شعبہ امراض چشم کے ڈاکٹر کی عدم دستیابی | رعناواری ہسپتال میں20دنوں سے جراحیوں کا سلسلہ ٹھپ

تاریخ    9 دسمبر 2021 (00 : 01 AM)   


پرویز احمد
سرینگر //ڈائریکٹر ہیلتھ سروسز کی یقین دہانیوں کے بائوجود بھی جواہر لال نہرو میموریل اسپتال رعناواری کا شعبہ امراض چشم  پچھلے 20دنوں سے بند پڑا ہے ۔ ڈائریکٹر ہیلتھ سروسز کشمیر نے سنیچر کو مقامی لوگوں کو یقین دہانی کرائی تھی کہ پیر تک شعبہ امراض چشم میں ماہر ڈاکٹر کی تعیناتی کو یقینی بنایا جائے گا لیکن مزید 3گذر جانے کے بائوجود بھی شعبہ امراض چشم بند پڑا ہے۔ محمد اشرف شیخ ساکنہ رعناواری نامی ایک مریض نے بتایا ’’شعبہ میں جونیئر ڈاکٹر تعینات ہیں اور اسلئے اب لوگ اسپتال کے بجائے نجی کلنکوں کا رخ کرتے ہیں جہاں انہیں موتیابن کیلئے 20سے 30ہزار روپے تک ادا کرنے پڑتے ہیں۔ اسپتال انتظامیہ نے بھی اس بات کا اعتراف کیا ہے کہ شعبہ امراض چشم میں سینئر ڈاکٹر کے تبادلے اور دوسرے سینئر ڈاکٹر کے کورونا وائرس سے متاثر ہونے کی وجہ سے جراحیوں کا سلسلہ بند ہے اور شعبہ کافی حد تک متاثر ہورہا ہے۔میڈیکل سپر انٹنڈنٹ ڈاکٹر رئوف بٹ نے کشمیر عظمی کو بتایا ’’ ہم نے اس حوالے سے ڈائریکٹر ہیلتھ کو مطلع کیا ہے اور اُمید ہے کہ وہ آنے ولے چند دنوں میں کسی سینئر ڈاکٹر کو تعینات کیا جائیگا‘‘۔
 

تازہ ترین