تازہ ترین

ملک میں کورواناانفیکشن کے نئے معاملوں مں پھر اضافہ، متاثرین کی تعداد 1.58 لاکھ

نئی دہلی// ملک میں دو دن تک کورواناوائرس سے انفیکشن کے نئے معاملوں میں جزوی کمی کے بعد گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ایک بار پھر اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے اور 6566 نئے معاملات کے ساتھ متاثرین کی کل تعداد 158333 تک پہنچ گئی اور اس مدت میں 194 لوگوں کی موت کے ساتھ مرنے والوں کی تعداد 4531 تک پہنچ گئی ہے۔ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک کے مختلف حصوں میں اس سے متاثرہ 3266 لوگ ٹھیک ہوئے ہیں جس سے صحت مند ہوئے لوگوں کی کل تعداد 67692 ہو گئی ہے۔ صحت اور خاندانی بہبود کی مرکزی وزارت کی جانب سے جمعرات کو جاری کئے گئے اعداد و شمار کے مطابق ملک کی مختلف ریاستوں اور مرکز کے علاقے میں اب تک اس سے 158333 لوگ متاثر ہوئے ہیں اور 4531 لوگوں کی موت ہوئی ہے۔ ملک میں فی الحال کورواناکے کل 86110 فعال معاملے ہیں۔ ملک میں بدھ اور منگل کو نئے معاملات میں کمی دیکھی گئی تھی۔ بدھ کو 6387 اور منگل کو 6535 نئے کیس

کورونا کا قہر | ملک میں4337اموات ، ڈیڑھ لاکھ سے زائد متاثر

نئی دلی // ملک کی مختلف ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام خطوں میں اب تک کورونا وائرس سے 151767 لوگ متاثر ہوئے ہیں اور 4337 لوگوں کی موت ہوئی ہے ۔ ملک میں فی الحال کوروناکے کل 83004 فعال معاملے ہیں۔ اس سے ایک دن پہلے 6535، پیر کو 6977 اور اتوار اور ہفتہ کو بالترتیب 6767 اور 6654 نئے کیس سامنے آئے تھے ۔ مہاراشٹر اس وبا سے ملک میں سب سے زیادہ متاثر ہوا ہے ۔ اس ریاست میں کورونانے کافی تباہی برپاکی ہے ۔ مہاراشٹر میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 2091 نئے کیس سامنے آئے ہیں۔ اس کے بعد ریاست میں اب تک اس سے متاثر ہونے والے لوگوں کی تعداد بڑھ کر 54758 ہو گئی ہے ۔ ریاست میں اس جان لیوا وائرس سے اب تک 1792 افراد ہلاک ہوئے ہیں اور 16954 اس انفیکشن سے ٹھیک ہوئے ہیں۔کوروناوائرس سے متاثر ہونے کے معاملے میں تامل ناڈو دوسرے نمبر پر ہے ۔ تمل ناڈو میں اب تک 17728 لوگ اس سے متاثرہ ہوئے ہیں اور 127 اموات ہوئی ہے

تبلیغی جماعت سے متعلق جعلی خبروں پرسپریم کورٹ برہم

 نئی دلی //تبلیغی جماعت اور کورونا وائرس کو لے کر بے بنیاد خبریں نشر کرنے اور نفرت انگیزی پھیلانے کے معاملے کو لیکر جمعتہ علماء  ہند کی جانب سے داخل کی گئی عرضی پر سپریم کورٹ نے حکومت اور پریس کونسل آف انڈیا کو نوٹس جاری کیا ہے۔  چیف جسٹس آف انڈیا اے ایس بوبڑے، جسٹس اے ایس بوپننا اور جسٹس رشی کیش رائے پر مشتمل تین رکنی بینچ کو سینئر ایڈوکیٹ دوشینت دوے (صدر سپریم کورٹ بارایسوسی ایشن) نے بتایا کہ تبلیغی مرکز کو بنیاد بناکر پچھلے دنوں میڈیا نے جس طرح اشتعال انگیز مہم شروع کی یہاں تک کہ اس کوشش میں صحافت کی اعلیٰ اخلاقی قدروں کو بھی پامال کردیا گیا۔ اس سے مسلمانوں کی نہ صرف یہ کہ سخت دل آزاری ہوئی ہے بلکہ ان کے خلاف پورے ملک میں منافرت میں اضافہ ہوا ہے۔ اس لئے اس معاملے میں واجب کارروائی ہونی چاہئے۔سپریم کورٹ نے اس معاملے میں پریس کونسل آف انڈیا اور اور حکومت سے جواب طلب

