تازہ ترین

حالات کو بہتر بنانے کے لئے کانگریس کا ساتھ دینا لازمی: غلام احمد میر

تاریخ    7 دسمبر 2021 (43 : 03 PM)   


یو این آئی
سری نگر// جموں وکشمیر پردیش کانگریس کمیٹی کے صدر غلام احمد میر کا کہنا ہے کہ جموں وکشمیر کے موجودہ حالات کو بہتر بنانے کے لئے کانگریس کا ساتھ دینا لازمی ہے۔
انہوں نے کہا کہ بی جے پی ’پھوٹ ڈالو اور حکومت کرو‘ کی پالیسی پر گامزن ہے اور کانگریس وہ پارٹی ہے جس نے کبھی بھی سیکولرزم کے اپنے موقف سے منہ نہیں موڑا۔
موصوف صدر نے ان باتوں کا اظہار منگل کے روز یہاں پارٹی ممبرشپ مہم کا آغاز کرنے کے موقع پر نامہ نگاروں کے ساتھ بات کرتے ہوئے کیا۔
انہوں نے کہا: ’ہم آج پارٹی ممبر شپ مہم کا آغاز کر رہے ہیں جو پارٹی آئین کے مطابق ہر چار سال کے بعد کیا جاتا ہے اور ملک میں یہ مہم یکم نومبر سے شروع ہوئی ہے‘۔
ان کا کہنا تھا: ’ملک کا کوئی بھی 18 سال سے اوپر کی عمر کا شہری پانچ روپے فیس ادا کرکے کانگریس کا ممبر بن سکتا ہے اور پھر اپنی صلاحیتوں کی بنیاد پر آگے چل سکتا ہے‘۔
مسٹر میر نے کہا کہ جموں وکشمیر کے حالات کو بہتر بنانے کے لئے کانگریس کا ساتھ دینا ہی واحد راستہ ہے۔
انہوں نے کہا: ’جموں وکشمیر میں آج حالات ایسے ہیں کہ اگر سرحدی بستیوں سے لے کر میدانی علاقوں تک کوئی نوجوان صبح کو گھر سے نکلتا ہے تو اس کے شام تک گھر لوٹںے کی کوئی گارنٹی ہی نہیں ہوتی ہے‘۔
ان کا کہنا تھا: ’بی جے پی ’پھوٹ ڈالو اور حکومت کرو‘ کی پالیسی پر چل رہی ہے جبکہ کانگریس نے کبھی بھی اپنے موقف سے منہ نہیں موڑا ہے‘۔
موصوف صدر نے کہا کہ جموں و کشمیر میں بے روز گاری اور مہنگائی عروج پر ہے جس سے لوگ پریشان ہیں۔
انہوں نے کہا: ’جموں وکشمیر میں بے روزگاری اور مہنگائی عروج ہے اگر یہی نیا کشمیر ہے تو یہ ان ہی کو مبارک ہے‘۔
ان کا کہنا تھا: ’جیسا راہل گاندھی نے بھی کہا کہ ملک میں جمہوریت کہیں نہیں ہے اور یہاں آئین کو بالائے طاق رکھا جا رہا ہے‘۔
انہوں نے کہا کہ کانگریس نے اپنے دور میں منریگا اسکیم متعارف کی تھی جس کو بند کیا گیا ہے۔
 

تازہ ترین