کووڈ 19 وبائی بیماری ابھی ختم نہیں ہوئی

ڈی سی سرینگر اورکپواڑہ کی میڈیا بریفنگ ،ٹیکہ لگانے کی اپیل

تاریخ    12 جون 2021 (00 : 01 AM)   


سرینگر+کپوارہ//کووِڈ - 19کی وبائی بیماری کابھی خاتمہ نہیں ہوا ہے اور کورونا وائرس پر قابو پانے کیلئے جورہنماخطوط سرکار نے جاری کئے تھے ،ان پر سختی عملدرآمد کرنا لازمی ہے تب ہی کووِڈ- 19کوشکست دی جاسکتی ہے۔اب باتوں کا اظہار سرینگر،کپوارہ اور وادی کے کئی اوراضلاع کے ڈپٹی کمشنروں نے میڈیا بریفننگ کے دوران جمعہ کو کیا۔ڈپٹی کمشنر سرینگر محمد اعجاز اسد نے سرینگر کے عوام سے عوامی تحفظ ، صحت کیلئے سرکاری ہدایات پر سختی سے عمل پیرا رہنے کا مظاہرہ کرنے اور کووڈ 19 سے متعلق مشوروں اور ہدایات پر عمل کرنے کی تاکید کی  ۔ انہوں نے تاجروں اور ٹرانسپورٹرز سے اپیل کی کہ وہ ضلعی انتظامیہ کے ساتھ تعاون کریں اور کووڈ ایس او پیز اور کووڈ 19 انفیکشن پر قابو پانے کیلئے احتیاطی تدابیر پر عمل کریں ۔ ڈی سی نے لوگوں سے بھی تاکید کی کہ وہ قریب ترین ویکسی نیشن مراکز کا دورہ کریں اور کووڈ 19 وبائی بیماری کی دوسری لہر کو شکست دینے کیلئے جلد سے جلد ٹیکے لگائیں ۔ اس نے کہا کہ انتظامیہ دوسرے فرنٹ لائین وائیرروں کے ساتھ انفیکشن کے پھیلاؤ کو روکنے کیلئے 24 گھنٹے کام کر رہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ کووڈ 19 وبائی بیماری ابھی ختم نہیں ہوئی ہے ۔ ڈی سی نے کہا کہ کسی کو بھی عوامی مقامات پرماسک کے بغیر پائے جانے پر اس کے خلاف قانونی کاروائی کی جائے گی ۔ ڈپٹی کمشنر کپواڑہ امام دین نے آج کہا ہے کہ کووڈ 19 کے تخفیف کے عمل میں صحت ، سول اور پولیس انتظامیہ کی مشترکہ کوششوں سے ضلع کپواڑہ میں بہتر نتایج برآمد ہوئے ہیں  لیکن اس کے باوجود عوام کو چاہئیے کہ وہ حکومت کی جانب سے جاری کووڈ 19 رہنما خطوط پر عمل پیرا رہیں اور قریبی ویکسی نیشن سنٹر پہنچ کر ٹیکہ لگائیں ۔ ڈی سی نے بتایا کہ ضلع میں مریضوں کے صحت یاب ہونے کی شرح 91.10 فیصد تک پہنچ چکی ہے ۔ضلع میں مثبت معاملات کی شرح 5.3 فیصد ہے ۔ انہوں نے کووڈ 19 کے تخفیف کی کوششوں میں شامل تمام افراد کو ان کی محنت اور اچھے نتائج کیلئے مبارکباد پیش کی ۔ ڈی سی نے بتایا کہ ضلع میں مجموعی طور پر مثبت معاملات کی تعداد 13058 ہے جبکہ صحتیاب ہوئے مریضوں کی تعداد 11896 ہے جبکہ 149 مریضوں کی موت واقع ہو چکی ہے ۔ مثبت معاملات کو الگ تھلگ کرنے کے بارے میں ڈی سی نے بتایا کہ 76 مثبت معاملات ہسپتال آئسولیشن میں ہیں جبکہ 952 مثبت معاملات گھروں میں الگ تھلگ ہیں ۔ ڈی سی نے عوام سے اپیل کی کہ وہ حکومت کی جانب سے جاری کردہ کووڈ 19 ایس او پیز پر سختی سے عمل پیرا رہیں اور کووڈ 19 وبائی امراض کے خلاف بروقت ٹیکہ لگانے کیلئے قریبی ویکسی نیشن مراکز میں حاضر ہوں ۔ کولگام میں ایک لاکھ سے زیادہ لوگوں کو کووِڈ ویکسینیشن مہم کے دوران ٹیکہ لگایا گیا ہے۔اس بات کی جانکاری ضلع کے ڈپٹی کمشنر ڈاکٹر بلال محی الدین بٹ نے ایک میڈیا بریفنگ کے دوران دی۔انہوں نے کہا کہ ضلع میں صد فیصد ویکسینین کے ہدف کو پورا کرنے کیلئے ٹیکہ کاری مہم میں تیزی لائی گئی ہے اور ویکسینیشن مقامات کی تعداد میں بھی اضافہ کیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ضلع میں گھرگھر جاکر ویکسینینشن بھی شروع کی گئی ہے جبکہ شام کے اوقات بھی ٹیکہ کاری انجام دی جاتی ہے۔
 

تازہ ترین