رام بن میں یوم جمہوریہ منانے کی تیاریاں مکمل

رام بن// ضلع ہیڈکوارٹر ٹاؤن میں آج یعنی26جنوری کو 73 ویں یوم جمہوریہ کی تیاریاں زوروں پرہیںاور کسی بھی واقعے سے بچنے کے لیے سیکورٹی کو بڑھا دیا گیا ہے اور پولیس بھی چوکس ہے۔ڈسٹرکٹ پولیس لائنز چندروگ میں ہر سال یوم جمہوریہ منایا جاتا ہے تاہم مرکزی تقریب اس سال گورنمنٹ ماڈل ہائیر سیکنڈری سکول گراؤنڈ میں منائی جائے گی۔یوم جمہوریہ کا پروگرام کورونا پروٹوکول کے مطابق منعقد کیا جائے گا۔ضلعی انتظامیہ کی جانب سے جاری کردہ اطلاعات کے مطابق یوم جمہوریہ کی تقریبات کے حوالے سے دو روز قبل ڈپٹی کمشنر مسرت الاسلام کی ورچوئل میٹنگز میں یوم جمہوریہ کی تیاریوں کے کام کی نگرانی کے لیے متعدد اجلاس منعقد کیے گئے۔ اس دن کے پروگرام کی تیاریوں کے حوالے سے متعلقہ حکام کو ضروری ہدایات دی گئیں۔میٹنگ کے دوران پولیس سپرنٹنڈنٹ موہتا شرما اور ضلع انتظامیہ کے دیگر افسران موجود تھے۔سپرنٹنڈنٹ آف پولیس ٹریفک نیشنل ہ

۔4 روز بعدڈوڈہ میں موسم میں بدلاؤ | متواتر برفباری و بارشوں سے کئی تعمیرات کو پہنچا جزوی نقصان

ڈوڈہ //4روز سے جاری برفباری و بارشوں کے بعد منگل کو دوپہر تک مطلع ابر آلود رہا تاہم بعد دوپہر دوبارہ ڈوڈہ کے پہاڑی علاقوں برفباری و ہلکی بارشوں کا سلسلہ شروع ہوا۔متواتر برفباری و بارشوں سے پہلے ہی عام زندگی مفلوج ہو کر رہ گئی ہے اور کئی تعمیرات کو بھی جزوی نقصان پہنچا ہے۔بھدرواہ، ٹھاٹھری ،گندوہ ،چلی پنگل ،کاہرہ ،فیگسو ،چرالہ ،گندنہ،بونجواہ سے مقامی لوگوں نے کہا کہ حالیہ دنوں کی بھاری برفباری سے رابطہ سڑکیں خستہ حال ہوئیں ہیں جبکہ نکاسی نظام، گلی کوچے و پگڈنڈی راستے بھی تباہ ہوئے ہیں۔نائب سرپنچ ہلارن چوہدری محمد شریف کے مطابق برفباری کے دوران عوامی مشکلات میں اضافہ ہوا ہے۔انہوں نے کہا کہ علاقہ میں پانی کی اسکیموں کے ساتھ ساتھ بجلی کے ترسیلی نظام کو بھی نقصان پہنچا ہے جبکہ پکڈنڈی راستے تباہ ہوئے ہیں۔سرپنچ بدھلی دانش ملک کشمیر عظمیٰ کو بتایا مسلسل برفباری و بارشوں سے بالائی علاقوں میں رہ