تبلیغی جماعت سے متعلق جعلی خبروں پرسپریم کورٹ برہم

 نئی دلی //تبلیغی جماعت اور کورونا وائرس کو لے کر بے بنیاد خبریں نشر کرنے اور نفرت انگیزی پھیلانے کے معاملے کو لیکر جمعتہ علماء  ہند کی جانب سے داخل کی گئی عرضی پر سپریم کورٹ نے حکومت اور پریس کونسل آف انڈیا کو نوٹس جاری کیا ہے۔  چیف جسٹس آف انڈیا اے ایس بوبڑے، جسٹس اے ایس بوپننا اور جسٹس رشی کیش رائے پر مشتمل تین رکنی بینچ کو سینئر ایڈوکیٹ دوشینت دوے (صدر سپریم کورٹ بارایسوسی ایشن) نے بتایا کہ تبلیغی مرکز کو بنیاد بناکر پچھلے دنوں میڈیا نے جس طرح اشتعال انگیز مہم شروع کی یہاں تک کہ اس کوشش میں صحافت کی اعلیٰ اخلاقی قدروں کو بھی پامال کردیا گیا۔ اس سے مسلمانوں کی نہ صرف یہ کہ سخت دل آزاری ہوئی ہے بلکہ ان کے خلاف پورے ملک میں منافرت میں اضافہ ہوا ہے۔ اس لئے اس معاملے میں واجب کارروائی ہونی چاہئے۔سپریم کورٹ نے اس معاملے میں پریس کونسل آف انڈیا اور اور حکومت سے جواب طلب

آسام میں سیلاب سے 2لاکھ لوگ متاثر

گوہاٹی//آسام میں سیلاب سے حالات بگڑتے ہی جا رہے ہیں اور برہمپتر دریا سمیت دیگر بڑی ندیاں طغیانی پر آنے سے ریاست کے تقریباً 1.95 لاکھ لوگ متاثر ہو گئے ہیں۔آسام ریاست ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی نے ایک سرکاری بیان جاری کرکے بتایا ہے کہ ریاست کے سات اضلاع سیلاب سے متاثر ہیں۔بیان کے مطابق ریاست میں سرکاری طور پر تقریباً 194916 لوگ سیلاب سے متاثر ہوئے ہیں جس سے تنہا گولپارا ضلع میں ایک لاکھ ساٹھ ہزار سے زائد افراد متاثر ہیں۔ریاست میں برہمپتر سمیت دو دیگر ندیاں خطرے کے نشان سے اوپر بہہ رہی ہیں۔ سیلاب کی وجہ سے گولپارا اور تنسکیا ضلع میں تقریباً نو ہزار افراد کو راحت کیمپوں میں منتقل کیا گیا ہے ۔این ڈی آر ایف اور ایس ڈی آر ایف کی مدد سے مقامی انتظامیہ بچاؤ اور امدادی مہم چلا رہی ہے ۔  

بھارت میں پھنسے 179 پاکستانی شہری وطن واپس

لاہور//لاک ڈائون کی وجہ سے بھارت کے مختلف شہروں میں پھنسے 176پاکستانیوں کو کل واگہ سرحد کے ذریعہ وطن واپس بھیج دیا گیا ۔20مارچ سے واگہ اٹاری سرحد سے 400پاکستانی شہریوں کو واپس بھیج دیا گیا ہے ۔پاکستانی شہری اپنے رشتہ داروں سے ملنے کیلئے ہندوستان کے دوہ پر آئے تھے۔ ان میں کچھ مدھیہ پردیش میں تھے تو کچھ چھتیس گڑھ ، دہلی ، مہاراشٹر ، ہریانہ اور پنجاب کے مختلف علاقوں میں پھنسے ہوئے تھے۔واگہ سرحد پر بی ایس ایف نے ان شہریوں کو پاکستانی رینجرس کے حوالے کیا ۔بتایا جاتا ہے کہ بھارت سے لوٹنے والے پاکستانیوں کو 72 گھنٹوں کیلئے کوارنٹائن کیا جائے گا۔خیال رہے کہ اس ماہ کے آغاز میں ہندوستان میں پھنسے 193 پاکستانی شہری واگہہ بارڈر کے راستے وطن لوٹ چکے ہیں۔ وہیں اس سے پہلے گزشتہ ماہ ہندوستان سے جانے والی دو خواتین پاکستان میں کورونا پازیٹیو پائی گئی تھیں۔  

