تازہ ترین

سندھ فارسٹ ڈویژن میںجنگلات کی مبینہ لوٹ کھسوٹ

تاریخ    4 مئی 2021 (00 : 01 AM)   


ارشاداحمد
گاندربل//سندھ فاریسٹ ڈویژن میں جنگلات کی لوٹ کھسوٹ جاری ہے اور مقامی لوگوں نے الزام لگایاہے کہ محکمہ کے اہلکاروں کی اسمگلروں کے ساتھ ملی بھگت ہونے کی وجہ سے یہ سب ہورہا ہے۔گاندربل ضلع کے سندھ فارسٹ ڈویژن کے مانسبل رینج کے کمپارٹمنٹ نمبر 7 جو کہ اندرون کی پہاڑیوں کے دامن میں واقع ہے، میں سرسبز درختوں کی کٹائی اور خریدو فروخت بڑے پیمانے پر جاری رہنے سے جنگلات ختم ہونے کے دہانے پر پہنچ گئے ہیں۔لگ بھگ دو تین سو معکب فٹ کائرو کے درخت کاٹ کر ان کو چھوٹے چھوٹے ٹکڑوں کی شکل میں جنگل میں چھپایا گیاہے۔کمپارٹمنٹ نمبر 7 جس میں کثیر تعداد میں کائر، بدلو اور گنے چنے دیودار کے درخت بھی موجود ہیں ،جن کی کٹائی اور خریدو فروخت بڑے پیمانے پر جاری رہنے سے پورا کمپارٹمنٹ ختم ہونے کے دہانے پر پہنچ گیا ہے۔ مقامی لوگوں نے بتایاکہ محکمہ کے اہلکاروں اور سمگلروں کے درمیان ملی بھگت سے سرسبز درختوں کا صفایا کیا جارہا ہے۔. اس بارے میں جب ڈویژنل فاریسٹ آفیسر اویس فاروق میر سے رابطہ قائم کیا تو انہوں نے بتایا کہ جو بھی ملازم اس میں ملوث ہوگا، اس کے خلاف محکمانہ کارروائی کی جائے گی۔