پکل ڈول پاور پروجیکٹ میں مقامی لوگوں کو نوکریوں سے انکار پر این سی کو تشویش

 جموں//چیئرپرسن ڈسٹرکٹ ڈیولپمنٹ کونسل کشتواڑ پوجا ٹھاکر اور دیگر کی طرف سے ڈنگدورو میں پکل ڈول ہائیڈرو الیکٹرک پروجیکٹ کی 1000 میگاواٹ کی تعمیر میں پیشہ ور افراد کے علاوہ مقامی ہنر مند اور غیر ہنر مند افرادی قوت کو جذب کرنے کے حوالے سے اٹھائے جانے والے مسائل کی بھرپور حمایت کرتے ہوئے صوبائی صدر نیشنل کانفرنس مسٹر رتن لال گپتا نے اس معاملے کو حل کرنے میں انتظامی بے حسی پر افسوس کا اظہار کیا اور اس بات پر افسوس کا اظہار کیا کہ ایم او یو پر عمل درآمد کو یقینی بنانے میں ایگزیکیوٹنگ ایجنسی غالب ہے۔ رتن لال گپتا نے کہا، "عمل درآمد کرنے والی ایجنسی کو اس منصوبے کی تعمیر میں مقامی افرادی قوت کو شامل کرنے کی ضرورت ہے لیکن وہ انتظامیہ کے ساتھ کیے گئے معاہدے کے حوالے سے بہت کم توجہ دے رہے ہیں"۔ انہوں نے مزید کہا کہ یہ نوکر شاہی کے اعلیٰ ظرف کی بات کرتا ہے جو عوامی مفادات کی بہت ز

جموں۔پٹھانکوٹ شاہراہ پر ٹھنڈی کھوئی میں ٹول پلازہ کی تعمیر کے خلاف احتجاج شروع

جموں//جموں۔پٹھانکوٹ شاہراہ پر ٹول پلازہ کی مجوزہ تعمیر کے خلاف سانبہ ضلع کے ٹھنڈی کھوئی میں زبردست احتجاجی مظاہرے جاری ہیں۔سرپنچ پنچایت دھامور سکھجندر سنگھ (پولا) نے بتایا"ہم مقامی پنچایت ممبران سے مشورہ کیے بغیر کی طرف سے ٹول پلازہ کی تعمیر کی مخالفت کر رہے ہیں کیونکہ اس سے رہائشی مکانات اور تجارتی مقامات اکھڑ سکتے ہیں"۔ انہوں نے کہا کہ وہ پچھلے پانچ چھ دنوں سے تعمیراتی کام کے خلاف برسر احتجاج ہیں جو اخبارات میں شائع ہونے والے نوٹیفکیشن کے بعد تجویز کیا جا رہا ہے۔انہوں نے کہا"ہمیں یقین دہانی کرائی گئی تھی کہ ٹول پلازہ سانبہ کے ٹھنڈی کھوئی میں تعمیر نہیں کیا جائے گا جو ایک سیاحتی مقام ہے کیونکہ ملک کے مختلف علاقوں اور جموں و کشمیر سے لوگ اس جگہ کا دورہ کرتے ہیں اور اس کی تعمیر سے خاندان بھی بے گھر ہو جائیں گے" ۔انہوں نے کہا کہ حکومت ہمیں معاوضے کی منصوبہ بندی کے بار

مزید خبریں

محکمہ اعلیٰ تعلیم اور آئی آئی ٹی سٹارٹ اَپ مقابلہ شروع کرے گا:روہت کنسل آئی آئی ٹی جموں ڈگری کالجوں کو ہَب اور سپوک ماڈل کا تعاون فراہم کرے گا  جموں//آئی آئی ٹی جموں کے ذریعے منعقدہ پِچ ڈیک مقابلے میں 14کاروبار ی منصوبوں کو شارٹ لسٹ کیا گیا ہے۔منصوبوںکی حتمی فہرست حاصل کرنے کے لئے ان کا جائزہ لیا جائے گا۔ محکمہ اعلیٰ تعلیم اور آئی آئی ٹی جموں کی طرف سے مشترکہ طور پر جموں وکشمیر میں کمپٹیشن منعقد کیا جائے گا۔اِس بات کا اِنکشاف آئی آئی ٹی میں منعقدہ ایک میٹنگ میں کیا گیا تاکہ بہترین کاروباری منصوبوں کو شارٹ لسٹ کیا جاسکے جو آئی آئی ٹی جموں کے زیر اہتمام پِچ ڈیک مقابلے کے پہلے رائونڈ میں موصول ہوئے تھے۔ پرنسپل سیکرٹری محکمہ اعلیٰ تعلیم روہت کنسل نے مقابلے کے اِنعقاد میں اِدارے کی کوششوں کی ستائش کرتے ہوئے یقین دِلایا کہ محکمہ اعلیٰ تعلیم اِس تقریب کے وسیع تر کے لئ

