بھارت میں پاکستانی ہائی کمیشن کے دو عہدیدار ملک بدر

نئی دہلی// ہندستان نے پاکستانی ہائی کمیشن کے دو افسران کو جاسوسی کی سرگرمیوں ملوث ہونے کے الزام میں 24گھنٹے کے اندر ملک چھوڑ دینے کے لئے کہا ہے۔ وزارت خارجہ نے گذشتہ رات دیر گئے بتایا کہ نئی دہلی میں واقع پاکستانی ہائی کمیشن کے دوافسران کو ہندستانی سیکورٹی ایجنسیوں نے جاسوسی کی سرگرمیوں میں ملوث ہونے کی وجہ سے حراست میں لیا تھا۔ اطلاعات کے مطابق دونوں عہدیداروں کو24گھنٹوں کے اندر بھارت سے نکل جانے کیلئے کہا گیا ہے۔  

کورونا متاثرین کی تعداد 1.90 لاکھ سے متجاوز،ہندوستان ساتویں نمبر پر

نئی دہلی// ملک میں کوورونا وائرس کے نئے کیسوں میں دن بہ دن ہو رہے اضافہ سے متاثرین کی کل تعداد 1.90 لاکھ سے تجاوز کر گئی ہے اور ہندوستان سب سے زیادہ متاثر ممالک کی فہرست میں فرانس اور جرمنی کو پیچھے چھوڑ کر ساتویں مقام پر پہنچ گیا ہے۔ مرکزی صحت اور خاندانی بہبود کی وزارت کی جانب سے پیر کو جاری اعداد و شمار کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں میں 8392 نئے کیس سامنے آئے ہیں جس سے متاثرین کی تعداد بڑھ کر 1،90،535 ہو گئی۔اس دوران مزید 230 افراد کی موت کے بعد ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 5394 ہو گئی۔ صحت مند ہونے کے مقابلے میں نئے کیسزکی شرح زیادہ ہونے کی وجہ سے فعال کیسز کی تعداد بڑھ کر 93،322 ہو گئی ہے۔ دنیا میں کورونا وائرس سے متاثر ممالک کی فہرست میں امریکہ پہلے نمبر پر ہے جہاں اس وبا سے اب تک 17،90،172 لوگ متاثر ہوئے ہیں جبکہ 1،04،381 اموات ہو چکی ہے. اس کے بعد برازیل (5.14 لاکھ)، روس (4.5 لاک

’من کی بات‘ پروگرام سے مودی کا خطاب | کورونا کی سب سے بڑی چوٹ مزدورطبقے پر پڑی

نئی دہلی//وزیراعظم نریندر مودی نے کورونا وائرس کی عالمی وبا کے دور میں ملک بھر میں مزدوروں کو ہوئی پریشانی اور دکھ تکلیف کے لئے ہمدردی کا اظہار کیا ہے اور کہاکہ ان مزدوروں کی طاقت سے مشرقی ہندوستان کی ترقی کے وسیع امکانات بھی کھلے ہیں اور حکومت نے اس سمت میں قدم اٹھانا شروع کردیا ہے ۔ مودی نے آکاش وانی پر نشر من کی بات پروگرام میں کہا کہ کورونا وائرس کے خلاف لڑائی کا یہ راستہ لمبا ہے ۔وزیراعظم نے کہا کہ ہمارے ملک میں بھی کوئی طبقہ ایسا نہیں ہے جو مشکل میں نہ ہو،پریشانی میں نہ ہو،اور اس بحران کی سب سے بڑی چوٹ،اگر کسی پر پڑی ہے ،تو ہمارے غریب مزدورطبقے پر پڑی ہیں۔ان کی تکلیف اور ان کا درد الفاظ میں بیان نہیں کیا جا سکتا۔ہم میں سے کون ایسا ہوگا جو ان کی اور ان کے کنبے کی تکلیفوں کا تجربہ نہ کر رہا ہو۔ہم سب مل کر ان کی تکلیف اور درد کو بانٹنے کی کوشش کررہے ہیں۔مسٹر مودی نے مزدور اسپیشل ٹر

