تازہ ترین

آج اور کل موسم بہتر رہیگا | 21اور 22 کو پھر بارشیں

تاریخ    19 اپریل 2021 (00 : 12 AM)   


اشفاق سعید
سرینگر //وادی کشمیر میں گذشتہ پانچ روز سے پہاڑی علاقوں میں ہلکی برف اور میدانی علاقوں میں بارشوں کے بعد اتوار کو موسم میں اگرچہ معمولی تبدیلی آئی اور موسم خوشگوار بھی ہو گیا تاہم شام کے وقت شہر سمیت وادی کے متعدد علاقوں میں دوبارہ بارشیں ہوئیں۔اس دوران ٹنگمرگ میں شدید ژالہ باری سے میوہ باغات میں شگوفے گر گئے۔شمالی کشمیر کے مزید کئی علاقوں میں ژالہ باری ہونے کی اطلاعات ہیں۔محکمہ موسمیات کے ڈائریکٹر سونم لوٹس نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ آج صبح سے 20اپریل کی شام یعنی 2روز تک موسم خشک رہے گا۔انہوں نے کہا کہ دو روز کے وقفہ کے بعد 21اور 22 اپریل کو بارشوں اور برف باری کا ایک اور مرحلہ شروع ہوگا ۔انہوں نے کہا کہ 23اپریل سے وادی میں موسم میں بہتری آنے کا امکان ہے ۔ ادھراتوار سہ پہر کو  شمالی کشمیر کے ٹنگمرگ علاقے میںزبردست ژالہ باری ہوئی جس سے میوہ باغات میں پھوٹے شگوفے زمین پر گرگئے جبکہ سبزی کی کیاریاں تباہ ہوئیں۔ درنگ، مہاین، فیروزپورہ اورقاضی پورہ کے علاقوں میں بھی ژالہ باری ہوئی۔دریں اثنائجنوبی ضلع شوپیان ، کولگام ، اننت ناگ اور پلوامہ کے نالہ لدر ، نالہ ساندرن ، نالہ ویشو ، نالہ برنگی اور نالہ رمبی آرا  اور رومشی سمیت کئی ندی نالوںمیںپانی کی سطح بڑھ گئی ہے اننت ناگ ، کولگام ، پہلگام ، ڈورو ویری ناگ اور دیگر علاقوں میں موسلادھار بارشوں کے نتیجے میں میوہ باغات اور سبزیوں کو کافی نقصان پہنچا ہے ۔ محکمہ کے مطابق سرینگر، شوپیان، پلوامہ، بڈگام اوربانڈی پورہ کے تین اضلاع میں سب سے کم 5یا 6ملی میٹر بارش ریکارڈ کی گئی۔ گاندربل میں سب سے زیادہ 22.6ملی میٹر بارش ریکارڈ کی گئی۔اسکے علاوہ  اننت ناگ میں 11.8ملی میٹر ، کولگام میں 14.3ملی میٹر اور کپوارہ میں 13.8ملی میٹر بارش ریکارڈ کی گئی  ۔