امریکہ کا ڈبلیو ایچ او سے تعلقات ختم کرنے کا اعلان

واشنگٹن// کورونا وائرس پھیلنے پر پیدا تنازعے نے بالآخر سنگین شکل اختیار کر لی اور امریکہ نے عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) کی امداد بند کر دی او ر اسکے ساتھ تمام تعلقات ختم کر دینے کا اعلان کر دیا۔ ڈبلیو ایچ او پر چین کی 'کٹھ پتلی' ہونے کا الزام عائد کرتے ہوئے صدر امریکہ ڈونیلڈ ٹرمپ نے کل کہا کہ عالمی ادارہ صحت کو امریکہ کی جانب سے جو رقم دی جاتی تھی وہ اب دوسری تنظیموں اور ضرورت مند ممالک کو دی جائے گی تاکہ وہاں کورونا کی وبا سے نمٹا جا سکے۔ اطلاعات کے مطابق ٹرمپ نے کل وائٹ ہاو¿س کے روز گارڈن میں اخباری نمائندوں سے بات چیت میں دعویٰ کیا کہ چینی حکام نے کورونا وائرس کی وبا حوالے سے عالمی ادارہ صحت کو اندھیرے میں رکھا۔ اس کے بعد عالمی تنظیم نے بھی بھی کووڈ 19 کی بابت دنیا کو گمراہ کن معلومات فراہم کیں۔ واضح رہے کہ عالمی ادارہ صحت کا قیام 1948 میں اقوام متحدہ

دنیا میں 3.60لاکھ ہلاکتیں ، متاثرین کی تعداد 58 لاکھ کے پار

 جینیوا//دنیا بھر میں کورونا وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد 58 لاکھ سے تجاوز کرگئی ہے ، جبکہ اب تک 3.60 لاکھ سے زائد افراد اس وبا سے مرچکے ہیں۔ امریکہ میں دس لاکھ سے زیادہ افراد کورونا وبا کا شکار ہوچکے ہیں جبکہ 1لاکھ سے زائد افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔ برازیل میں متاثرہ افراد کی تعداد ساڑھے چار لاکھ سے تجاوز کر گئی ہے ۔ یہاں 4،38،238 افراد اس سے متاثر ہوچکے ہیں اور 26،754 افراد لقمہ اجل بن چکے ہیں۔روس میں بھی ، کوویڈ 19 کا انفیکشن پھیلتا ہی جارہا ہے اور اب تک اس کے انفیکشن سے 3،79،051 افراد متاثر ہوئے ہیں جبکہ 4142 افراد اپنی زندگی سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں۔ برطانیہ میں بھی ، اس انفیکشن کی وجہ سے صورتحال خراب ہوتی جارہی ہے ۔ اب تک 2،70،508 افراد اس وبا سے متاثر ہوچکے ہیں اور 37،919 افراد فوت ہوچکے ہیں۔یوروپی ملک اٹلی میں اس وبا نے بہت تباہی مچا دی ہے ۔ اب تک اس کی وجہ سے 33،142 افراد لقمہ

پاکستان میں مزید 3 ڈاکٹروں کی موت | طبی عملے کے متاثرین کی تعداد 1904 ہوگئی

اسلام آباد // پاکستان میں کورونا وائرس کے باعث مزید 3 فرنٹ لائن ڈاکٹرز انتقال کرگئے جبکہ عالمی وبا سے متاثر ہونے والے طبی عملے سے وابستہ افراد کی تعداد ایک ہزار 904 ہوگئی۔جاں بحق ہونے والے ڈاکٹروں میں بولان میڈیکل کمپلیکس کے ٹراما سینٹر کے انچارج ڈاکٹر زبیر احمد، پنجاب کی لیڈی ڈاکٹر ثنا فاطمہ اور ہنگو کے طبی مرکز میں فرائض سرانجام دینے والے افغان ڈاکٹر خانزادہ شامل ہیں۔کوئٹہ میں بولان میڈیکل کمپلیکس ہسپتال میں قائم ٹراما سینٹر کے انچارج ڈاکٹر زبیر احمد کورونا وائرس کے باعث جاں بحق ہوگئے جن کا کورونا ٹیسٹ کچھ روز قبل مثبت آیا تھا۔وزارت صحت کی جانب سے 29 مئی کو سامنے آنے والے 28 مئی شب 8 بجے تک کے اعداد و شمار کے مطابق اب تک ملک میں طبی عملے سے وابستہ ایک ہزار 904 افراد متاثر ہوئے ہیں جن میں ایک ہزار 35 ڈاکٹرز، 299 نرسز اور دیگر طبی عملہ شامل ہے جبکہ 17 جاں بحق بھی ہوئے ہیں۔اعداد و شم