وزیرِ اعظم کی ’توہین آمیز‘ ویڈیوفیس بک پر اپ لوڈ کرنے پر ایک شخص گرفتار

  جموں// جموں و کشمیر کے ضلع راجوری کے ایک شخص کو منگل کے روز وزیر اعظم نریندر مودی کے خلاف ’تضحیک آمیز‘ تبصرہ کرنے کے پاداش میں گرفتار کیا گیا۔   سرکاری ذرائع نے بتایا کہ راجوری کے دہریاں گاؤں سے تعلق رکھنے والے ایک شخص نے سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو شیئر کیا ہے جس میں وزیر اعظم نریندر مودی کے خلاف تضحیک آمیز تبصرہ کیا گیا ہے۔   انہوں نے کہا کہ پولیس نے مذکورہ ملزم کے خلاف پولیس اسٹیشن راجوری میں ایک کیس درج کیا ہے۔   ملزم کی شناخت شوکت حسین ولد محم سلیم ساکن دہریوں راجوری کے بطور کی گئی ہے۔   ذرائع کا کہنا ہے کہ اس سلسلے میں مزید تحقیقات کی جا رہی ہیں۔    

۔30گھنٹوں کے بعدشاہراہ بحال

بانہال// جموں سرینگر شاہراہ پر اتوار صبح سے پنتھیال کے مقام پر پسی کے ملبے میںپھنسے چاول سے لدھے کے ایک ٹرک کو پیر کی بعد دوپہر نکالا گیا اور شاہراہ کو 30گھنٹوں تک بند رہنے کے بعد بحال کیا گیا۔شاہراہ بحالی کے بعد ناشری ٹنل اور رام بن کے درمیان ہفتے کی شام سے درماندہ ٹرکوں اور دیگر مسافر گاڑیوں کو  جانے کی اجازت دی گئی جبکہ جموں اور سرینگر سے کسی بھی قسم کے تازہ ٹریفک کو چلنے کی اجازت نہیں تھی۔ شاہراہ کو اتوار کے روزرام بن اور بانہال سیکٹر میں بارشوں اور برفباری کی وجہ سے شاہراہ پر گر آئی رکاوٹوں کی وجہ سے بند کیا گیا تھا اور پنتھیال کے مقام پر شاہراہ 30گھنٹوں تک بند رہی۔پیر کو دن کے ایک بجے سے شاہراہ کو یکطرفہ ٹریفک کیلئے بحال کیا گیا اور صرف درماندہ گاڑیوں کو چھوڑا گیا۔ تیس گھنٹوں تک بند رہنے کے بعد شاہراہ کو آج دن کے ایک بجے یکطرفہ ٹریفک کیلئے بحال کیا گیا۔ کل شام پنتھیال کے مقا

