تازہ ترین

وادی اور لداخ میں لوگ ٹھٹھرنے لگے| آج سے مغربی ہوائیں داخل ہونگی

سرینگر ، شوپیان اورپہلگام سرد ترین، شہر کادوسری مرتبہ سب سے کم درجہ حرارت ریکارڈ

تاریخ    4 دسمبر 2021 (00 : 01 AM)   


اشفاق سعید
سرینگر//وادی کشمیر اور لداخ میں متواتر طور پر درجہ حرارت گر رہا ہے جس کا اندازہ اس بات سے لگایا جا سکتا ہے کہ سرینگر میں رواں سیزن کی  دوسری سرد ترین رات ریکارڈ کی گئی ۔محکمہ موسمیات کے ترجمان کے مطابق جمعرات اورجمعہ کی درمیانی شب سرینگر میں کم سے کم درجہ حرارت منفی2.4ڈگری سلسیش ریکارڈ کیا گیا ، جو اس سے قبل کی شب منفی1.8 تھا ۔یہ یکم دسمبر کے بعد سے اب تک سرینگر میں دوسری سرد ترین رات تھی جب پارہ 2.4 ڈگری سلسیش تک گر گیا۔اس سے قبل یکم اور 2دسمبر کی درمیانی رات منفی2.5ڈگری ریکارڈ کیا گیا تھا۔پہلگام میں کم سے کم درجہ حرارت منفی 4.1 ڈگری  ریکارڈ کیا گیا جو گزشتہ رات منفی 4.2 ڈگری تھا۔پہلگام پوری وادی کا سرد ترین مقام رہا۔ترجمان کے مطابق گلمرگ میں کم سے کم درجہ حررات منفی1.0ڈگری ریکارڈ کیا گیا جبکہ اس سے قبل کی رات منفی 1.5ڈگری تھا ۔شوپیان وادی کا سرد ترین مقام رہا جہاں درجہ حرارت منفی 4.3ریکارڈ کیا گیا۔ لیہہ لداخ میں کم سے کم درجہ حرارت منفی 5.6 ڈگری ریکارڈ کیا گیاجبکہ کرگل میں منفی 4.0 ڈگری اورسائبیریا کے بعد دنیا کے دوسرے سرد ترین مقام دراس میں کم سے کم درجہ حرارت منفی 12.9 ڈگری سلسیش ریکارڈ کیا گیا۔ محکمہ موسمیات نے اپنی پیشگوئی کو دہراتے ہوئے کہا  ہے کہ آج شام سے مغربی ہوائیں وادی میں داخل ہونا شروع ہوں گی جس کے بعد بالائی اور میدانی علاقوں میں ہلکے سے درمیانہ درجہ کی برف باری ہو گی ۔محکمہ موسمیات کے ڈائریکٹر سونم لوٹس نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ آج شام سے بحیرہ عرب سے اٹھنے والی لہروں کی وجہ سے کشمیر وادی اور جموں صوبے کے سرمائی زون کے علاقوں میں برف باری ہو سکتی ہے ۔انہوں نے بتایا کہ وادی کشمیر کے بالائی و میدانی علاقوں میں5 دسمبر کو برف باری کا امکان ہے اور برف باری کا سلسلہ6 دسمبر کی شام تک جاری رہ سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ سنتھن ٹاپ ، زوجیلا پاس ، مغل روڑ ، سادھنا ٹاپ ،رازدان ٹاپ پر 6سے7انچ برف جمع رہ سکتی ہے جس کی وجہ سے مغل روڑ ، بانڈی پورہ گریز ، کرناہ کپوارہ اور سرینگر لداخ شاہراہ کے علاوہ اننت ناگ سنتھن ٹاپ سڑکیں گاڑیوں کی آمد ورفت کیلئے عارضی طور پر منقطع ہو سکتی ہیں کیونکہ ان سڑکوں پر  پسیاں اورمٹی کے تودے گرآنے کا سلسلہ سرما میں رہتا ہے ۔

تازہ ترین