تازہ ترین

نعتیں

تاریخ    24 اکتوبر 2021 (00 : 01 AM)   


 نعتِ رسولﷺ 

قرآں میں کرکے جا بجا مدحت رسول کی
اللّٰہ نے بتا دی فضیلت رسول کی
ہم آلِ زہرہ والے رہیں مبتلائے غم
کیسے گوارہ کر لے یہ رحمت رسول کی
دوزخ کا سن کے تذکرہ آتا ہے یہ خیال
کیا ہوتے ہم  جو پاتے نہ امت رسول کی
دینا ہی ہوگا خلد میں اے رضواں داخلہ
سینے میں رکھتا ہوں میں محبت رسول کی
اللہ کی قسم مجھے محشر کا ڈر نہیں
کیوں کے وہاں پہ ہوگی زیارت رسول کی
اس بڑھیا کو مرض سے شفا ہی نہیں فقط
ایماں بھی بخشتی ہے عیادت رسول کی
وہ ذات ہے بہت بڑی اور منھ ہے چھوٹا سا
کیسے کروں خدایا میں مدحت رسول کی
کیا جانے دنیا کے شبِ معراج کس قدر
کی ہے خدائے پاک نے عزت رسول کی
 
 ذکی طارق بارہ بنکوی 
سعادتگنج،بارہ بنکی،یوپی
موبائل نمبر؛7007368108
 
 

 نعتِ رسولِ مقبول ؐ

حضور آئے، شعور آیا 
خدا کو جان پائے ہم 
 
مٹے سب قیصریٰ و کسریٰ 
مٹا طاغوت کا دم خم 
 
فضائے گُلشنِ ہستی 
منور ہوگئی یکدم 
 
اُجالے چار سُو پھیلے 
ہوئے عنقا سبھی کے غم 
 
فرشتوں کی نگاہوں میں 
بڑھی پھر عزتِ آدم 
 
فراق و ہجرِ طیبہ میں 
سدارہتی ہیں آنکھیں نم 
 
بلا  لیں اب تو شوکتؔ کو 
مدینے، سرورِ عالم 
 
شوکت محمود شوکت 
anjum.fareeda786@gmail.com
 
 

نعت

پھر جہاں میں کِھل گیا ہے باغِ مدحت یانبیؐ
جھومتی ہے وجد میں ہر گل کی نکہت یا نبیؐ
 
غم کے بادل چھٹ گئے ،ہر سو ہے فرحت یانبیؐ
آپؐ کی آمد کا غُل ہے،خوش ہے امت یانبیؐ
 
قدسیانِ عرش شاداں ، عشق والے شاد ہیں
خوش خدا ہے اے خدا کی پاک قربت یانبیؐ
 
کعبہ ہے مسرور ،فرحاں گنبدِ خضریٰ بھی ہے
مست ہے قرآن کی ہر ایک آیت یانبیؐ 
 
آپؐ اعلیٰ آپؐ سے بہتر نہ برتر ہے کوئی
آپؐ کو بعدِ خدا حاصل ہے سبقت یانبیؐ
 
کاش مل جاتا مجھے نعلینِ اقدس آپؐ کا
چومتا آنکھوں سے، دل میں ہے یہ حسرت یا نبیؐ
 
کیجئے شادابؔ کی یہ نعت کا ہدیہ قبول
جان قرباں آپ پر اے جانِ رحمت یا نبیؐ
 
شفیع شادابؔ
پازلپورہ شالیمارسرینگر کشمیر
موبائل نمبر؛9797103435
 
 

نعتِ پاک

صرف نعتِ نبیؐ گنگنایا کرو
ذکرِاحمد کی محفل سجایا کرو
 
حالِ دل اپنے رب کو سنایا کرو
سارے رنج و الم کو مٹایا کرو
 
آرزو ہو اگر خلد میں جانے کی
عشقِ احمدؐ کو دل میں بسایا کرو
 
دیکھنا بخت بیدار ہو جائے گا
یا محمدؐ محمدؐ پکارا کرو
 
نامِ احمدؐ سے اے مومنو روزوشب
 ظلمتیں اپنی ساری مٹایا کرو
 
شجرِ عشقِ نبیؐ کا اُگا کر عقیل ؔ
زندگی کے چمن کو کِھلایا کرو
 
عقیل فاروق
طالب علم شعبہ اردو کشمیر یونیورسٹی شوپیان
 موبائل نمبر؛8491994633
 
 

نعت

علم کا ہے نور پھیلایا حضورؐ نے
اندھیارا جہالت کا مٹایا حضورؐ نے
 
کرنے کووار اُن پہ گر آیا کبھی کوئی
سینے سے اُسکو اپنے لگایا حضورؐ نے
 
بانٹے ہیں سدا ہر سُو محبت کے خزانے
ہر ایک کی الجھن کو سُلجھایا حضورؐ نے
 
بھٹکے جب اونچ نیچ کے کوسوں میں مسافر
راستہ پھر سب کو دکھایا حضورؐ نے
 
زندہ ہی دفن بیٹیوں کو کرتے تھے سحرؔ
جینے کا حق بھی اُنکو دلایا حضورؐ نے
 
ثمینہ سحرؔ مرزا
تھنہ منڈی، راجوری

تازہ ترین