دہلی میں کورونا وائرس متاثرین کی تعداد 15 ہزار کے پار

نئی دہلی// دارالحکومت میں عالمی وبا کورونا وائرس کا قہرتیزی سے بڑھتا جا رہا ہے اور گزشتہ 24 گھنٹوں میں 792 نئے معاملے سامنے آئے اور 15 مریضوں کی اس سے موت ہوئی ہے۔ دہلی کے محکمہ صحت کی جانب سے بدھ کو جاری اعداد و شمار کے مطابق 792 نئے معاملات سے کل تعداد 15 ہزار 257 تک پہنچ گئی ہے۔ اس دوران 15 مریضوں کی موت سے اس انفیکشن سے ہلاکتوں کی تعداد 303 ہو گئی۔ دہلی صحت ڈائریکٹوریٹ جنرل کے اعداد و شمار کے مطابق فی الحال وائرس کے فعال معاملے 7690 ہیں۔ اس دوران 310 مریض ٹھیک ہوئے ہیں اور اب تک 7264 مریض صحت مند ہو چکے ہیں۔ دہلی میں پر کورونا کے لئے بنائے گئے خصوصی کووڈ ہسپتالوں میں 2118 مریضوں کا علاج چل رہا ہے۔ ان میں سے 191 انتہائی نگہداشت مرکز (آئی سی یو) اور 32 وینٹی لیٹر پر ہیں۔ سب سے زیادہ متاثرہ 602 لوک نائک جے پرکاش نارائن ہسپتال (ایل این جے پی) میں داخل ہیں جن میں 22

ملک میں کورونا سے 4337 ہلاک ، متاثرین کی تعداد 1.50 لاکھ سے زیادہ

نئی دہلی// ملک میں گزشتہ دو دنوں کے دوران کورونا انفیکشن کے نئے معاملوں میں جزوی کمی آئی اور تقریباً 4000 لوگوں کے صحت مند ہونے سے جہاں تھوڑی راحت ملی ہے، وہیں گزشتہ 24 گھنٹے میں انفیکشن کے 6387 نئے کیس سامنے آنے سے ملک میں اس سے متاثر ہونے والے لوگوں کی تعداد 1.50 لاکھ سے تجاوز کر گئی ہے۔ ہندوستان اس انفیکشن سے متاثر ہونے کے معاملے میں دنیا میں 10 ویں نمبر پر ہے۔ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک کے مختلف حصوں میں اس انفیکشن کے 6387 نئے معاملے درج کئے گئے ہیں اور 170 لوگوں نے اپنی جان گنوائی۔ وہیں اس مدت میں 3935 لوگ ٹھیک بھی ہوئے ہیں۔ صحت اور خاندانی بہبود کی مرکزی وزارت کی جانب سے بدھ کو جاری کئے گئے اعداد و شمار کے مطابق ملک کی مختلف ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام خطوں میں اب تک اس سے 151767 لوگ متاثر ہوئے ہیں اور 4337 لوگوں کی موت ہوئی ہے۔ ملک میں فی الحال کوروناکے کل 83004 فعا

ملک میں کورونا کے نئے معاملات میں جُزوی کمی

نئی دہلی//یواین آئی// ملک میں کورونا وائرس (کووڈ 19) کی سنگینی میں اضافہ ہوتاجارہاہے ۔ اور اب یہ دنیا بھر میں انفیکشن کے سب سے زیادہ کیسز والے ممالک میں 10 ویں نمبر پر ہے ۔ گزشتہ 24 گھنٹوں میں انفیکشن کے کیسز میں اگرچہ جزوی کمی آئی ہے جبکہ اسی مدت 2770 لوگ ٹھیک ہوئے بھی ہیں جس سے اس بیماری سے نجات پانے والوں کی تعداد بڑھ کر 60 ہزار سے زائد ہو گئی۔اس درمیان مہاراشٹر میں کورونا وائرس متاثرین کی تعداد 52 ہزار سے زائد ہو گئی۔مرکزی صحت اور خاندانی بہبود کی وزارت کی جانب سے منگل کی صبح جاری تازہ ترین اعداد و شمار کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں میں کورونا وائرس کے 6535 نئے کیسز سامنے آئے جس سے متاثرین کی مجموعی تعداد,45,380 1تک پہنچ گئی۔ فی الحال ملک میں کل 80, 722، ایکٹیو کیسز ہیں۔ اس سے ایک دن پہلے 6977 اور اتوار اور ہفتہ کو بالترتیب 6767 اور 6654 نئے کیسز سامنے آئے تھے ۔ملک میں کووڈ -19 انفیکشن

