تازہ ترین

پونچھ میں کنٹرول لائن پر تین سیکٹروں میں بھارتی چوکیوں پر پاکستان کی شیلنگ

سرینگر//حکام نے بدھ کو کہا کہ پاکستان کی افواج نے پونچھ ضلع میںکنٹرول لائن پر تین سیکٹروں میں بھارت کی اگلی چوکیوں کو مارٹر شیلنگ سے نشانہ بنایا۔ ایک دفاعی ترجمان کے مطابق پاکستان نے آج صبح کسی اشتعال کے بغیر جنگ بندی معاہدے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے پونچھ کے کیرنی، قصبہ اور شاہپور سیکٹروں میں چھوٹے ہتھیاروں سے بھارت کی چوکیوں کو شدید گولہ باری کا نشانہ بنایا۔ ترجمان نے کہا کہ بھارتی افواج نے پاکستانی فائرنگ کا ”بھر پور اور مناسب“ جواب دیا۔ قابل ذکر ہے کہ گذشہ ہفتے ضلع راجوری میں کراس کنٹرول لائن گولہ باری میں ایک فوجی ہلاک اور دو زخمی ہوئے تھے۔2ستمبر کے روز ایک اور ایسے ہی واقعہ میں ضلع راجوری میں ہی ایک جے سی او ہلاک ہوا تھا۔  

سیزن ختم ہونے کے بعد مغل روڈ بحال

شوپیان /شاہد ٹاک/ ضلع انتظامیہ پونچھ نے بالآخر مغل روڑ کو دو طرفہ ٹریفک کیلئے کھولنے کا فیصلہ کیا ہے۔ضلع مجسٹریٹ نے جمعہ سے مسافر ٹریفک کو دو طرفہ طور چلنے کی اجازت دی ہے۔ مسافروں کی ٹیسٹنگ بفلیاز اور ہیر پورہ شوپیان میں کی جائیگی تاہم صوبائی ٹریفک کے چلنے کے بارے میں صوبائی انتظامیہ کی اجازے لازمی ہے۔یہ بات قابل ذکر ہے کہ سرینگر جموں، جموں سرینگر،جموں دہلی کے علاوہ جموں پٹھانکوٹ، لدھیانہ یا دیگر ریاستوں کیلئے مسافر کے چلنے پر ساری پابندیاں ختم کی گئی تھیں اور کہیں پر بھی کوئی پابندی نہیں تھی لیکن صرف مغل روڑ کو بند کیا گیا تھا، جس پر پونچھ کی انتظامیہ نے مسافر گاڑیوں کے چلنے پر پابندی عائد کی تھی۔ضلع انٹطامیہ پونچھ کی جانب سے اس بلا جواز پابندی کی وجوہات اب تک سمجھ میں نہیں آرہی ہے حالانکہ پونچھ مین پہلے جب کورونا کیسز نہ ہونے کے برابر تھے تو مغل روڑ بند کیا گیا تھا اور اب جبکہ کیسز

تازہ ترین