تازہ ترین

ادھمپور میں سی بی آئی کی کارروائی

سپرانٹنڈنٹ انجینئر 2ماتحت انجینئروں سمیت رشوت لیتے ہوئے گرفتار

تاریخ    4 دسمبر 2021 (00 : 01 AM)   


نیوز ڈیسک
ادہمپور//مرکزی تفتیشی بیورو (CBI)نے ادھمپور میں سپرانٹنڈنگ انجینئر، اسسٹنٹ ایگزیکٹیو انجینئر اور جونیئر انجینئر کو رشوت لیتے ہوئے رنگے ہاتھوں گرفتار کرلیا۔ سی بی آئی میں ایک ٹھیکیدار نے شکایت درج کرائی تھی کہ تعمیراتی کام پورا کرنے کے عوض رقومات واگزار کرنے کیلئے 3لاکھ روپے کی رشوت مانگی جارہی ہے۔ سی بی آئی نے ورکس ڈیپارٹمنٹ کے 3انجینئروںسے 1.5لاکھ روپے چیکوں کی صورت میں اور 40ہزار روپے نقد برآمد کئے۔ گرفتار کئے گئے انجینئروں کی شناخت ہلال احمد شیخ سپر انٹنڈنگ انجینئر پی ڈبلیو ڈی، ٹی کے کول ٹیکنیکل آفیسر (جن کا عہدہ اسسٹنٹ ایگزیکٹیو انجینئرہے) اور سنجے کول جونیئر انجینئر کے بطور ہوئی ہے۔ سی بی آئی کاکہنا ہے کہ اہلکاروںنے ادھمپور میں ورکس ڈیپارٹمنٹ کے سپر انٹنڈنگ انجینئر کے آفس پر گزشتہ شام چھاپہ مارا ۔ سی بی آئی کاکہنا ہے کہ ٹھیکیدار نے شکایت میں کہا تھا کہ رقومات کی واگزاری کے معاملہ کو حل کرنے کیلئے اُس سے 3لاکھ روپے روپے مانگے گئے ، تاہم حتمی ڈیل 1.5لاکھ روپے میں طے پائی گئی۔ سی بی آئی نے آزاد گواہوں کی موجودگی میں مذکورہ تینوں انجینئروں کو رشوت لیتے ہوئے گرفتار کرلیا جن میں 1.5لاکھ روپے کے چیک اورنقد40ہزار روپے شامل ہے، بر آمد کئے گئے۔
 

تازہ ترین