ملائیشیا: سابق وزیراعظم مہاتیر محمد کی پارٹی رکنیت منسوخ

لندن //ملائیشیا کے سابق وزیر اعظم مہاتیر محمد کو ان کی سیاسی جماعت سے بے دخل کردیا گیا۔سیاسی جماعت بیراستو کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا کہ ’مہاتیر محمد کی رکنیت فوری طور پر منسوخ کی جاتی ہے‘۔واضح رہے کہ مہاتیر محمد بیراستوپارٹی کے شریک بانیوں میں سے ہیں۔رپورٹ کے مطابق پارٹی کے چیئرمین مہاتیر محمد کو ملائیشیا کی حکومت کی حمایت نہ کرنے پر برطرف کیا گیا جس کی سربراہی وزیراعظم محی الدین یاسین کررہے ہیں۔خیال رہے کہ محی الدین یاسین پارٹی کے صدر ہیں۔سوشل میڈیا پر وائرل مراسلے میں پارٹی نے واضح کیا کہ جب گزشتہ ہفتے پارلیمنٹ کا اجلاس ہوا تھا تو مہاتیر محمد اپوزیشن کے ساتھ بیٹھ گئے، انہوں نے ظاہر کردیا کہ وہ پارٹی کے صدر اور وزیراعظم محی الدین کی قیادت کو تسلیم نہیں کرتے، اس طرح وہ خود ہی رکنیت کے دائرے سے باہر ہوگئے۔اس ضمن میں پارٹی کے صدر اور وزیراعظم محی الدین کے قریبی ساتھی ن

سیاہ فام شخص کی ہلاکت پر امریکہ میں پرتشدد مظاہرے

نیویارک //امریکہ کی ریاست منی سوٹا کے شہر منیاپولس میں پولیس کی زیرِ حراست سیاہ فام شخص کی ہلاکت پر پرتشدد مظاہروں کا سلسلہ جاری ہے۔امریکی ایوانِ نمائندگان میں حزبِ اختلاف کی جماعت ڈیمو کریٹک پارٹی نے واقعے کی مکمل تحقیقات کا مطالبہ کیا ہے۔منیاپولس میں ہنگاموں کا سلسلہ اس وقت شروع ہوا جب سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو وائرل ہوئی تھی جس میں ایک پولیس اہلکار نے ایک سیاہ فام شخص کی گردن پر اپنے گھٹنے سے دباؤ ڈال رکھا تھا۔ جو بعد میں دم توڑ گیا تھا۔مذکورہ شخص کی بعدازاں شناخت 46 سالہ جارج فلوئیڈ کے نام سے ہوئی تھی جو مقامی ہوٹل میں سیکیورٹی گارڈ تھا۔پولیس کا الزام تھا کہ مذکورہ شخص کو ایک ڈیپارٹمنٹل اسٹور کے قریب سے جعلی بل منظور کرانے کے الزام میں گرفتار کیا گیا تھا۔ لیکن اس نے گرفتاری کے دوران مزاحمت کی کوشش کی۔واقعے کے بعد نہ صرف منیاپولس بلکہ امریکہ کے دیگر شہروں میں بھی پرتشدد مظاہروں کا سل

تازہ ترین