ملک میں لاک ڈاؤن ناکام رہا:راہل

نئی دہلی//کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی نے کہا ہے کہ وزیراعظم نریندرمودی نے کورونا کو قابو میں کرنے کے لئے ملک سے 21دن مانگے تھے لیکن اب 2ماہ ہونے جارہا ہے لیکن وبا کم ہونے کے بجائے اور بڑھتی ہی جارہی ہے ،جس سے ثابت ہوتا ہے کہ ہندوستان میں لاک ڈاؤن ناکام رہا ہے ۔راہل گاندھی نے منگل کو پریس کانفرنس میں کہا کہ مودی 21دن میں کورونا کو روکنے میں ناکام رہے اور پھر اس میں تین مرتبہ اضافہ کیا گیا۔اب لاک ڈاؤن کو 60روز ہونے والے ہیں لیکن حالات بہتر ہونے کے بجائے بہت زیادہ خراب ہوگئے ہیں۔حکومت کے پاس کورونا سے لڑنے کے لئے کوئی مضبوط حکمت عملی نہیں ہے اس لئے اسے قابو کرنے میں ہم ناکام ہورہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ کورونا سے لڑنے کے لئے دنیا کے تجربات کو دیکھیں تو ہندوستان ہی واحد ملک ہے جہاں اس کے تیزی سے پھیلنے کے درمیان لاک ڈاؤن کھولا جارہا ہے ۔انہوں نے کہا کہ لاک ڈاؤن کا ہدف حاصل نہیں ہوا ہے ۔اس

لاک ڈاؤن کے تعلق سے کانگریس کا میعار دوہرا :جاوڈیکر

نئی دہلی//یو این آئی// اطلاعات و نشریات کے مرکزی وزیر پرکاش جاوڈیکر نے کورونا اور لاک ڈاؤن جیسے معاملات پر کانگریس پردوہرے معیار کی سیاست کرنے کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ ملک میں جب لاک ڈاؤن نافذ ہواتھا تب اسے دقت تھی اور اب لاک ڈان میں رعایت دی جارہی ہے توبھی اسے پریشانی ہے ،جو اس کے دوہرے معیار کی عکاسی کرتا ہے ۔ جاوڈیکر نے کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی کے بیان پر ردعمل کا اظہارکرتے ہوئے منگل کو کہا کہ جس وقت ملک میں لاک ڈاؤن شروع ہوا تھا اس وقت کورونا کے معاملوں کے دوگنا ہونے کی شرح تین دن تھی اور اس وقت کورونا کے دوگنا ہونے کی شرح 13روز ہے اور اس میں کافی بہتری آئی ہے ۔ جاوڈیکر کے مطابق ‘‘دنیا کے متعدد ممالک نے ہندوستان کے وقت رہتے کئے گئے اس فیصلے کی تعریف کی ہے ۔یہ ہندوستان کی کامیابی ہے ۔مجھے تعجب ہوتا ہے کہ اس وقت کانگریس نے واویلا مچایا تھا اور کہا تھا کہ اس