ملک میں ایک دن میں کورونا کی تباہ کاریاں | 8ہزار نئے معاملے،193افراد کی موت

نئی دہلی// ملک میں کورونا وائرس (کووڈ 19) کی وبا نے گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران سب سے زیادہ تباہی مچائی ہے اور ایک دن میں سب سے زیادہ (8380 )نئے کیسز سامنے آئے ہیں جبکہ اسی مدت میں مزید 193 افراد کی موت ہوئی ہے ۔مرکزی صحت اورخاندانی بہبود کی وزارت کی جانب سے اتوارکو جاری تازہ ترین عداد و شمار کے مطابق ملک کی مختلف ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں میں اس کے انفیکشن سے اب تک 1،82،143 لوگ متاثر ہوئے ہیں اور5164 افراد کی موت ہوئی ہے ۔ملک میں ایک دن میں 4614 متاثرین شفایاب ہوئے ہیں جس سے اس بیماری سے نجات پانے والوں کی تعداد بڑھ کر 86،984 ہو گئی ہے ۔ ملک میں فی الحال کورونا وائرس کے 89995 فعال کیسز ہیں۔ملک میں ریاست مہاراشٹر اس وبا سے سب سے زیادہ متاثر ہوا ہے ۔ ریاست میں گزشتہ 24 گھنٹوں میں 2940 نئے کیسز سامنے آئے ہیں اور 99 افراد کی موت ہوئی ہے جس کے ساتھ ہی ریاست میں اس سے متاثر ہونے

ملازمین کی تنخواہوں کیلئے رقوم نہیں | دہلی حکومت کی مرکز سے مدد کی اپیل

نئی دہلی// دہلی کے نائب وزیر اعلی منیش سسودیا نے اتوار کے روز کہا کہ ان کی حکومت کے پاس ملازمین کو تنخواہیں دینے کے لئے پیسے نہیں ہے لہذا انہوں نے مرکزی حکومت سے فوری طور پر 5ہزار کروڑ روپے مدد کی اپیل کی ہے ۔ سسودیا نے یہاں ایک پریس کانفرنس میں بتایا کہ دہلی حکومت نے کورونا بحران کے درمیان مرکز سے 5ہزار کروڑ روپے کی مدد مانگی ہے ۔انہوں نے کہا کہ دہلی حکومت کے پاس ملازمین کو تنخواہ دینے تک کے پیسے نہیں ہیں لہذا پیسہ جلد سے جلد دیا جانا چاہیے ۔  

بنا سوچے سمجھے لاک ڈائون عوام کی پریشانیوں کا مؤجب: سبل

نئی دہلی//کانگریس نے کہا ہے کہ کورونا کو شکست دینے کی حکومت کی جانب سے 24 مارچ کو نفاذ کئے گئے لاک ڈاؤن کے دوران ملک کے مختلف حصوں میں لوگوں نے بھائی چارے کی ایسی کئی مثالیں پیش کیں جن سے مودی حکومت کا ایجنڈا ہی بدل گیا اورملک نئی راہ پرچل پڑا۔کانگریس کے سینئر لیڈر کپل سبل نے اتوارکو یہاں خصوصی نامہ نگاروں کی کانفرنس میں کہا ہے کہ وزیراعظم نریندرمودی کی قیادت والی حکومت 24 مارچ سے پہلے اوراس کے بعد جو کام کررہی ہے ، اس میں بہت فرق ہے ۔ گزشتہ برس مئی سے لے کر امسال 24 مارچ تک یہ حکومت پولرائزیشن کی سیاست کرتی رہی اوردفعہ 370، رام مندر، تین طلاق اوراین آر سی جیسے مسائل کے سہارے سیاسی فائدے کے لئے کام کرتی رہی لیکن کورونا کی وبا کے بعد اس حکومت کا ایجنڈا ملک کی عوام نے بدل دیا۔انہوں نے کہا کہ کورونا کے بعد حکومت کا ایجنڈا پیچھے چھٹ گیا ہے۔  

تازہ ترین