تازہ ترین

بھارت اپنے مسائل خود حل کرنے کا اہل

کوئی اور ملک ہماری فکر نہ کرے، اپنی فکر کرے: نائب صدر جمہوریہ

تاریخ    10 اپریل 2021 (00 : 01 AM)   


نیوز ڈیسک
جموں // نائب صدر جمہوریہ ایم ونکیانائیڈونے کہا ہے کہ جموں و کشمیر بھارت کا اٹوٹ انگ ہے اور ملک یہاں کی مشکلات کو حل کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔ انہوں نے دیگر ممالک سے کہا  ہے کہ وہ اپنے مسائل حل کرنے تک خود کو محدود رکھیں۔ سال 2019میں دفعہ 370کی تنسیخ کے بعد اپنے پہلے دورے کے دوران بغیر کسی ملک کا نام لئے انہوں نے کہا کہ پڑوس کے کچھ لوگ مسائل اور ناسازگار حالات پیدا کرنا چاہتے ہیں کیونکہ وہ چاہتے ہیں کہ بھارت ترقی نہ کرے۔ انڈین انسٹی ٹیوٹ آف منیجمنٹ کے تیسرے اور چوتھے کنوکیشن سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا ’’ میں چند دوستوں جو بغیر پوچھے صلاح دینے کی کوشش کررہے ہیں، وہ خود کے مشورے خود تک ہی محدود رکھیں، ہم خود اپنے مسائل حل کرسکتے ہیں اور انہیں ہماری فکر کرنے کی ضرورت نہیں ہے‘‘۔ مرکزی وزیر جتیندر سنگھ اور جموں و کشمیر کے لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا بھی تقریب میں موجود تھے ،جہاں 148ایم بی ائے طلبہ کو اسناد سے نوازا گیا ۔ انہوں نے کہا ’’ میرے پیارے نوجوانوں، جہاں آپ پڑھ رہے ہو، وہ بھارت کا اٹوٹ انگ ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمارا یہ خیال ہے کہ ہم خود اپنے مسائل حل کرسکتے ہیں، اس میں کسی ملک کا کوئی بھی کام نہیں ہے، یہ ہمارا اندرونی معاملہ ہے، اور اس میں کسی ملک کی مداخلت کی ضرورت نہیں‘‘۔اپنے آدھے گھنٹے کی تقریر میں انہوں نے کہا ’’ ہم جمہوریت اورتہذیت پر یقین رکھتے ہیں، اگر آپ سچ میں مہذب ہیں، تو آپ ہمارے ملک کے اندرونی معاملات میںمداخلت نہ کریں، میں یہ صاف کہنا چاہتا ہوں‘‘۔ انہوں نے کہا کہ ملک کا یہ حصہ کافی خوبصورت ہے اور اسلئے یہاں کے لوگوں کو امن کی ضرورت ہے۔  انہوں نے کہا کہ ترقی کی اولین شرط امن ہے، اگر تنائو ہوگا ، ہم توجہ نہیں دے سکتے، یہ سب کو سمجھنا ہوگا اور اسلئے امن لازمی ہے۔  انہوں نے کہا کہ پڑوس کے کچھ لوگ ہمیشہ سے بھارت میں امن و مان بگاڑنا چاہتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں انہیں کامیاب نہیں ہونے دینا ہے، ہمیں قومی یکجہتی کیلئے کام کرنا چاہئے، پہلے ملک، پھر پارٹی اور کام اور خود کو آخر میں رکھنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ ہم سب کو بغیر کسی مذہب و ملت ، رنگ و نسل ملک کو سرفہرست رکھنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ ہم سب بھارتی ہے ، ہم جموں ، کشمیر ، شمال و جنوب سے تعلق رکھتے  ہونگے مگر ہمیں یاد رکھنا چاہئے ، ہم اسی ملک کے بچے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ملک ترقی کررہے ہیں اور ہمیں زیادہ ترقی کرنی چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ بھارت سرمایہ کاری کیلئے بہترین جگہ ہے،کاروبار کرنے میں نرمی، وزیر اعظم کے نئے خیالات اور ترامیم سے ہم سب آگے بڑھ سکتے ہیں اور ہم میں اس کا فائدہ اٹھانے کی حلاحیت موجود ہے۔ اس سے ہم مضبوط، مسحکم اور ترقیافتہ ملک بن سکتے ہیں۔ 
 
 
 
 

تازہ ترین