تازہ ترین

محکمہ جل شکتی کا ماہ صیام میں عوام کو تحفہ

تھوڑی سی بارش آنے پر عوام کو ملتا ہے گندہ پانی ، بورویل مکمل ہونے کے با وجود بیکار

تاریخ    9 مئی 2021 (00 : 01 AM)   


زاہد بشیر
گول//گول میں ان ماہ مبارک ایام کے دوران بھی محکمہ جل شکتی لوگوں کو صاف پانی فراہم کرنے میں ناکام ہوا ہے اور آج عوام کو دوروز بعد گندہ پانی تحفہ کے طو رپر دیا گیا جس وجہ سے لوگ کافی پریشان ہوئے ۔ گزشتہ روز شدید بارشوں کے بعد سب ڈویژن کے صدر مقام و ملحقہ جات میں لوگوں کو پانی سپلائی نہیں کیا گیا اور آج جب پانی سپلائی کیا گیا تو گندہ پانی سپلائی ہوا جو نا قابل استعمال تھا ۔ گول کی عوام کو اس بات پر سخت خوشی محسوس ہوئی تھی کہ کئی سالوں کے بعد ہسپتال کے نزدیک بورویل کا کام مکمل ہوا اور ایک دن اس بور ویل کا پانی عوام کو دیا گیا لیکن اُس کے بعد اس بور ویل کو مکمل طور پر مقفل کیاگیا ۔ اس بور ویل کا پانی گول صدر مقام و ملحقہ جا ت کے عوام کو فراہم ہوتا ہے لیکن محکمہ کی آنا کانی کی وجہ سے عوام سب کچھ ہونے کے با وجود بھی پانی کی بوند بوند کے لئے ترس رہے ہیں ۔ وہیں محکمہ پر یہ بھی سوال اُٹھتا ہے کہ تھوڑی سی بارش ہونے پر حوضوں میں گندہ پانی کیسے آتا ہے ۔ یہ با ت کوئی ڈھکی چھپی نہیں ہے کہ جہاں سے پانی آتا ہے اُن چشموں کی حالت کافی نا گفتہ ہے ۔ اگر چہ سرکار کی جانب سے لاکھوں روپے ان چشموں کو بہتر بنانے اور باڑ بندی کے لئے آئے نا جانے وہ رقم کہاں گئی جہاں جہاں سے پانی آتا ہے تمام چشمے کھلے ہیں اور ندی نالوں کا پانی و مال مویشیوں کا گوبر بھی ان ہی کھلے چشموں میں جاتا ہے اور تھوڑی سی بارش ہونے پر یہ تمام گندہ پانی ان چشموں میں چلے جاتا ہے اور وہی پانی براہ راست حوضوں میں جاتا ہے جہاں سے یہی پانی لوگوں کو دیا جاتا ہے ۔ زمینی سطح پر اگر دیکھا جائے تو عوام کو اب بھی صاف پانی فراہم نہیں ہوتا ہے ۔ لوگوں کو صاف پانی فراہم کرنے کے لئے ایشکنڈ علاقے میں ایک فلٹر پلانٹ بھی تعمیر کیاگیا تھا لیکن یہ پلانٹ سالوں سے استعمال نہیں ہوا ۔ مرض بڑھتا گیا جوں جوںدوا کی اس محکمہ کا نام محکمہ صحت عامہ سے جل شکتی ہوا لیکن ابھی تک اس محکمے نے کوئی شکتی نہیں دکھائی کروڑوں خرچنے کے با وجود محکمہ ناکارہ بنتے جا رہا ہے ۔ ضرورت اس بات کی ہے کہ انتظامیہ کو چاہئے کہ محکمہ کا باریک بینی سے حساب لیا جائے اور آیا کروڑوں خرچنے کے باوجود لوگ پانی کی بوند بوند کے لئے کیوں ترس رہے ہیں ۔