تازہ ترین

ملک میں کورونا کے 44 ہزار سے زائد نئے کیس،555 مریضوں کی موت

نئی دہلی// ملک میں گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس کے 44 ہزار نئے کیس سامنے ائے اور 555 افراد کی موت ہو گئی۔ دریں اثنا جمعرات کو 51 لاکھ 83 ہزار 180 افراد کو کورونا کے ٹیکے لگائے ہیں۔ ملک میں اب تک 45 کروڑ 60 لاکھ 33 ہزار 754 افراد کو ٹیکے لگائے گئے ہیں۔ مرکزی وزارت صحت کی جانب سے جاری اعداد و شمار کے مطابق 24 گھنٹوں میں کورونا کے 44230 نئے کیس سامنے آئے کے ساتھ ہی متاثرہ افراد کی تعداد تین کروڑ 15 لاکھ 72 ہزار 344 ہوگئی ہے۔ اس دوران 42 ہزار 360 مریضوں کے صحتیاب ہونے سے اس وبا کو شکست دینے والوں کی مجموعی تعداد بڑھ کر 30743972 ہوگئی ہے۔ ایکٹو کیسز 1315 بڑھ کر 4 لاکھ 05 ہزار 155 ہوگئے ہیں۔ اس دوران 555 مریضوں کی موت ہونے سے مرنے والوں کی تعداد چارلاکھ 23 ہزار 217 ہوگئی ہے۔ ملک میں ایکٹو کیسز شرح کم ہوکر 1.28 فیصد ، شفایابی کی شرح بڑھ کر 97.38 فیصد اور شرح اموات 1.34 فیصد ہ

نئی تعلیمی پالیسی سے ملک کی تقدیر بدل جائے گی: وزیر اعظم

نئی دہلی// جمعرات کو وزیر اعظم نریندر مودی نے کہا کہ نئی تعلیمی پالیسی مستقبل کو مدنظر رکھتے ہوئے بنائی گئی ہے اور اس سے ملک کی تقدیر بدل جائے گی۔قومی تعلیم پالیسی کے ایک سال مکمل ہونے پر ایک پروگرام سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم مودی نے کہا ‘‘نئی قومی تعلیمی پالیسی کے ایک سال کی تکمیل پر ملک کے سبھی لوگوں اور تمام اسٹوڈنٹس کو بہت بہت مبارکباد۔ گزشتہ ایک سال میں آپ سبھی عظیم شخصیات ، اساتذہ ، پرنسپلز ، ملک کے پالیسی سازوں نے قومی تعلیمی پالیسی کو زمین پر لانے کے لئے بہت محنت کی ہے ’’۔انہوں نے کہا ‘‘ "ہم مستقبل میں کتنا آگے جائیں گے ، ہم کتنی اونچائیاں حاصل کریں گے ، اس کا انحصار اس بات پر ہوگا کہ ہم اس وقت اپنے نوجوانوں کو کس طرح کی تعلیم دے رہے ہیں ۔یعنی آج ہم کیسی تعلیم دے رہے ہیں۔ مجھے یقین ہے کہ ملک کی نئی قومی پالیسی قوم کی تعمیر کے مہایگی

مودی سے امریکی وزیر خارجہ کی ملاقات | تعلقات کو مزید مستحکم بنانے کے عزم کا اعادہ

نئی دہلی //امریکی وزیرخارجہ اینٹونی بلنکن نے کل وزیراعظم نریندر مودی سے ملاقات کی اور امریکی صدر جو بائیڈن اور نائب صدر کملا ہیرس کی جانب سے انہیں مبارکباد اور نیک خواہشات پیش کیں۔دو روزہ دورے پر یہاں آئے مسٹر بلنکن نے وزیر خارجہ ایس جے شنکر اور قومی سلامتی کے مشیر (این ایس اے) کے ساتھ ہوئی بات چیت کے بارے وزیراعظم کو معلومات دی اور دفاع، سمندری دفاع، تجارت -سرمایہ کاری، موسمیاتی تبدیلی، سائنس اینڈ ٹیکنالوجی سمیت مختلف شعبوں میں ہندوستان-امریکہ کے اسٹریٹجک تعلقات کو مزید استحکام بخشنے کے تئیں عزم کا اعادہ کیا۔وزیراعظم مودی نے اپنی جانب سے مسٹر بائیڈن اور محترمہ ہیرس کو نیک خواہشات پیش کیں اور امریکی موسمیاتی تبدیلی اور کووڈ وبا کے سلسلے میں کی گئی پہل کی تعریف کی۔ مسٹر بلنکن نے بھی دونوں ملکوں کے مختلف شعبوں میں بڑھتے تعاون اور شراکت داری کے لیے کیے گئے اقدامات کی تعریف کی۔مسٹر مودی ن

