تازہ ترین

وادی میں گیلاس کے بعد آلو بخارہ کا سیزن جوبن پر

سرینگر // وادی کشمیرمیں آلو بخارہ کا سیزن اس وقت جوبن پر ہے اور مارکیٹ میں ہر جگہ اس کی خرید فروخت ہو رہی ہے۔اس سال اس کی پیداوار میں10 فیصد کا اضافہ بھی ہوا ہے ۔ وادی میں آلو بخارہ کے باغات 1339ہیکٹر اراضی پر پھیلے ہوئے ہیں اور ان سے سالانہ اوسطاّ9000 میٹرک ٹن پیداوار ہوتی ہے۔ سرینگر میں 1100میٹرک ٹن ،گاندربل میں 1700 ،بڈگام میں 2800، بارہمولہ میں 900، پلوامہ میں 800 کے علاوہ شوپیاں اور کولگام میں 400 چار سومیٹرک ٹن پیداوار ہوتی ہے۔کپوارہ، بانڈی پورہ اور اننت ناگ ایسے 3اضلاع ہیں جہاں اس میوہ کی پیداوار نہیں ہوتی ہے۔وادی میں آلو بخارہ کی 10اقسام کاشت کی جاتی ہیں اور یہ رسیلا پھل بازاروں میں میں صرف دو مہینوں جولائی اور اگست میں دستیاب رہتا ہے ۔محکمہ باغبانی کا کہنا ہے کہ اس میوہ کو منڈیوں تک پہنچانے اور خریدو وفروخت کےلئے کسانوں کو ہر ممکن مدد فراہم کی جا رہی ہے۔ آلو بخارہ ایک ایسا میو