ملک میں کورونا کی سنگینی برقرار، متاثرین کی مجموعی تعداد 1.45 لاکھ

نئی دہلی// ملک میں کورونا وائرس کی سنگینی میں اضافہ ہوتاجارہاہے۔ اور اب یہ دنیا بھر میں انفیکشن کے سب سے زیادہ کیسز والے ممالک میں 10 ویں نمبر پر ہے۔  گزشتہ 24 گھنٹوں میں انفیکشن کے کیسوں میں اگرچہ جزوی کمی آئی ہے جبکہ اسی مدت 2770 لوگ ٹھیک ہوئے بھی ہیں جس سے اس بیماری سے نجات پانے والوں کی تعداد بڑھ کر 60 ہزار سے زائد ہو گئی۔ اس درمیان مہاراشٹر میں کورونا وائرس متاثرین کی تعداد 52 ہزار سے زائد ہو گئی۔  مرکزی صحت اور خاندانی بہبود کی وزارت کی جانب سے منگل کی صبح جاری تازہ ترین اعداد و شمار کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں میں کورونا وائرس کے 6535 نئے کیس سامنے آئے جس سے متاثرین کی مجموعی تعداد 1,45,380 تک پہنچ گئی۔ فی الحال ملک میں کل 80،722 ایکٹیو کیسز ہیں۔ اس سے ایک دن پہلے 6977 اور اتوار اور ہفتہ کو بالترتیب 6767 اور 6654 نئے کیس سامنے آئے تھے۔  ملک میں کورونا انف

افغانستان میں عیدجنگ بندی کی مدت میں ایک ہفتہ کی توسیع

کابل// افغانستان میں عید الفطر کے موقع پر تین دن کی جنگ بندی کے بعد رپورٹوں کے مطابق اب ایک ہفتے تک کے لئے بڑھا دی گئی ہے۔ افغان خبررساں ایجنسی نے یہ اطلاع دی ہے۔ خبررساں ایجنسی پجووک نے حکومت اور طالبان کے ذرائع کے حوالے سے بتایا ہے کہ طرفین جنگ بندی کے بعد ملک میں تشدد کو کم کرنا چاہتے ہیں۔ طالبان نے دراصل عید کے موقع پر اتوار کو تین دن کے لئے جنگ بندی کا اعلان کیا تھا جس کے بعد افغانستان کے صدر اشرف غنی نے اس اقدام کا خیر مقدم کرتے ہوئے اعلان کیا تھا کہ طالبان قیدیوں کو رہا کرنے کے عمل میں تیزی لائی جائے گی اور جنگ بندی کے اعلان کے بدلے ایک مثبت اشارہ کے طور پر دو ہزار طالبان قیدیوں کو رہا کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ قابل غور ہے کہ اس سال 29 فروری کو قطر کے دارالحکومت دوحہ میں امریکہ اور طالبان کے قیدیوں کو رہا کرنے اور قیام امن کے حوالہ سے معاہدہ ہوا تھا۔ (اسپوتنک) &n

شاہ محمود قریشی کا اقوام متحدہ کے سربراہ کو فون

اسلام آباد//پاکستان کے وزیرخارجہ شاہ محمودقریشی نے اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل انٹونیوگٹرس کوٹیلی فون کرکے بھارت کی طرف سے جموں کشمیرمیں اقامتی قانون تبدیل کرنے کے فیصلے پراپنی تشویش سے آگاہ کیا۔اقامتی ضوابط کے تحت وہ تمام افراداوران کے بچے جوجموں کشمیرمیں15سال سے رہ رہے ہیں یا جنہوں نے یہاں کے کسی تعلیمی ادارے میںسات سال تعلیم حاصل کی یامیٹرک یابارہویںکے امتحان میں شمولیت کی ،اقامتی حقوق پانے کے مستحق ہوں گے۔پاکستانی وزارت خارجہ کے مطابق قریشی نے اقوام متحدہ کے سربراہ کوکشمیرکی تازہ ترین صورتحال سے باخبرکیا۔پاک وزیرخارجہ نے کشمیرمیں حالیہ اقامتی قانون کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ یہ چوتھے جنیواکنونشن، بین الاقوامی قوانین اورسلامتی کونسل کی قراردادوں کے منافی ہے۔انہوں نے یہ بھی کہا کہ بھارت کوئی جنگی کارروائی بھی کرسکتا ہے ۔ پاک وزیرخارجہ نے کہا کہ پاکستان  اقوام متحدہ کے فوجی

