پابندیوں کے ساتھ یو ایس اوپن میں شرکت ممکن نہیں:جوکووچ

نیو یارک/ دنیا کی ٹینس کے پہلے نمبر پر آنے والے سربیا کے نوواک جوکووچ کا خیال ہے کہ ان کے لئے کورونا وائرس کی وجہ سے پابندیوں کے ساتھ سال کے آخری گرینڈ سلیم یو ایس اوپن میں شرکت کرنا ناممکن ہے ۔کورونا وائرس نے ٹینس کی سرگرمیاں ٹھپ کررکھی ہیں ، لیکن یو ایس اوپن کے انعقاد کا امکان ہے ۔ یو ایس اوپن کا انعقاد نیویارک میں ہونا ہے جس میں سب سے زیادہ کورونا کیس رپورٹ ہوئے ہیں۔ ایسی صورتحال میں سیکیورٹی کے پیش نظر کچھ پابندیاں عائد کردی گئی ہیں۔عالمی نمبر ایک خاتون ٹینس کھلاڑی آسٹریلیا کی ایشلے بارٹی اور اسپین کے رافیل نڈال نے بھی یو ایس اوپن میں کھیل کے بارے میں شکوک و شبہات کا اظہار کیا ہے ۔تین بار کے یو ایس اوپن کے فاتح جوکووچ نے کھلاڑیوں کے لئے کچھ پابندیوں کو ناممکن قرار دیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں ہوائی اڈے پر ہوٹل میں سونا ہوگا اور ہفتے میں دو یا تین بار ٹیسٹ کروانا ہوگا۔ اس کے علاوہ

ریٹائرمنٹ پر مجبور کرنے کی کوشش پر افسوس: مرتضیٰ

ڈھاکہ/ بنگلہ دیش کے سابق کپتان مشرفی مرتضیٰ نے کہا ہے کہ وہ بنگلہ دیش کرکٹ بورڈ (بی سی بی) کی انہیں کرکٹ سے سبکدوشی پر مجبور کرنے کی کوشش سے سخت غمگین ہیں۔مرتضیٰ گذشتہ سال انگلینڈ میں ہونے والے آئی سی سی کرکٹ ورلڈ کپ میں بنگلہ دیش کے کپتان تھے اور ٹورنامنٹ میں ٹیم کی مایوس کن کارکردگی کے بعد انہوں نے کپتانی سے استعفیٰ دے دیا تھا جس کے بعد ان کی ریٹائرمنٹ کے بارے میں قیاس آرائیاں شدت اختیار کر گئی ہیں۔مرتضیٰ نے کہا کہ بی سی بی کے صدر نظم الحسن نے مجھ سے ریٹائرمنٹ کے بارے میں بات کی۔ انہوں نے مجھے بتایا کہ اس سلسلے میں وہ مجھ سے صرف بات کریں گے ۔ بی سی بی کے صدر نے مجھ سے فیصلہ لینے کو کہا۔ میں نے ان سے کہا کہ میں بی پی ایل تک کھیلنا چاہتا ہوں۔ مجھے یاد ہے کہ انہوں نے سب سے کہا کہ وہ کمرے سے چلے جائیں کیونکہ انہیں مجھ سے نجی طور پر بات کرنا ہے ۔ اس دوران انہوں نے مجھے عزت دی۔انہوں نے کہا

تازہ ترین