سپریم کورٹ کے چیف جسٹس کی کامیاب مصالحت | 20برسوں سے قانونی لڑائی لڑنے والا جوڑا دوبارہ ساتھ زندگی گذانے پر آمادہ

 حیدرآبا//سپریم کورٹ نے ایک جوڑے کو ملادیا جو گذشتہ تقریبا 20برسوں سے قانونی لڑائی لڑرہا تھا۔چیف جسٹس آف انڈیا این وی رمنا جن کا تعلق تلگو ریاست آندھراپردیش سے ہے نے اسی ریاست سے تعلق رکھنے والے جوڑے کی قانونی لڑائی کو ختم کرتے ہوئے ان کو ملادینے میں اہم رول اداکیا۔خاتون نے جہیز ہراسانی معاملہ میں اس کے شوہر کو جیل کی سزادینے کی خواہش کی تھی۔جب یہ معاملہ سماعت کے لئے آیا تو چیف جسٹس رمنا نے ویڈیو کانفرنس کے ذریعہ بات کرنے کی اس جوڑے سے خواہش کی۔چیف جسٹس نے اس خاتون سے کہاکہ اگر آپ کا شوہر جیل جاتا ہے تو ایسی صورت میں آپ ماہانہ گذاراکی رقم سے بھی محروم ہوجائیں گی کیونکہ جیل جانے پر آپ کا شوہر ملازمت سے محروم ہوجائے گا۔خاتون نے چیف جسٹس کی بات کو تحمل سے سنا اورشوہر کے ساتھ زندگی گذارنے کے لئے راضی ہوگئی۔بعد ازاں دونوں نے ایک دوسرے کے خلاف داخل کردہ عرضیوں سے دستبرداری کا فیص

موبائل فون میں دھماکہ، 17 سالہ لڑکی موت

مہسانہ //گجرات کے ضلع مہسانہ کے بیچارجی کے علاقے میں موبائل فون میں دھماکے میں ایک نوعمر لڑکی کی موت ہوگئی۔پولیس نے بتایا کہ چھیٹسانہ گاؤں میں شمبھو بھائی دیسائی کے گھر میں چارجنگ میں لگے موبائل فون سے ان کی بیٹی شردھا (17) بات کررہی تھی ۔ اسی دوران اچانک موبائل فون پھٹنے سے وہ شدید زخمی ہوگئی اور گھر میں رکھے گھاس میں بھی آگ لگ گئی۔ مقامی لوگوں نے تھوڑی ہی دیر میں آگ پر قابو پالیا ، لیکن شدید جھلس جانے والی شردھا موقع پر ہی دم توڑ گئیں۔ پولیس نے رپورٹ درج کرکے تفتیش شروع کردی ہے ۔  

افغانستان میں سیلاب سے 60 افراد ہلاک،150لاپتہ

کابل //افغانستان میں سیلاب کی وجہ سے 60 افراد ہلاک جبکہ 150 لاپتا ہو گئے ہیں۔ جمعرات کو حکام نے کہا ہے کہ صوبہ نورستان کے ضلع کامدیش میں موسلادھار بارشوں کے بعد لاپتا افراد کو ڈھونڈنے کے لیے ریسکیو آپریشن جاری ہے۔ یہ ضلع کابل کے شمال مشرق میں 200 کلومیٹر کی دوری پر واقع ہے۔نورستان کے صوبائی کونسل کے سربراہ سعید اللہ نورستانی کا کہنا ہے کہ ’گذشتہ رات سیلاب کی وجہ سے 60  افراد ہلاک ہوئے ہیں۔‘انہوں نے مزید کہا کہ ’150 افراد تاحال لاپتا ہیں اور 80 کے قریب مکانات تباہ ہوگئے ہیں۔‘تاہم دوسری جانب نورستان کے گورنر کے ترجمان سعید مومند نے ہلاکتوں کی تعداد قدرے زیادہ بتائی ہے۔طوفانی بارشوں اور سیلاب کی وجہ سے ہر سال افغانستان میں متعدد افراد ہلاک ہوتے ہیں۔ بارشوں کے دوران زیادہ تر دیہی علاقوں میں بنے مکانات گرنے کا خطرہ ہوتا ہے۔گذشتہ سال صوبہ پروان میں سیلاب کی وجہ

تازہ ترین