تازہ ترین

پی ڈی پی حد بندی کے عمل میں حصہ لینے کی اہل نہیں

سونہ وار کے لوگوں پرجائیدادٹیکس ،حکم منسوخ کیا جائے:ترجمان اعلیٰ

تاریخ    12 جون 2021 (00 : 01 AM)   


سری نگر/پیپلزڈیموکریٹک پارٹی نے جمعہ کو کہا کہ وہ جموں و کشمیر میں جاری حد بندی کے عمل میں حصہ نہیں لے سکتی ہے کیونکہ اس وقت پارٹی کے پاس پارلیمنٹ کاکوئی ممبراور ممبر قانون ساز اسمبلی بھی نہیں ہے۔ پی ڈی پی نے سرینگر کنٹونمنٹ بورڈ کے دائرہ اختیار میں رہنے والے رہائشیوں سے پراپرٹی ٹیکس وصول کرنے کے فیصلے کو منسوخ کرنے کا مطالبہ بھی کیا۔کے این ایس کے مطابق پی ڈی پی کے ترجمان اعلیٰ سہیل بخاری نے یہاں نامہ نگاروں کیساتھ بات کرتے ہوئے کہا کہ جموں و کشمیر میں سیاسی پارٹیاں انفرادی طور پر موجودہ حد بندی کے عمل میں شرکت کے بارے میں فیصلہ کرسکتی ہیں،تاہم انہوں نے کہاکہ جہاں تک پی ڈی پی کا تعلق ہے ، اس وقت ہمارے پاس کوئی ممبرپارلیمنٹ اورنہ کوئی ممبر قانون ساز اسمبلی ہے، لہذا ہم اس عمل میں حصہ نہیں لے سکتے ہیں ۔انہوں نے حدبندی کے عمل میں پی اے جی ڈی کی شرکت کے بارے میں پوچھے جانے پر کہا ، جس طرح کمیشن تشکیل دیا گیا ہے ، صرف منتخب نمائندے اس عمل میں حصہ لینے کے مستحق ہیں۔پی ڈی پی کے ترجمان اعلیٰ سہیل بخاری نے مزید بتایا کہ ایسی اطلاعات ہیں کہ سری نگر کنٹونمنٹ بورڈ کے دائرہ اختیار میں رہنے والے لوگوں سے پراپرٹی ٹیکس ادا کرنے کو کہا جارہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ سال2019 سے مشکل ترین صورتحال سے دوچار لوگوں کی مدد کرنے کے بجائے ، حکومت لوگوں کوپشت بہ دیوارکر رہی ہے۔انہوںنے مزید کہا کہ حکومت کو مقامی رہائشیوں سے پراپرٹی ٹیکس وصول کرنے کے اپنے من مانے فیصلے کو کالعدم قرار دینا چاہئے ، یہ کہتے ہوئے کہ بدقسمتی ہے کہ لوگ محنت مزدوری کرنے کے بعد اپنے لئے مکان خریدتے ہیں اور اب اس سے دوبارہ قیمت ادا کرنے کے لئے کہا جارہا ہے ، جس سے ایسا لگتا ہے کہ جموں و کشمیر میں عوام کو معاشی اور سیاسی طور پر بھی کمزور کیا جارہا ہے۔

تازہ ترین