تازہ ترین

انکائونٹر کے دوران عام شہریوں کی حفاظت کو یقینی بنایا جائے

راجوری//جموں و کشمیر کے سابقہ وزیر اعلیٰ غلام نبی آزاد نے جمعہ کوراجوری ضلع میں عوامی جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ انکائونٹر کے دوران عام شہریوں کی ہلاکت پر روک لگائی جانے چاہئے ۔عوامی ریلی کے موقع پر میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے غلام نبی آزاد نے عسکریت پسندی اور حالات سے متعلق ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ عسکریت پسندی کی صورت حال سیڑھی اور سانپ کے کھیل کی طرح ہے جہاں ایک قدم بھاری قیمت ادا کر سکتا ہے۔انہوں نے کہاکہ سیکورٹی فورسز نے جموں و کشمیر میں زبردست کردار ادا کیا ہے اور وہ عسکریت پسندی سے لڑ رہے ہیں لیکن شہری ہلاکتوں کو روکا جانا چاہیے۔کانگریس لیڈر نے کہاکہ ’’مجھے یہ کہنا ضروری ہے کہ عام شہریوں کی ہلاکت کافی اثر انداز ہو تی ہے اور سیکورٹی فورسز کو ان ہلاکتوں کو روکنے کیلئے ہر ممکن کوشش کرنی چاہیے۔انکاؤنٹر کے حوالے سے آزاد نے کہا کہ کئی بار ایسا دیک

راجوری پونچھ کی فضا میں مشکوک روشنی

راجوری //جموں خطہ کے راجوری اور پونچھ اضلاع کے کچھ حصوں میں جمعہ کی شام ہوا میںمسک اسٹار لنک سیٹلائٹ ٹرین کی موجودگی نے لوگوں کو خوف میں مبتلا کر دیا۔ جمعہ کی شام کوفضاء میں روشنی کی ایک پراسرار لمبی پگڈنڈی نے مقامی لوگوں میں خوف و ہراس پھیلا دیاجس کے بعد سیکورٹی فورسز کی جانب سے بھی اس معاملہ کو سنجیدگی کیساتھ لیا تاہم بعد میں معلوم ہوا ہے ہوا میں مذکورہ روشنی در اصل مسک اسٹار لنک سیٹلائٹ ٹرین کی تھی ۔عام لوگوں نے بتا یا کہ سرحدی ضلع راجوری ٹھنڈی کسی کیساتھ ساتھ سرحدی ضلع پونچھ کے مینڈھر سب ڈویژن میں بھی مکینوں نے جمعہ کی شام ہوا میں ایک مشکوک روشنی کو اُڑتے ہوئے دیکھا ۔انہوں نے کہاکہ ان علاقوں کے اوپر آسمان میں پراسرار روشنی کی ایک لمبی پگڈنڈی دیکھی گئی جبکہ کئی جگہوں پر لوگوں نے اس پگڈنڈی کی تصویریں اور ویڈیو بنا کر بھی سوشل میڈیا پر وائر کی ۔ عینی شاہدین نے بتایا کہ اس طرح کی

کوٹرنکہ کی سڑکوں پر غیر معیاری سازو سامان کااستعمال

کوٹرنکہ //سب ڈویژن کوٹرنکہ میں جہاں کئی رابطہ سڑکیں بدحالی کا شکار ہو چکی ہیں جبکہ متعلقہ محکموں کی جانب سے کئے گئے تعمیر اتی کام میں انتہائی غیر معیاری ساز و سامان استعمال کئے جانے کی وجہ سے اب سڑکیں مزید خستہ حالی ہو شکار ہو گئی ہیں ۔کئی ایک رابطہ سڑکوں پر بچھائی گئی تار کول کچھ ہی مدت میںاکھڑ گئی جس کی وجہ سے سڑکیں کھڈوں میں تبدیل ہو گئی ہے ۔مقامی لوگوں نے محکمہ تعمیر ات عامہ کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ سڑکوں کو کمائی کا ذریعہ سمجھا جارہا ہے جس کی وجہ سے ان پروجیکٹوں پر معیاری کام کر کے ان کو مکمل ہی نہیں کیا جارہا ہے ۔مکینوں نے بتایا کہ محکمہ کی جانب سے تعمیراتی عمل کو مکمل کیا ہی نہیں جارہا ہے جبکہ مقامی انتظامیہ کیساتھ ساتھ ساتھ سیاسی نمائندوں کی جانب سے بھی اس طرح کوئی دھیان نہیں دیا جارہا ہے ۔انہوں نے کہاکہ سیاسی نمائندے ذات اور مذہب کے نام پر ووٹ لے کر غائب ہوجاتے ہیں ل

