ہند،روس 21ویں چوٹی کانفرنس کل | مشترکہ دلچسپی کے سیاسی اور دفاعی امور پر تبادلہ خیال ہوگا

نئی دہلی//وزیر اعظم نریندر مودی اور روسی صدر ولادیمیر پوتن پیر کو یہاں کے ہند-روس 21 ویں سالانہ چوٹی کانفرنس حصہ لیں گے اور اسی روز دونوں ممالک کے وزرائے خارجہ اور وزرائے دفاع کی پہلی ٹو پلس ٹومیٹنگ بھی منعقد کی جائے گی۔وزارت خارجہ کے مطابق روسی وزیر خارجہ سرگئی لاؤروف اور وزیر دفاع سرگئی شوئیگو اتوار کی تاخیر شب نئی دہلی پہنچیں گے ۔ مسٹر لاؤروف پیر کو صبح 10.30 بجے سشما سوراج بھون میں وزیر خارجہ ایس جے شنکر سے ملاقات کریں گے ۔ وزیر دفاع راج ناتھ سنگھ مسٹر سرگئی شوئیگو سے ملاقات کریں گے ۔ روسی صدر مسٹر پوتن 6 دسمبر کو دارالحکومت پہنچیں گے ۔ ٹو پلس ٹو میٹنگ کے بعد وہ شام 5.30 بجے حیدرآباد ہاؤس میں وزیر اعظم مودی کے ساتھ ہند-روس سالانہ چوٹی کانفرنس میں شرکت کریں گے ۔ پیر کا دن ہندوستان اور روس کے درمیان خصوصی اور مراعات یافتہ اسٹریٹجک پارٹنرشپ کے لئے خاص ہوگا جب روسی صدر، وزیر خارجہ اور

سپریم کورٹ میں زیر التوا معاملات کی جلد سماعت کی جائے گی | عدالت سے رجوع ہونا آخری راستہ ہونا چاہیے :چیف جسٹس

 حیدرآباد// سپریم کورٹ کے چیف جسٹس این وی رمنا نے کہا ہے کہ سپریم کورٹ میں زیر التوا معاملات کی جلد سماعت کی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ جلد ہی ثالثی کے ذریعہ مسائل حل ہو جائیں گے ۔ جسٹس رمنا نے تلنگانہ کے وزیراعلی کے چندرشیکھرراوکے ساتھ شہرحیدرآباد کی نووٹل ہوٹل میں بین الاقوامی ثالثی مرکز کی کانفرنس میں شرکت کی۔ اس موقع پر انہوں نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بیشترمعاملات عدالتوں میں آنے سے پہلے ثالثی کے ذریعہ حل کئے جاسکتے ہیں۔ انہوں نے زوردیتے ہوئے کہا کہ عدالت میں آنا آخری راستہ ہونا چاہیے ۔اس کے بجائے مسائل کو مشاورت سے حل کیا جا سکتا ہے ۔ اثاثوں کی تقسیم خاندان کے افراد کے ذریعہ خوش اسلوبی سے طے کی جانی چاہئے ۔چیف جسٹس رمنا نے کہا کہ عدالتوں میں برسوں سے کئی معاملات چل رہے ہیں۔انہوں نے کہاکہ حیدرآباد بین الاقوامی ثالثی مرکز کے قیام کے لیے بہترین اورموزوں مقام ہے ۔ اس مرکز میں زیر ال

ہندوستان کے بنیادی ڈھانچے پر 100لاکھ کروڑ روپے کی سرمایہ کاری کا ہدف | مودی کے ہاتھوں اتراکھنڈ میں 18000کروڑ روپے کی سکیموں کا افتتاح اور سنگ بنیاد

 دہرادون//وزیر اعظم نریندر مودی نے ہفتہ کو کہا کہ ہندوستان جدید انفراسٹرکچر پر 100 لاکھ کروڑ روپے سے زیادہ کی سرمایہ کاری کے ارادے کے ساتھ آگے بڑھ رہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ آج ہندوستان کی پالیسی رفتار، طاقت، کام سے دوگنا یا تین گنا تیز ہے ۔ انہوں نے کہا کہ سڑکوں اور رابطوں کی ترقی خطے میں سیاحت، زیارت اور دیگر اقتصادی سرگرمیوں کی ترقی کا باعث بنتی ہے ، معیشت مضبوط ہوتی ہے ۔مسٹر مودی یہاں اسمبلی انتخابات کی سمت بڑھ رہے اتراکھنڈ میں 18000 کروڑ روپے کے پروجیکٹوں کا سنگ بنیاد رکھنے اور افتتاح کرنے کے بعد ایک جلسہ عام سے خطاب کر رہے تھے ، انہوں نے کہا کہ ان کی حکومت نے اتراکھنڈ میں ایک لاکھ کروڑ روپے کے پروجیکٹوں کو منظوری دی ہے ۔ یہاں کی حکومت 'ان اسکیموں کو زمین پر لا رہی ہے '۔ مسٹر مودی نے کہا کہ اس صدی کے آغاز میں اس وقت کے اٹل بہاری واجپئی کی حکومت نے ہندوستان میں رابطے بڑھ

تازہ ترین