تازہ ترین

سول سیکرٹریٹ میں کئی وفودکی ملاقات

تاریخ    17 ستمبر 2021 (00 : 01 AM)   


نیوز ڈیسک
سرینگر//لیفٹیننٹ گورنر کے مشیر بصیر احمد خان سے سیول سیکریٹریٹ میں کئی وفود اور افراد نے ملاقات کی اور انہیں اَپنی شکایات اور مطالبات سے آگاہ کیا۔وفود نے اَپنے اَپنے علاقوں کے عوامی اہمیت کے مختلف مسائل اُٹھائے اور اِس سلسلے میں مشیر موصوف کی مداخلت طلب کی۔بمنہ کوآرڈی نیشن کمیٹی کا ایک وفد جو 72 کمیٹیوں کا انضمام ہے مشیر سے ملاقی ہوا اور کئی مسائل گوش گزار کئے۔ کوارڈی نیشن کمیٹی نے لیفٹیننٹ گورنر اور مشیر بصیر احمد خان کا شکر یہ اَدا کیا کہ اُنہوں نے علاقے میں پارک کی ترقی اور لوگوں کے لئے راستے کی سہولیات فراہم کی۔اُنہوں نے کچھ مطالبات بھی اُٹھائے جن میں سروس لین / سب وے کی توسیع اور رہائشی سہ سرکاری کالونی کے لئے پارکنگ کی جگہ شامل ہے جس میں کئی سرکاری دفاتر بھی ہیں ۔ اُنہوں نے ابراہیم کالونی ،سیّد کالونی ( سیکٹر 1،2) ،ابوبکر کالونی کی اندرونی سڑکوں کی میکڈیمائزیشن اورقبرستان سمیت کچھ عوامی سہولیات کامطالبہ کیا ۔حضرت بل کوآرڈی نیشن کمیٹی کے ایک وفد نے کچھ عوامی مسائل گوش گزار کئے اور پبلک ہیلتھ سینٹر کامطالبہ کیا جوکہ سابق ہسپتال میں خصوصی گائنا کولوجی او رپیڈیاٹرک سیکشن کے ساتھ تھا جسے اَب منتقل کیا گیا ہے ۔اُنہوں نے علاقے کی تمام اندرونی سڑکوں اور گلیوں کی میکڈامائزیشن کا بھی مطالبہ کیا حالانکہ اِس بات کا ذکر کرتے ہوئے کہ سڑکوں کا کافی حصہ میکڈامائزیشن ہوچکا ہے اور بائیں باہر سڑکوں اور لینوں پر کام کو ترجیحی بنیادوں پر شروع کرنے کی ضرورت ہے۔کمیٹی کے اراکین نے علاقے میں خراب پانی کی پائپ لائن کے بارے میں بھی مشیر موصوف کو آگاہ کیا۔ریلیف آرگنائزیشن کے ایک اور وفد نے بھی مشیر موصوف سے ملاقات کی اور کئی مسائل گوش گزار کئے ۔ اِسی طرح جے کے سیمنٹ لمٹیڈ کے ریٹائرڈ ملازمین کے ایک وفد نے بھی مشیر کے سامنے اَپنے کئی مسائل پیش کئے۔اسی طرح ماگام بڈگام کے ایک وفد نے اَپنے علاقے میں لنک روڈوں کی میکڈامائزیشن کا مطالبہ کیا۔ضلع کولگام کے ہبلیش دیوسر کے ایک اور وفد نے بھی اَپنے علاقے میں کئی ترقیاتی سرگرمیوں پر روشنی ڈالی۔اِسی طرح سرینگر اور دیگر علاقوں کے کئی وفود اور اَفراد نے بھی مشیر سے ملاقات کی اور مختلف محکموں جیسے پی ڈی ڈی ، دیہی ترقی ، سیاحت اور دیگر محکموں سے متعلقہ اَپنے معاملات اٹھائے۔مشیر بصیر احمد خان نے تمام وَفود اور اَفراد کو بغور سنا اور ان کے جائز مطالبات او رمسائل کے جلد ازالے کی یقین دہانی کرائی۔ اُنہوں نے کہا کہ ان کی طرف سے پیش کردہ مسائل کو فوری حل کے کے لئے متعلقہ محکموں کے ساتھ اُٹھایا جائے گا۔ کچھ معاملات میں مشیر موصوف نے متعلقہ اَفسران کو شکایات کے ازالے کے لئے موقعہ پر ہی ہدایات جاری کیں۔