۔9برس بعد سڑک پر تارکول بچھانے کا عمل شروع

سرنکوٹ //سرنکوٹ کے صدر مقام سے الگ بھگ چار کلو میٹر کی دوری پر واقع سنئی لور پنچایت کے محلہ چوہانہ تا اپر ناڑی چار کلو میٹر سڑک پر میکڈم بچھایا گیا تھا مگر اس کے بعد مقامی مکینوں کی جانب سے سڑک میں کئی طرح کے مسائل کھڑے ہو گئے جس کی بنیاد پرمحکمہ تعمیرات عامہ کی جانب سے تارکول بچھانے کا عمل ممکن نہیں ہو سکا۔کافی عرصہ تک کام میں تعطیل رہنے کے بعد متعلقہ محکمہ کے اعلیٰ آفیسران او ر ضلع ترقیاتی کونسل رکن شاہنواز چوہدری کی مداخلت کی وجہ سے اب سڑک پر دوبارہ سے تار کول بچھانے کا عمل شروع کر دیا گیا ہے ۔اس دوران ڈی ڈی سی ممبر نے دوبارہ سے کام کو شروع کروایا جبکہ اس موقعہ پر متعلقہ محکمہ کے اعلیٰ آفیسران بھی موجود تھے ۔ضلع ترقیاتی کونسل رکن نے کہا لوگوں کے درمیان نجی معاملات کی وجہ سے سڑک کی تعمیر میں تاخیر ہوئی تھی لیکن اب معاملات کو حل کر لیا گیا ہے اور تعمیری عمل کو دوبارہ سے شروع کر دیا

پونچھ کے کئی معذور افراد سہولیات وسرکاری سکیموں سے محروم

منڈی// 3دسمبر کو جہاں پوری دنیا کے ساتھ ساتھ جموں و کشمیر اور ضلع پونچھ میں بھی معذوروں کاعالمی دن منایا گیا اور سرکار کی جانب سے معذور افراد کو ہر طرح کی سہولیات دینے کے مختلف تقریبات میں دعوے کئے گئے جبکہ زمینی سطح پر صورتِ حال اس سے بالکل الگ ہے اور آج بھی ضلع پونچھ کے متعدد معذور افرادسرکاری سہولیات کو ترس رہے ہیں ۔ضلع پونچھ کی تحصیل منڈی کے علاقہ سلونیاں سے تعلق رکھنے والے عبدل مجید ولد جمال دین جو کہ گزشتہ چھ برس سے سرکاری دفاتر کے چکر کاٹ رہے ہیں لیکن ابھی تک ان کو نقل و حرکت کیلئے انتظامیہ نے مرکزی حکومت کی جانب سے شروع کر دہ سکیم کے تحت سیکوٹی فراہم نہیں کی ۔عبدل مجید معذور ہونے سے قبل مستری کا کام کرتا تھا اور اپنے بال بچوں کی کفالت کرتا تھا ۔سات برس قبل مذکورہ شخص کا پونچھ میں ایک تیز رفتار گاڑی کی زد میں آکر معذور ہو گیا تھا ۔حادثے کی وجہ سے اس کی کمر کی ہڈی ٹوٹ گئی اور و

عالمی یوم معذوری پر نوشہرہ میں تقریب کا انعقاد

نوشہرہ //معذوروں کے عالمی دن کی مناسبت سے نوشہرہ میں ایک پروگرام کا اہتمام کیا گیا ۔جموں کشمیر معذور ویلفیئر ایسوسی ایشن کے اشتراک سے منعقدہ پروگرام کے دوران مقررین نے معذور افراد کی پریشانیوں کیساتھ ساتھ جموں وکشمیر اور مرکزی حکومت کی جانب سے ان کو فراہم کردہ سہولیات پر تفصیلی روشنی ڈالی ۔مقررین نے کہاکہ مرکزی حکومت کی جانب سے معذور افراد کی فلاح و بہبود کیلئے کئی سکیمیں شروع کی ہیں لیکن جموں وکشمیر کے پسماندہ اضلاع میں مذکورہ سکیموں کی مکمل عمل آواری ابھی تک پوری طرح سے ممکن ہی نہیں ہو سکی ۔انہوں نے کہاکہ وہ محکمہ سماجی بہبود دعویٰ کر رہا ہے کہ معذور افراد کے حقوق کے قانون 2016 کو پہلے ہی جموں و کشمیر  تک بڑھا دیا گیا تھا اور حقوق کے تحفظ کیلئے تنظیم نو کا ایکٹ بھی نیشنل ٹرسٹ ایکٹ 1999 میں جموں و کشمیر کو شامل کرنے کے عمل جاری ہے ۔اسی طرح دیگر سکیموں کو جموں وکشمیر می لاگو کرنے