ڈی سی رام بن نے قومی شاہراہ بحالی آپریشن کا معائنہ کیا

رام بن//ڈپٹی کمشنر رام بن مسرت الاسلام نے جموں سرینگر قومی شاہراہ پر روڈ کلیئرنس آپریشن کی نگرانی کی اور مقررہ جگہوں پر پھنسے ہوئے مسافروں کو کھانے اور رات کی پناہ گاہ فراہم کرنے کے انتظامات کا معائنہ کیا۔اے ڈی سی، رام بن، ہربنس شرما اور سول اور پولیس انتظامیہ کے کئی افسران نے اپنے اپنے دائرہ اختیار میںشاہراہ پر ناشری سے بانہال کے ساتھ ساتھ دیگر لنک سڑکوں پر برف اور سڑک صاف کرنے کے کاموں کی نگرانی کی۔ڈی سی نے بتایا کہ عام لوگوں کی سہولت کے لیے ضلع میں ضروری سہولیات کی بحالی کے لیے بحالی کا کام جنگی بنیادوں پر شروع کیا گیا ہے۔ انہوں نے  پی ڈبلیو ڈی اورپی ایم جی ایس وائی کے ایگزیکٹیوانجینئروںکو ہدایت دی کہ وہ گاڑیوں کے چلنے کے لیے تمام لنک سڑکوں کو بحال کریں۔ڈی سی نے کہا کہ موسلا دھار بارش اور برف باری کی وجہ سے مہاڑ اور پنتھیال میں لینڈ سلائیڈنگ اور پتھراؤ نے 270 کلومیٹر طویل شاہ

۔6 روز سے ضلع ترقیاتی کونسل چیئرپرسن کا احتجاج جاری

کشتواڑ// گزشہ چھ روز سے احتجاج پر بیٹھی ضلع ترقیاتی کونسل چیئرپرسن کشتواڑ پوجا ٹھاکر و دیگر ڈی ڈی سی ممبران ، سرپنچوں نے انتظامیہ کی جانب سے تمام شرائط ماننے کے بعد ہی احتجاج ختم کرنے کا دعویٰ کیا۔ چیئرپرسن نے بتایا کہ ضلع  انتظامیہ نے اگرچہ ان سے بات کی اور انھیں بتایا گیا کہ سبھی مطالبات کو جلد حل کیا جائے جسکے بعد ہی احتجاج ختم ہوگا۔انھوں نے کہا کہ وہ بار بار احتجاج نہیں کرنا چا ہتی ہے، اگر سبھی مطالبات کو تسلیم کیا جاتاتو احتجاج کی نوبت ہی نہیں آتی۔ یوم جمہوریہ پر پرچم کشائی کولیکر ضلع ترقیاتی کونس چیئرپرسن نے بتایا کہ یوم جمہوریہ کی تقریب کا حصہ وہ بنے گی جسکے بعد وہ دوبارہ احتجاج پربیٹھے گی جبکہ اُس وقت تک مقامی لوگ و سرپنچ احتجاج جاری رکھیں گے۔ واضح رہے کہ گزشتہ چھ روز سے چیئرپرسن کمپنی و انتظامیہ کے خلاف مقامی نوجوانوں کو روزگار و زمین مالکان کو معاوضہ فراہم کرنے کو لیکر

سب ڈویژن پاڈر کا جل شکتی دفتر غیرفعال،عوام مشکلات سے دوچار

کشتواڑ// ضلع کشتواڑ کے علاقہ پاڈر میں محکمہ جل شکتی محکمہ کا سب ڈویژنل دفتر غیرفعال ہے جسکے سبب عوم کو سخت مشکلات سے گزرنا پڑرہا ہے۔ پاڈر ڈویژن 13 پنچایتوں پر مشتمل ہے جبکہ علاقہ میں برفباری کے سبب پینے کے پانی کی لائنیںمتعدد مقامات پر ٹوٹ گئی ہیںجس سے عوام کا پینے کا پانی تک دستیاب نہیںہے۔ ڈی ڈی سی ممبر پاڈر ہری کرشن نے بتایا کہ محکمہ جل شکتی کاایگزیکٹیو انجینئرگزشتہ کئی ماہ سے لاپتہ ہے جبکہ انھیں بھی اسکے بارے میں کوئی علمیت نہیں ۔انہوںنے کہا کہ کئی مرتبہ انھوں نے اس دفتر کا دورہ بھی کیالیکن کوئی نہ ملا، ملازمین اگر کام کرتے تو علاقہ میں پانی کی قلت نہ ہوتی جبکہ تعجب اس بات کاہے کہ ان ملازمین کی تنخواہوں کو کیسے واگزار کیا جاتا ہے۔ان کاکہناتھا کہ علاقہ میں پانی کے ٹینک تو تعمیر کئے گئے لیکن ان میں پانی کی بوند تک دستیاب نہیں ہے جس سے علاقہ کی کئی ہزار آبادی مشکلات کا سامنا کررہی ہے۔

