تازہ ترین

سیاسی غیر یقینیت میں ٹھہرائو آنے کا امکان | اتحاد و اتفاق سے پہاڑ کو رائی بنانا نا ممکن نہیں

کسی بھی قوم یا معاشرے کی سب سے بڑی بدقسمتی یہی ہوتی ہے کہ وہ جذبات کی رَو میں بہہ کر کسی بھی انسان کو دیوتا کا درجہ دے دیتی ہے یہ سمجھے بغیر کہ انسان بالآخر انسان ہی ہوتا ہے جو اپنی نفسیاتی اور فطری خواہشات کا محتاج ہوتا ہے جن کو پورا کرنے کے لئے وہ کسی بھی وقت اپنے درجے سے انتہائی حد تک گِر بھی جاتا ہے۔اس لئے یہ کہنا غلط نہیں کہ انسانی زندگی میں مشکلات زیادہ تر خود انسانوں کی اپنی خواہشات کے پیچھے اندھے ہوجانے اور اپنے طرزِ عمل کی پیدوار ہوتی ہے۔ سچ تو یہ بھی ہے کہ قومی مفاد یا عوامی خدمت کا نعرہ انسانی تاریخ کے ہر دور میں بےدردی سے استعمال ہوا ہے اور اِس نعرے کے ذریعےدنیا بھر میں 90   فیصد سے زائد لوگوں کابدترین استحصال ہوا ہے۔ جو جتنا بڑامکار یا عیار ہوتا ہے،وہ اتنے ہی بلند بانگ نعرے لگاتا اورلچھے دار تقاریر کرتا دکھائی دیتا ہے۔ ایسے مداری، ڈرامے باز کی اصلیت کو پہچاننا ک

ہند۔امریکا تعلقات میں اچانک گرمجوشی کا سبب؟

ایشیائی خطے میں ہندوستان کے رول کے متعلق امریکی وزارت خارجہ کے حالیہ بعض تبصروں اور بیانات سے یہ اندازہ لگایا جارہا ہے کہ ہندوستان اور اس کی صلاحیتوں کے متعلق امریکا کے نقطہ نظر میں قابل ذکر تبدیلی آئی ہے۔امریکاکے نائب وزیر خارجہ اسٹیفن ای بیگن ، پچھلے ہفتے ہندوستان کے تین روزہ دورے پر تھے۔ اس سے ایک ہفتہ قبل ہی ہندوستانی وزیر خارجہ ایس جے شنکر نے ٹوکیو میں اپنے امریکی ہم منصب مائیک پومپیو سے ملاقات کی تھی۔یہ ملاقاتیں ،مذاکرات اور دورے امریکا کی جانب سے چین کے خلاف تقریباً ہر محا ذ پر بالواسطہ جنگ شروع کردینے کے بعد ہوئے ہیں اور اسے بیجنگ کے لیے ایک واضح اسٹریٹیجک اشارے کے طورپر دیکھا جارہا ہے۔ امریکا نے حالیہ دنوں میں کورونا وائرس، تجارت، ٹکنالوجی، ہانگ کانگ، تائیوان اور حقوق انسانی کے معاملات پر بھی بیجنگ کی نکتہ چینی میں شدت آئی ہے۔چین ان تمام الزامات کی تردید کرتا ہے اور امریکا پر

