تازہ ترین

بھارت کی میزبانی میں سارک کی ویڈیوکانفرنس میں پاکستان کی عدم شرکت

سرینگر// پا کستانی دفتر خارجہ نے بتایا ہے کہ پاکستان نے بھارت کی میزبانی میں ہونے والے کووِڈ 19 وباء پر خطے کے تجارتی عہدیداروں کی ویڈیو کانفرنس میں اس لیے شرکت نہیں کی کیوں کہ اس کا انتظام جنوبی ایشیا ئی علاقائی تعاون تنظیم (سارک) نے نہیں کیا تھا۔دفتر خارجہ نے پاکستان کی عدم موجودگی کی وضاحت دیتے ہوئے کہا کہ ایسی سرگرمیاں مثلاً آج کی تجارتی عہدیداروں کی ویڈیو کانفرنس صرف اس صورت میں موثر ہوسکتی ہے کہ اس کی سربراہی سارک سیکریٹریٹ کرے۔دفتر خارجہ کے بیان کے مطابق ،’’چونکہ آج کی اس ویڈیو کانفرنس میں سارک سیکریٹریٹ شریک نہیں تھا، اس لیے پاکستان نے شرکت نہ کرنے کا فیصلہ کیا‘‘۔خیال رہے کہ عالمی وبا کووِڈ19 کے بین الاعلاقائی تجارت اور سفری پابندیوں پر پڑنے والے اثرات پر بات چیت کے لیے پاکستان کے سوا تمام سارک ممالک کے تجارتی عہدیداروں کی ایک ویڈیو کانفرنس  منعقد

پاکستان کا بھارت کاکواڈکاپٹر گرانے کادعویٰ

سرینگر//فضائی حدود کی خلاف وزری کیلئے پاکستان نے حدمتارکہ کے نزدیک بھارتی کواڈ کاپٹر کو مار گرایا ۔ سی این آئی کے مطابق پاکستانی فوج کے شعبہ تعلقاتِ عامہ (آئی ایس پی آر)کے مطابق حدمتارکہ کے ساتھ سنکھ سیکٹر میں بھارتی کواڈ کاپٹر نے فضائی حدود کی خلاف ورزی کی اور پاکستانی فوج نے فوری جوابی کارروائی کرتے ہوئے بھارتی جاسوسی ڈرون کو مار گرایا۔ آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ بھارت کا ڈرون فضائی حدود کی خلاف ورزی کرتے ہوئے پاکستانی حدود میں 600 میٹر تک اندر آ گیا تھاجوپاکستان اور بھارت کے درمیان جنگ بندی سے متعلق 2003 کے معاہدے کی خلاف ورزی ہے۔گزشتہ سال پاک فوج نے بھارت کے تین ڈرون مار گرائے ۔جس میںپہلا کواڈ کاپٹر سال کے پہلے دن یعنی یکم جنوری کو باغ سیکٹر میں گرایا گیا تھا۔بعدازاں ایک روز بعد ہی بھارت نے دوبارہ پاکستانی حدود کی خلاف ورزی کی جسے پاک فوج نے ناکام بناتے ہوئے ستوال سیکٹر