گول میں لوگ سڑک پر برف ڈالنے سے گریز کریں

گول//جہاں ایک طرف سے گول بازار وہ ملحقہ سڑکوں پر بیکن ، پی ڈبلیو ڈی محکمہ جات سڑک پر جمع برف اُٹھانے میں کافی سست روی سے کا م لے رہے ہیں وہیں دوسری جانب لوگ چھتوں و صحن سے برف اُٹھا کر سڑکوںمیں پھینکتے ہیں جس وجہ سے جہاں راہگیروں کو چلنے میں کافی دقتوں کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے وہیں دوسری جانب گاڑیوں کو بھی گزرنے میں کافی پریشانیاں ہو رہی ہیں ۔ گول سلبلہ روڈ ڈاک بنگلہ کے نزدیک ایک سرکاری ایمبو لینس کئی گھنٹے بیمار لے کر برف میں پھنس گئی کیونکہ کئی مقامات پر لوگوں نے چھتوں اور صحنوں سے برف اُٹھا کر سڑک پر پھینکی جس وجہ سے ان جگہوں پر گاڑیوں کو گزرنا نا ممکن بن گیا تھا اور ڈرائیور لوگ خود آکر اس برف کو صاف کر رہے تھے ۔ سب ضلع ہسپتال کی ایمبو لینس ایک بیمار کو ہسپتال لی جا رہی تھی کہ اچانک آگے دیکھا کہ سڑک پر لوگوں نے برف ڈالی جہاں سے گاڑیوں کاگزرنا نا ممکن بن گیا اور ڈرائیور ولوگوں نے خو

ڈوڈہ کے بالائی علاقوں میں تیسرے روز بھی برفباری،معمولات زندگی متاثر

ڈوڈہ //ڈوڈہ ضلع کے بالائی علاقوں میں دوسرے روز بھی وقفے وقفے سے برفباری و بارشوں کا سلسلہ جاری رہا جس دوران معمولات زندگی متاثر ہوئیں۔اطلاعات کے مطابق ہفتہ کی شب ڈوڈہ، بھدرواہ، ٹھاٹھری ،گندوہ ،بھلیسہ ،بونجواہ ،مرمت ،گندنہ کے مضافات میں ہلکی برفباری و بارشوں کا سلسلہ شروع ہوا جو اتوار کو و پیر کے روز بھی وقفے وقفے سے جاری رہیں۔تاہم بعد دوپہر موسم ابر آلود رہا. مسلسل برفباری و بارشوں کی وجہ سے جہاں ڈوڈہ بٹوت قومی شاہراہ پر بھاری پھسلن، دھند پیدا ہوئی متعدد مقامات پر پتھر گرنے کا سلسلہ بھی جاری رہا جبکہ ٹھاٹھری کلہوتران شاہراہ سمیت اندرونی دیہات کی رابطہ سڑکوں پر بھی پسیاں گر آئیں جس کے نتیجے میں ٹریفک معطل رہا۔ اس دوران چلی پنگل ،چنگا ،گندوہ ،جکیاس ،کاہرہ ،بونجواہ ،فیگسو ،چرالہ ،بھالہ ،گندنہ ،گھٹ ،مرمت ،اٹھکار ،کاستی گڑھ و دیگر بلاکوں سے پنچائتی اراکین و سیول سوسائٹی نے کشمیر عظمیٰ کو