کیاپولی سسٹک اُووری بیماری (پی سی او ڈی ) لاعلاج ہے؟

کیا بیضہ دانی میں سسٹوں کے اجتماع کی بیماری ،جسے عرف عام میں پی سی او ڈیPCOD(Polycystic Ovary Diseases)یا پھرPCOS(Polycystic Ovary Syndrome) کہتے ہیں،لاعلاج ہے؟ یہ سوال اس مرض میں مبتلا لاتعدادنوجوان مریضوں کے لئے انتہائی پریشانی اور تفکر کا باعث بن چکا ہے اور بن رہا ہے کیونکہ اپنی زندگی کا نوجوانی کا خوبصورت دور شروع ہوتے ہی انہیں جب اس طرح کے مایوس کن امراض کا سامنا کرنا پڑتا ہے تو انہیں واقعی ایک نفسیاتی دبائو اورناامیدی سے بھی گزرنا پڑتا ہے جو ان کے مستقبل کی امیدوں اور خوشیوں کو معدوم کر دیتا ہے۔  بہت سارے عوامل کو اس کا باعث بتایا جارہا ہے۔سب سے پہلے اس بیماری کے متعلق سرسری طور پر ہی سہی جانکاری اور آگاہی حاصل کر نا بہت ضروری اور اہم ہے وہ اسلئے بھی کہ اکثر بیماریوں کے متعلق عام لوگوں کے اذہان میں لاتعداد غلط فہمیاں بھی ہوتی ہیں جو ان کی لاعلمی،جہالت اورکم تعلیمی قابلی

مشرق و مغرب میں سائنسی تحقیق کا معیار | کیا قرآن و سائنس متصادم ہے؟

عام مفہوم میں سائنس جاننے کی جستجو کا نام ہے۔جستجو اس لئے کیونکہ یہ عمل نہ ختم ہونے والا سلسلہ ہے، اس کی کوئی انتہا نہیں، اس کی کوئی منزل نہیں کہ جہاں پر پہنچ کے دم لیا جائے۔اسی لئے تو تخلیقِ آدم سے لیکر تاہنوز انسان دیوانہ وار اس عمل کی تعمیل کر رہا ہے اور نہ ہی اس عمل کے رکنے کا سوائے قیامِ قیامت کے کوئی امکان نظر آرہا ہے۔انسان علم کے معاملے میں اپنے پورے جسمانی و روحانی وجود کے اعتبار سے مافوق المخلوق ہے کیونکہ اس کے دونوں وجود بغیر تحصیلِ علم کے تسکین حاصل نہیں کر پاتے۔علم کی اسی چاشنی کے برسبیل اسے تمام مخلوقات پر فوقیت حاصل ہے۔علم کی تحصیل کے معاملے میں انسان ایک مقناطیسی حیثیت رکھتا ہے۔اس کے بدن کے اندورن میں بھی علم کی طلب ہے اور بیرونی دنیا کے متعلق اکتسابِ علم کی چاہت ہے۔اس کے پورے جسم میں عصبی نظام اور احساس عضو (Sense organ) اس طلب و چاہت کی تکمیل کرتے ہیں۔یہ سینس آرگن ب

۔ڈیٹا سائنسدانوں کیلئے کیسا ہوگا 2021؟

اگر آپ ڈیٹاسائنٹسٹ ہیں یا ڈیٹا سائنس کی تعلیم حاصل کررہے ہیں تو آپ کو اپنے کیریئر کے حوالے سے مستقبل پر نظر رکھنے کی ضرورت ہے۔ جو لوگ اس فیلڈ میں کیریئر کے حوالے سے نابلدہیں تو انہیں بتاتے چلیں کہ بِگ ڈیٹا ، ڈیٹا سائنس اور ڈیٹا مائننگ کی اصطلاحات ہم آہنگ ہو چکی ہیں، جن کے مابین رابطے سے مراد پبلک ڈیٹا، انٹرپرائز ڈیٹا، ٹرانزیکشنز، سینسر ڈیٹا، سوشل میڈیا اور اعداد و شمار تک رسائی ہے۔ ٹیلی کام اور آئی ٹی انڈسٹری سمیت دنیا بھر کے بزنس طبقے کو ڈیٹا سائنسدان چاہئیں جو بِگ ڈیٹا کے حوالے سے ان کی مشکلات آسان کرسکیں، لیکن اکیسویں صدی کی اس پْرکشش ترین ملازمت کا حصول اور ا س کی تعلیم بھی آسان نہیں۔ تاہم، اگر آپ اس کے طالبعلم ہیں تو کچھ پیش گوئیاں ہیں، جو شاید آپ کی ڈگری کی تکمیل کے وقت آپ کے کام آئیں۔توقع کی جارہی ہے کہ بگ ڈیٹا کی دنیا 2025ء تک حیرت انگیزطور پر 163زیٹا بائٹس یعنی 163 ٹ

تازہ ترین