ملک میں کورونا وائرس متاثرین کی تعداد سوا لاکھ سے متجاوز

نئی دہلی// ملک میں مسلسل دو دن سے عالمی وبا کورونا وائرس انفیکشن کے 6ہزار سے زیادہ کیس سامنے آنے سے متاثرین کی مجموعی تعداد سوا لاکھ کے اعداد و شمار کو پار کرکے 1,25,101 تک پہنچ گئی ہے تاہم راحت کی بات یہ ہے کہ ملک میں 50 ہزار سے زائد لوگوں نے اس انفیکشن سے نجات بھی پائی ہے۔مرکزی صحت اور خاندانی بہبود کی وزارت کی جانب سے ہفتہ کی صبح جاری اعداد و شمار کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں میں کورونا انفیکشن کے اب تک کے سب سے زیادہ 6654 نئے کیسز سامنے آئے جس سے متاثرین کی مجموعی تعداد1,25,101تک پہنچ گئی۔ ملک میں کل فعال کیسز 69597 ہیں۔ اس سے ایک دن پہلے 6088 نئے کیسز سامنے آئے تھے ۔ملک میں کووڈ -19 وبا سے گزشتہ 24 گھنٹوں میں 137 افراد کی موت ہونے سے ہلاک شدگان کی تعداد 3720 ہو گئی۔ جمعہ کے مقابلہ ہفتہ کو مرنے والوں کی تعداد میں کچھ کمی آئی ہے ۔ جمعہ کے اعدادوشمار کے مطابق ایک دن میں کووڈ -19 سے 1

لاک ڈاؤن میں مہاجر مزدوروں کو سب سے زیادہ تکلیف ہوئی:راہل

نئی دہلی// کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی نے کہا ہے کہ کورونا نے متعدد لوگوں کو تکلیف پہنچائی ہے لیکن سب سے زیادہ درد اس نے مہاجر مزدوروں کو دیا ہے جنہیں ماراپیٹا گیا، روگا گیا، ڈرایا دھمکایا گیا لیکن وہ رکے نہیں اور اپنے گھروں کی جانب چلتے رہے ۔راہل  گاندھی نے ہفتہ کومہاجر مزدوروں کے ساتھ بات چیت کی ایک ویڈیو جاری کرتے ہوئے کہا کہ مزدوروں کو ڈرنے کی کوئی ضرورت نہیں ہے ۔ وہ ان کی پریشانیوں کو دور کرنے اور انہیں ان کے گھروں تک پہنچانے کی کوشش کررہے ہیں۔ انہوں نے ہریانہ سے اپنے گھر واپس لوٹ رہے اترپردیش کے کچھ مزدوروں کے ساتھ بات چیت کرکے ان کے مسائل سنتے ہوئے کہا کہ روزی روٹی چھن جانے کی وجہ سے پریشان ہزاروں مزدور سینکڑوں کلومیٹر پیدل چل کر اپنے گھر جارہے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ مزدور صرف کام چاہتے ہیں۔ مہاجر مزدور سب سے زیادہ اس بات سے پریشان ہیں کہ وزیراعظم نریندر مودی نے لاک ڈاؤن

دلی کے مندرمیں پوجا کرنے کی تصاویر وائرل

نئی دہلی// جنوبی دلی کی پولیس نے اسولہ واقع شنی دھام مندر میں پوجا کے لئے ہجوم اکٹھا کرکے لاک ڈاؤن کی خلاف ورزی کرنے کے معاملے]؛۔۔ میں داتی مہاراج کے خلاف معاملہ درج کیا ہے ۔جنوبی دلی کے پولیس ڈپٹی کمشنر اتل ٹھاکر نے سنیچر کو بتایا کہ اسولہ واقع شنی دھام مندر میں ایک مذہبی تقریب کی کچھ تصاویر سوشل میڈیا پر وائرل ہونے کے بعد نوٹس میں آئیں۔انہوں نے کہا کہ ابتدائی جانچ سے پتہ چلا ہے کہ شنی دھام مندر کے خاص پجاری داتی مہاراج اور ان کے ساتھ کچھ لوگوں نے کل شام ساڑھے سات بجے مندر میں ایک مذہبی تقریب کا انعقاد کیا۔پولیس ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ ان لوگوں نے کہا کہ ان لوگوں نے حکومت کی گائڈ لائن کی خلاف ورزی کی ہے ۔ سوشل میڈیا پر وائرل تصاویر میں داتی اور دیگر لوگ بادی النظر میں غیر قانونی کام کرتے پائے گئے۔