ڈوڈہ میں کووڈ 19 کیسوں میں بدستور اضافہ | پیر کو 187 مثبت معاملات، 22 مریض صحتیاب

ڈوڈہ //ڈوڈہ ضلع میں پچھلے ایک ہفتہ سے کورونا وائرس کے نئے معاملات میں اضافہ ہوا ہے۔اطلاعات کے مطابق پیر کے روز ضلع کے مختلف مقامات پر ہوئی کووڈ جانچ کے دوران 187 نئے مثبت معاملات سامنے آئے ہیں جنہیں ہوم قرنطینہ میں رکھا گیا ہے اور 21 مریض صحتیاب ہوئے ہیں۔ اس طرح سے ضلع میں فعال کیسوں کی تعداد بڑھ کر 817 و شفایاب ہوئے مریضوں کی مجموعی تعداد 8031 پہنچ گئی ہے۔ضلع میں اب تک کوؤڈ 19 سے 139 افراد فوت ہوئے ہیں اور 659528 ٹیکے لگائے گئے ہیں۔    

مزید خبریں

رام بن میں 555 ٹیکے لگائے گئے، 3088 نمونے جمع | کووڈ رہنما خطوط کی خلاف وزی پر11ہزار روپے کا جرمانہ وصول رام بن//ضلع امیونائزیشن آفیسر رام بن ڈاکٹر سریش کے مطابق محکمہ صحت نے پیر کو ضلع میں 15-17 سال کی عمر کے گروپ کے 123 بچوں سمیت 555 لوگوں کو ویکسین کی خوراکیں دیں۔پورے ضلع رامبن میں کووڈ پروٹوکول کو نافذ کرنے مہم کو جاری رکھتے ہوئے انفورسمنٹ ٹیموں نے چہرے کے ماسک پہنے بغیر گھومنے اور جسمانی فاصلہ برقرار نہ رکھنے پر جرمانہ عائد کیا۔انفورسمنٹ ٹیموں نے اپنے اپنے دائرہ کار میں معائنہ کے دوران 11,200روپے کا جرمانہ وصول کیا۔ انفورسمنٹ افسران نے لوگوں پر زور دیا کہ وہ چہرے کے ماسک پہنیں اور جسمانی فاصلہ برقرار رکھنے کے علاوہ کووڈ ویکسی نیشن کی خوراکیں اپنے قریبی CVC پر لیں۔چیف میڈیکل آفیسر رام بن ڈاکٹر محمد فرید بھٹ کی طرف سے جاری کردہ روزانہ بلیٹن کے مطابق محکمہ صحت نے 3088 نمونے اکٹ

سرینگر جموں شاہراہ پر ٹریفک کی نقل وحمل بحال

سری نگر//وادی کشمیر کو زمینی راستے سے بیرون دنیا کے ساتھ جوڑنے والی واحد قومی شاہراہ پر پیر کے روز ٹریفک کی نقل وحمل بحال ہوئی۔ پسیاں او ر مٹی کے تودے گر آنے کے باعث شاہراہ کو احتیاطی طور پر ٹریفک کی آمدورفت کے لئے بند رکھا گیا تھا۔   محکمہ ٹریفک کے ایک عہدیدار نے یو این آئی اردو کو بتایا کہ سری نگر۔جموں قومی شاہراہ کو پیر کے روز ٹریفک کی آواجاہی کے لئے کھول دیا گیا ہے۔   انہوں نے بتایا کہ پچھلے دو روز سے شاہراہ پر درماندہ گاڑیوں کو سری نگر کی طرف جانے کی اجازت دی گئی ۔   اُن کے مطابق پنتھال کے نزدیک گذشتہ روز ایک ٹرک پھنس کر رہ گئی تھی جس سے کافی مشقت کے بعد پیر کے روز باہر نکالا گیا اور اُس کے بعد شاہراہ پر ٹریفک کی آمدورفت بحال ہوئی۔   بتادیں کہ پچھلے دو روز سے سری نگر جموں شاہراہ پر ٹریفک کی آمدورفت معطل رہنے سے سینکڑوں گاڑیاں اُ

