہ بٹوگڑہ، کنو، ملانوں، ہلارن، درمن و دیگر

گول میں محکمہ دیہی ترقی کا احتساب کرنے کا عوامی مطالبہ طول پکڑنے لگا

گول//گو ل میں محکمہ دیہی ترقی کی جانب سے پنچایتی سطحوں پر جہاں نریگا سکیم کے تحت خزانہ عامرہ سے لاکھوں روپے نکالے ہیں وہیں پنچایتی نمائندوں پر دوستوں ، رشتہ داروں اور احباب کو خوش رکھنے کے لئے بھی خزانہ عامرہ کو لوٹنے میں کوئی کسر باقی نہ رکھنے کا الزام عائد کیاجارہا ہے ۔ محکمہ دیہی ترقی گول پرالزام ہے کہ اس طرح سے لاکھوں یہاں تک کہ کروڑوں روپے کا خرد برد ہوا ہے اور آج بھی لوگ اُن ندی نالیوں کے لئے محکمہ سے استدعا کرتے ہیں جن کے نام محکمہ نے پہلے ہی لاکھوں روپے نکالے ہیں ۔ گول بلاک میں تمام پنچایتوں کا یہی حال ہے ۔ اگر چہ محکمہ دیہی ترقی سے کئی لوگوں نے آر ٹی آئی کے ذریعے رپورٹ بھی مانگی تھی لیکن محکمہ صحیح رپورٹ دینے سے قاصر ہے جس سے تاثر ملتاہے کہ محکمہ اپنے کرتوتوں پر پردہ ڈالنے کے لئے لوگوں کو صحیح رپورٹ پیش نہیں کرتے بلکہ ٹال مٹول کر کے ہر سال میں ایک ایک کام کو دکھاتے ہیں جبکہ

ڈی سی کشتواڑ نے پی ایم جے اے صحت رجسٹریشن کی صورتحال کا جائزہ لیا

کشتواڑ ، // ڈپٹی کمشنر (ڈی سی) کشتواڑ اشوک شرما نے ضلع میں حکومت کے پرچم بردار آیوشمان بھارت پردھان منتری جان آروگیا یوجنا (AB-PMJAY) SEHAT اسکیم کے نفاذ کا جائزہ لینے کے لئے متعلقہ افسران کی ایک میٹنگ کی صدارت کی۔اجلاس کو بتایا گیا کہ 103 سی ایس سی ضلع بھر میں کام کر رہی ہیں جس میں لوگ اسکیم کے تحت فوائد حاصل کرنے کے لئے اپنا اندراج کرتے ہیں اور اب تک ضلع میں 90000 افراد کو رجسٹرڈ کیا جا چکا ہے۔میٹنگ میں ، ڈی سی نے باقی مستفید افراد کی خدمت کے لئے اندراج کی سہولیات میں اضافہ کرنے پر زور دیا۔انہوں نے سی ایم او کو ہدایت کی کہ وہ اسکیم کے تحت فیصد فیصد کوریج کے لئے لوگوں میں شعور اجاگر کرنے کے لئے عوامی سطح پر آگاہی مہم چلائیں۔ انہوں نے اسکیم کے بارے میں بڑے پیمانے پر آگاہی پیدا کرنے کے لئے ASHA ورکرز ، VLWs وغیرہ سمیت فیلڈ لیول ورکرز کو متحرک کرنے کی بھی ہدایت کی۔مزید برآں ، VLEs ک