بھارت میں2019سے50لاکھ سے زیادہ لوگ بے گھر ہوئے: اقوام متحدہ

نئی دہلی//یو این آئی//شدید سمندری طوفان ‘امفان’ کی وجہ سے مغربی بنگال اور اوڈیشہ میں بڑی تعداد میں لوگوں کے بے گھر ہونے کی اطلاعات کے درمیان اقوام متحدہ کی طرف سے جاری رپورٹ سامنے آئی ہے جس میں گزشتہ برس 2019میں ملک میں قدرتی آفت، تنازعات اور تشدد کے واقعات کی وجہ سے پچاس لاکھ سے زیادہ افراد داخلی طورپر بے گھر ہوئے ہیں۔اقوام متحدہ کے بچوں کا فنڈ (یونیسیف) کی ‘لاسٹ ایٹ ہوم’ کے عنوان والی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ گزشتہ برس پوری دنیا میں بے گھر ہونے کے تقریباًً 330لاکھ نئے معاملے درج کئے گئے ۔ ان میں نقل مکانی کے تقریباً 250لاکھ قدرتی آفت اور 80.5لاکھ معاملے تنازعات اور تشدد کے واقعات سے منسلک ہیں۔ رپورٹ کے مطابق ہندستان میں 2019میں 50.37.000داخلی نقل مکانی کے اعداد و شمار میں 50,18,000معاملے قدرتی آفت سے متعلق اور 19,000معاملات تنازعات اور تشدد کے واقعات سے

ریلوے کی بد انتظامی سے مزدوروں کی پریشانیوں میں اضافہ

ممبئی//کورونا وائرس کی وجہ سے مختلف مقامات پر پھنسے ہوئے لاکھوں خستہ حال اور پریشان مزدور جب ایک تکلیف دہ اور لمبے انتظار کے بعد کسی طرح اپنے اپنے علاقوں کی واپسی کے لیے ٹرینوں پر سوار ہوئے ،توگھرواپس لوٹنے کی خوشی میں انکے چہرے دمک رہے تھے ، مگر انکی یہ خوشی ریلوے انتظامیہ کی نا اہلی اور بد انتظامی کے باعث دوبارہ پریشانی میں بدل گئی، جب انھیں یہ پتہ چلا کہ وہ جس جگہ کے لیے روانہ ہوئے تھے اس جگہ جانے کا ریلوے نے راستہ تبدیل کر دیا ہے اور اب وہ اپنے مقام پر کب پہنچے گے انھیں پتہ نہیں اور انکا یہ سفر "رام بھروسے " کا سفر ثابت ہو رہا ہے ۔ذرائع کے مطابق ، گذشتہ چند دنوں میں ہندوستانی ریلوے نے مہاراشٹر اور گجرات روانہ ہونے والی متعدد خصوصی ٹرینوں کے راستوں کو اچانک تبدیل کردیا ۔ پچھلے کچھ دنوں میں دو ہمسایہ ریاستوں اترپردیش اور بہار کے لئے روانہ ہونے والی کم از کم 13 ٹرینوں کے طے

ملک میں کورونا وائرس متاثرین کی تعداد سوا لاکھ سے متجاوز

نئی دہلی// ملک میں مسلسل دو دن سے عالمی وبا کورونا وائرس انفیکشن کے چھ ہزار سے زیادہ کیس سامنے آنے سے متاثرین کی مجموعی تعداد سوا لاکھ کے اعداد و شمار کو پار کرکے 1،25،101 تک پہنچ گئی ہے تاہم راحت کی بات یہ ہے کہ ملک میں 50 ہزار سے زائد لوگوں نے اس انفیکشن سے نجات بھی پائی۔ مرکزی صحت اور خاندانی بہبود کی وزارت کی جانب سے ہفتہ کی صبح جاری اعداد و شمار کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں میں کورونا انفیکشن کے اب تک کے سب سے زیادہ 6654 نئے کیسز سامنے آئے جس سے متاثرین کی مجموعی تعداد 1،25،101 تک پہنچ گئی۔ ملک میں کل فعال کیسز 69597 ہیں۔ اس سے ایک دن پہلے 6088 نئے کیسز سامنے آئے تھے۔ ملک میں کورونا وبا سے گزشتہ 24 گھنٹوں میں 137 افراد کی موت ہونے سے ہلاک شدگان کی تعداد 3720 ہو گئی۔ جمعہ کے مقابلہ ہفتہ کو مرنے والوں کی تعداد میں کچھ کمی آئی ہے۔ جمعہ کے اعدادوشمار کے مطابق ایک دن میں ?ووڈ -19 س