چناب کے تینوں اضلاع میں برف و باراں،عام زندگی متاثر،سردی میں اضافہ

ضلع کشتواڑ کے بالائی علاقہ جات میں جم کربرفباری جبکہ میدانی علاقہ جات میں موسلادھاربارشوں سے عام زندگی بری طرح مفلوج ہوکر رہ گئی۔ جہاں جمعہ کو ضلع کے بالائی و میدانی علاقہ جات میں بارشیں ہوئی وہی سنیچر کو د ن بھر موسم ابرآلودرہاجبکہ ایتوار کو صبح سے ہی بالائی علاقہ جات میں برفباری کا سلسلہ شروع ہوا جو دن بھر جاری رہا جس دوران بالائی علاقہ جات میں کئی انچ تازہ برف جمع ہوئی۔ کشتواڑ کے دورافتادہ علاقہ جات مڑواہ ، واڑون ، دچھن ، کیشوان، چھاترو، چنگام ، سنتھن، مرگن ، پاڈر و دیگر مقامات پر کئی انچ تازہ برف جمع ہوئی جس سے ان علاقہ جات میں عام زندگی بری طرح مفلوج ہوکر رہ گئی اور لوگ گھروں کے اندر ہی محصور ہورکر رہ گئے۔مقامی لوگوں نے انتظامیہ سے مشکل حالات سے نمٹنے کیلئے ہر ممکنہ مدد فراہم کرنے کی اپیل کی ہے۔ان علاقہ جات میں بجلی کی عدم دستیابی کے سبب عوام کو کافی مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہا ہے

گول سنگلدان شاہراہ پرپسی گرآئی | پورا دن ٹریفک مسدود رہا،شام کوہوابحال

گول//شدید بارشوں اور برف باری کے دوران گول سنگلدان شاہراہ بکروال موڑ پرپسی گرآنے کی وجہ سے سنگلدان نیابت کاتحصیل صدرمقام سے پورے دن سڑک رابطہ منقطع ہواجس وجہ سے یہاں لوگوں کوکافی پریشانیوں کاسامناکرناپڑا۔ بکروال موڑ کے نزدیک صبح پسی گر آئی جس دوران ایک بہت بڑاپتھر راستے میں گرا جسکومشین سے بھی اٹھایانا جاسکااورگریف کے ذمہ داروں نے مزید مشینیں ریلوے کمپنی سنگلدان سے منگوائی اور چاربجے کے بعد راستے کوبحال کردیا۔ اس دوران سنگلدان،ٹھٹھارکہ،داڑم،دلواہ وغیرہ کاسڑک رابطہ مسدودہوکررہ گیا۔  

رام بن کے متعدد علاقوں میں بجلی کی سپلائی بدستور متاثر | کنڈا پوگل کے باشندوں کا محکمہ بجلی کے خلاف احتجاج

رام بن // ضلع رام بن کے مختلف علاقوں میں ہفتہ کی شام سے بجلی کی سپلائی منقطع رہی اور محکمہ بجلی اتوار کی شام تک سپلائی بحال نہیں کر سکا۔سب سے زیادہ متاثرہ علاقے رامسو، بانہال اور گول سب ڈویژن، پوگل پارستان علاقے اور رام بن کے کچھ ملحقہ علاقے ہیں۔جموں پاور ڈیولپمنٹ کارپوریشن لمیٹڈ سب ڈویژن رامسو اور گول کے عہدیداروں نے ہفتہ کی دوپہر سے بارش اور برف باری کی وجہ سے ایچ ٹی ٹرانسمیشن لائنوں میں خرابی کی وجہ سے کچھ علاقوں میں برقی سپلائی میں خلل کی تصدیق کی۔محکمہ کے ایک انجینئر نے کہاکہ مسلسل بارشیں ہمارے عملے کی بحالی کے کاموں میں رکاوٹ بن رہی ہیں۔ادھراتوار کے روز کنڈا پوگل کے کچھ مشتعل صارفین نے برف باری کے درمیان محکمہ بجلی سب ڈویژن رامسو کے خلاف ایک زبردست احتجاجی مظاہرہ کرتے ہوئے الزام لگایا کہ یہاں تعینات اہلکار ایمانداری سے اپنی ڈیوٹی نہیں نبھا رہے ہیں اور اس کے باوجود کوئی جوابدہ نہی