ڈگری کالج پونچھ میں معذور افراد کے عالمی دن پر تقریب کا انعقاد

 پونچھ//ملک کے دیگر حصوں کی طرح جموں کشمیر کے ضلع پونچھ میں بھی معذور افراد کا عالمی دن منایا گیا۔ضلع انتظامیہ پونچھ کی جانب سے اس دن کے حوالے سے ڈگری کالج پونچھ کے کانفرنس ہال میں ایک تقریب منعقد ہوئی جس کی صدارت ضلع ترقیاتی کمشنر پونچھ اندرجیت نے کی اس موقع پر ایس ایس پی پونچھ کے علاوہ فوج ، پولیس اور ضلع انتظامیہ کے افسران معزز شہریوں اور خصوصی افراد کی کثیر تعداد نے شرکت کی ۔تقریب کے دوران ڈگری کالج پونچھ کے پرنسپل ایم ایچ شاہ کی طرف سے خصوصی افراد جن میں سماجی کارکن مولوی فرید ،رشید شاہپوری اور دیگر افراد شامل تھے کی عزت افزائی کرتے ہوئے ان کو شال اوڑھائے اور ان میں اسناد اور تحائف بھی تقسیم کئے ۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے مقررین نے کہاہے کہ معذور افراد معاشرے کا اہم حصہ ہیں ان کی بہترین تعلیم و تربیت کرکے ہم انہیں معاشرے کے لئے کارآمد شہری بنا سکتے ہیں۔ انہوں نے کہاہے حکومت

سائبر کرائم اور سیکورٹی پر آگاہی پروگرام منعقد

نوشہرہ //گور نمنٹ ڈگر ی کالج نوشہرہ میں منتظمین کی جانب سے سائبر کرائم اور سیکورٹی پر ایک آگاہی پروگرام کا اہتمام کیا جس میں کالج کے سٹاف ممبران ااور طلباء نے بڑی تعداد میں شرکت کی ۔اس بیداری پروگرا میں اے ایس پی نوشہرہ بطور ریسورس پرسن شامل ہوئے جبکہ مقررین نے طلباء کو سائبر کرائم سے بچائو اور اس سے دور رہنے کیلئے احتیاطی اقدامات کے سلسلہ میں بھی جانکاری فراہم کی گئی ۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے کالج کے پرنسپل نے طلباء کو سائبر کرائم سے دور رہنے کی تلقین کی اور طلباء کو بھی بتایاکہ وہ  انٹرنیٹ کو احتیاط سے استعمال کریں۔اے ایس پی نوشہرہ نے روزمرہ کی زندگی میں سائبر کرائمز کے بارے میں تفصیلی جانکاری دی۔ انہوں نے سائبر جرائم کی مختلف اقسام کی وضاحت کی اور نوجوانوں کو تلقین کرتے ہوئے کہا کہ وہ اس طرح کے جرائم سے اپنے آپ کو دور رکھیں ۔مقررین نے کہاکہ طلباء اور نوجوانوں کو چاہئے کہ وہ

منجا کوٹ ۔منگلناڑ رابطہ سڑک انتہائی خستہ

منجا کوٹ //تحصیل ہیڈ کوارٹر منجا کوٹ سے سرحدی علاقہ منگلناڑ جانے والی رابطہ سڑک گزشتہ کئی برسوں سے خستہ حال ہو ئی ہے جس کی وجہ سے مسافروں و ٹرانسپورٹروں کو دوران آمد ورفت شدید مشکلات درپیش رہتی ہیں ۔مقامی لوگوں نے بتایا کہ حکومت کی جانب سے سرحدی علاقوں کو بنیادی سہولیات فراہم کرنے کیلئے ایک رابطہ سڑک کی تعمیر کا عمل شروع کیا تھا لیکن گزشتہ کئی برسوں سے مذکورہ عمل مکمل ہی نہیں ہو سکا ۔انہوں نے بتایا کہ منگلناڑ علاقہ میں جانے والی رابطہ سڑ ک کو مکمل کروانے کیلئے انہوں نے کی مرتبہ متعلقہ حکام اور مقامی انتظامیہ سے بھی رجوع کیا لیکن ابھی تک اس پروجیکٹ کو مکمل کر کے عوام کو بنیادی سہولیات فراہم ہی نہیں کی جارہی ہیں ۔غور طلب ہے کہ منجا کوٹ کے سرحدی علاقوں میں آبادوسیع تر آبادی مذکورہ خستہ حال رابطہ سڑکوں کی مدد سے ہی تحصیل اور ضلع ہیڈ کوارٹر کا رخ کرتے ہیں ۔مکینوں نے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ

منڈی کے گھوڑا نک پلیرہ میں پانی کی سخت قلت

پونچھ//تحصیل منڈی کے گائوں گھوڑا نک پلیرہ کی وارڈ نمبر 5 اور6  میں پینے کے صاف پانی کی عدم دستیابی سے لوگ پچھلے20روز سے مشکلات کا سامنا کر رہے ہیں۔اگرچہ محکمہ جل شکتی نے مذکورہ علاقے میں کئی برس قبل ایک منصوبے کے تحت پانی کی پائپ لائن نصب کی تھی، تاہم پانی کی سپلائی لائن خستہ ہونے کی وجہ سے لوگوں کو پانی دستیاب نہیں ہو رہا ہے ۔پینے کے صاف پانی کی عدم دستیابی سے پریشان سینکڑوںکنبوں پر مشتمل عوام کا کہنا ہے کہ انہیں پینے کے صاف پانی کی عدم دستیابی کا سامنا ہے اور ان کا کوئی پرسان حال نہیں۔پانی کی عدم دستیابی سے پریشان گائوں کی خواتین نے ایک پُر امن احتجاجی مظاہرہ کیا جہا ںانھوں نے محکمہ جل شکتی کے خلاف جم کر نعرے بازی کی ۔خواتین کا کہنا تھا کہ گائوں میں جتنے قدرتی چشمے تھے وہ2006میںآئے زلزلے کی وجہ سے سوکھ گئے اب ان کے گھروں سے دور دراز ایک قدرتی چشمہ ہے جہاں سے ان کو گھر کے استعما

دبڑ پوٹھہ میں فوج کا طبی کیمپ

نوشہرہ // فوج کی جانب سے نوشہرہ سب ڈویژن کے دبڑ پوٹھہ علاقہ میں ایک طبی کیمپ لگایا گیا جس کے دوران مقامی لوگوں کا طبی معائینہ کرنے کیساتھ ساتھ ان کو مفت ادویات بھی فراہم کی گئی ۔اس کیمپ کے دوران ڈاکٹروں کی ایک ٹیم نے مریضوں کا معائینہ کرنے کیساتھ ساتھ ان کو کووڈ ودیگر کئی مہلوک بیماریوں کے سلسلہ میں تفصیلی جانکاری فراہم کرتے ہوئے احتیاطی تدابیر اختیار کرنے کی تلقین بھی کی ۔انہوں نے کہاکہ اس وقت ملک بھر میں کووڈ کی تیسری لہر چل رہی ہے جبکہ عام لوگوں کو چاہئے کہ وہ انتظامیہ کی جانب سے بتائے گئی احتیاطی تدابیر اختیار کر کے وائر س کو سماج سے دور رکھنے کیلئے اپنا رول ادا کریں ۔اس طبی کیمپ کیلئے فوج کی جانب سے نوشہرہ سب ڈسٹر کٹ ہسپتال کے ڈاکٹروں کی خدمات بھی حاصل کی گئی تھی ۔مقامی لوگوں نے فوج کا شکریہ ادا کرتے ہوئے امید ظاہر کی کہ اس مہم کو آئندہ بھی جاری رکھ کر عام لوگوں کو بنیادی سہولیات

مزید خبریں

آزادکی ریلی میں پہاڑیوں کو ایس ٹی کا درجہ دینے کے مطالبے کی گونج  سمت بھارگو  راجوری//راجوری میں غلام نبی آزاد کی عوامی ریلی کے دوران پہاڑیوں کو درج فہرست قبائل کا درجہ دینے کا مطالبہ گونجا۔کانگریس کے ضلع صدر شبیر احمد خان سمیت اجتماع سے خطاب کرنے والے متعدد قائدین نے مطالبہ کیاکہ پہاڑیوں کیساتھ انصاف کیا جائے ۔مقررین نے کہا کہ پہاڑی قبیلے کونظر انداز کردیا گیا ہے اور ایس ٹی کا درجہ دینے کے اس کے مطالبے کو کئی دہائیوں سے نظر انداز کیا جا رہا ہے لیکن حکومت ہند کو اب اس مطالبے کو کسی بھی طرح کی تاخیر کے بغیر تسلیم کرنا چاہیے۔انہوں نے کہاکہ وہ مطالبہ کررہے ہیں کہ ان کی مانگوں کو اعلیٰ سطح پر اجاگر کر کے قبائل کو جلداز جلد ایس ٹی کا درجہ دلایا جائے تاکہ غریبوں کو انصاف مل سکے ۔   سکول کئی عرصہ سے مسلسل بند  بچوں کے تعلیمی نقصان پر والدین کو تشویش&n