تازہ ترین

بلیچنگ پائوڈراور بجلی کرنٹ سے مچھلی پکڑ نے کا معاملہ | کولگام میںتیس ہزار روپے جرمانہ وصول، پائوڈر اوردیگر سامان ضبط

تاریخ    16 ستمبر 2021 (00 : 01 AM)   


نیوز ڈیسک
سرینگر//کولگام کے نالہ ویشو میں بلیچنگ پائوڈررڈالنے کے ساتھ ساتھ بجلی کی ترسیلی لائنیں ڈال کر مچھلیوںکوپکڑ نے والے دو افراد کو پکڑ لیا۔نالہ ویشو میں بلیچنگ پائوڈر ڈال کر سینکڑوں ٹرائوٹ مچھلیاں مار نے کی شکایت کے بعد یہ کارروائی عمل میں لائی گئی۔ اسسٹنٹ ڈائریکٹر فشریز کولگام محمد صدیق وانی نے اپنے دیگر ملازمین کے ہمراہ گاسی رنہ کے قریب نالہ ویشو میں غیر قانونی طریقے سے مچھلیاں پکڑنے والے  دو افراد کو پکڑنے میں کامیابی ملی جو نزدیکی گاؤں مہی پورہ کے باشندے ہیں جبکہ دیگر چار بھاگنے میں کامیاب ہوئے۔ ان کے قبضے سے تار اور ایک بیٹری برآمد کی گئی جسے وہ پانی میں کرنٹ دیکر چھوٹی بڑی مچھلیوں کو پکڑ تے تھے ۔ان کی نشاندہی پر ان چار افراد کے والدین کو بھی سامنے لاکر سبھی چھ افراد سے تیس ہزار روپے بطور جرمانہ وصول کیا گیا اور آئندہ ایسی غلطی نہ کرنے کی صورت میں ایک حلف نامہ بھی لیا گیا ۔ڈپٹی ڈائریکٹر فشریز کولگام نے بتایا کہ انہوں نے نالے میں بلیچنگ پاؤڈر کا استعمال بھی کیا تھا جس سے بہت ساری چھوٹی بڑی مچھلیاں مرگئی ہیں۔انہوں نے بڑے تعجب کا اظہار کیا کہ اگر بلیچنگ پاؤڈر صرف جل شکتی محکمہ کے پاس ہوتی ہے تو غیر قانونی طریقے سے مچھلیاں پکڑنے والے افراد بلیچنگ پاؤڈر کہاں سے لاتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ اس بارے میں انہوں نے جل شکتی محکمہ کے سپرانٹنڈ نٹ انجینئرکو بھی تحریر ی طور آ گاہ کیا۔ (سی این ایس)