مزید خبریں

خطہ چناب میں ہفتہ وار کورونا لاک ڈائون مسلسل تیسرے روز بھی نافذ رہا  عاصف بٹ+محمد تسکین+اشتیاق ملک کشتواڑ+رام بن+ڈوڈہ//جمعہ بعد دوپہر لگائے گئے ہفتہ وار کورونا لاک ڈائون مسلسل تیسرے روزبھی خطہ چناب میںنافذ رہا۔ضلع کشتواڑمیں ضروری خدمات کی دکانوں کو چھوڑ کر دیگر سبھی دوکانیں وکاروباری مراکز مکمل طور بند رہے تاہم سڑکوں پر گاڑیوں کی آواجاہی دن بھر جاری رہی۔انتظامیہ نے عوام سے بلاجواز گھروں سے نہ نکلنے کی اپیل کررہی ہے تاکہ بڑھتے ہوئے مثبت معاملات پر قابو پایا جاسکے۔ ادھر ضلع رام بن کے تمام قصبوں میں جمعہ کی دوپہر بعد سے نافذ لاک ڈاؤن اتوار کو بھی مسلسل جاری رہا جس کی وجہ سے لاک ڈاؤن اور برفباری سے زندگی اثرانداز ہوئی ہے۔ سرکاری حکمنامے کے بعد بانہال ، کھڑی ، رامسو ، مکرکوٹ، اکڑال ، رام بن ، گول سنگلدان، چندرکوٹ اور بٹوت میں جمعہ کی دوپہر دو بجے سے 64 گھنٹوں تک جاری رہنے وا

خطہ چناب میں ہفتہ وار کورونا لاک ڈائون سے نظام زندگی مفلوج

ڈوڈہ+کشتواڑ+رام بن //کووڈ 19 کے بڑھتے واقعات کے پیش نظر انتظامیہ کی جانب سے عائد کی گئی ہفتہ وار بندشوں کے سلسلے میں ڈوڈہ ضلع میں ایمرجنسی سروسز کو چھوڑ کر باقی ہر طرح کی تجارتی سرگرمیاں و عوامی ٹرانسپورٹ بند رہا۔اطلاعات کے مطابق ڈوڈہ، بھدرواہ، ٹھاٹھری ،گندوہ و عسر کے شہر و گام میں بندشیں عائد رہیں اور ایمرجنسی سروسز کے علاوہ باقی سبھی کاروباری ادارے بند رہے۔اس دوران امن و قانون کی صورتحال کو برقرار رکھنے و ایس او پیز کے نفاذ کے لئے سیکورٹی فورسز و پولیس کی نفری بھی تعینات کی گئی تھی۔ادھر گذشتہ روز ضلع انتظامیہ نے قصبہ ڈوڈہ میں یاسین سہروردی کے مکان سے طاہر سہروردی کے مکان تک کے علاقہ کو مائکرو کنٹینمنٹ زون قرار دے کر ہر طرح کی نقل و حرکت پر مکمل روک لگائی ہے۔ادھرجمعہ بعد دوپہر لگائے گئے ہفتہ وار کورونا لاک ڈائون کے دوسرے روزبھی ضروری خدمات کی دوکانوں کو چھوڑ کر سبھی دوکانیں وکاروباری

تازہ ترین