پرتمولہ گول میں گیس سلینڈر پھٹنے سے مچاکہرام

گول//گزشتہ شام کو پرتمولہ علاقہ میں طارق احمد ولد عبدالرحیم لوہار ساکنہ پرتمولہ، وارڈ نمبر 7شام کو اچانک گھر میں موجود گیس سلینڈر نے آگ پکڑ لی جس وجہ سے کافی افرا تفری کا ماحول پیدا ہوا ۔ اس دوران رہائشی مکان کے دو کمروں کو آگ سے نکال پہنچا اس دوران وہاں پر موجود لوگوں نے فوری طو رپر گیس سلینڈرکو کسی طریقے سے باہر پھینک دیا اور فوری طو رپر فائر بریگیڈ کو بلایا ۔ کشمیر عظمیٰ کے ساتھ بات کرتے ہوئے مقامی سرپنچ مشتاق احمد نے بات کرتے ہوئے کہا کہ لوگوں نے کافی محنت کی اور فائر برگیڈ بھی جلدی سے پہنچی جس وجہ سے مکان کو زیادہ نقصان ہونے نہیں دیا اور افراد خانہ کو بھی کوئی جانی نقصان نہیں ہوا ۔ انہوں نے کہا کہ رہائشی مکان کے دو کمروں کو نقصان پہنچا ہے باقی اشیاء کو جل گئی ۔ انہوں نے انتظامیہ سے مطالبہ کیا کہ اس غریب شخص کی امداد کی جائے ۔ 

ضلع رام بن میں کووڈ رہنما اصولوں کی پاسداری کے تحت نماز عید کی سینکڑوں تقریبات

بانہال //کووڈ انیس کے رہنما اصولوں کی سخت پاسداری کے تحت ضلع رام بن کے شہر و گام میںبدھ کے روز نمازعید کے سینکڑوں اجتماعات منعقد ہوئے اور ہزاروں کی تعداد میں فرزندان توحید نے کووڈ ایس او پیز کو اپناتے ہوئے شدید بارشوں میں گاوں ، قصبوں اور تحصیل صدر مقامات کی چھوٹی بڑی مساجد میں نماز عید ادا کی ۔ کووڈ انیس کی وبائی صورتحال کے پیش نظر حکام نے لوگوں کو عیدگاہوں کے بجائے مقامی مساجد میں اول وقت میں ہی نماز عید ادا کرنے کی اپیل کی تھی اور ائمہ مساجد اور مساجد کمیٹیوں نے ان احکامات کو عملی جامہ پہنایا اور ضلع رام بن کی تقریبا تمام مساجد میں نماز عید اولین اوقات میں صبح ساڑھے آٹھ بجے سے پہلے پہلے  ہی ادا کی گئی اور اس موقع پرکووڈ کے تمام تر احتیاطی تدابیر کو عملایا گیا تھا  ۔ ضلع رام بن میں نماز عیدالا ضحی کا سب سے بڑا اجتماع مرکزی جامع مسجد بانہال میں منعقد ہوا جہاں سینکڑوں کی تعدا

کووڈ ایس اوپیز کی خلاف ورزی پر20ہزار کا جرمانہ

رام بن //ضلع رام بن میں کووڈ پروٹوکول کے نفاذ کے لئے مہم کو جاری رکھتے ہوئے انفورسمنٹ ٹیموں نے متعدد خلاف ورزی کرنے والوں کو چہرے کے ماسک پہنے بغیر گھومنے اور جسمانی فاصلہ برقرار نہ رکھنے پر جرمانہ عائد کیا۔نفاذ کرنے والی ٹیموں نے اپنے اپنے دائرہ اختیار میں معائنہ کے دوران 19ہزار700 روپے جرمانہ وصول کیا۔ انفورسمنٹ افسران نے لوگوں سے اپیل کی کہ وہ چہرے کے ماسک پہنیں اور جسمانی فاصلہ برقرار رکھیں اس کے علاوہ وہ اپنے قریبی سی وی سی میں کوویڈ ویکسی نیشن ڈوز لیں۔ ضلع امیونائزیشن آفیسرڈاکٹر سریش نے بتایا کہ ضلع رام بن میں مزید 1507 افراد کو پہلی اور دوسری کوویڈ ویکسین کی خوراکیں فراہم کی گئیں۔چیف میڈیکل آفیسرڈاکٹر محمد فرید بھٹ کی طرف سے جاری کردہ روزانہ بلیٹن کے مطابق محکمہ صحت نے 1214 نمونے جمع کیے ہیں جن میں 310 آر ٹی-پی سی آر اور 904 آر اے ٹی نمونے شامل ہیں ، اس کے علاوہ ضلع میں ٹیک

تازہ ترین