تازہ ترین

دھونی کے سامنے نئے کپتان پنت کا چیلنج ہوگا

تاریخ    10 اپریل 2021 (00 : 01 AM)   


 ممبئی//چنئی سپر کنگز (سی ایس کے) اور دہلی کیپیٹلز (ڈی سی) کے درمیان یہاں ہفتہ کو ہونے والے آئی پی ایل 14 میں زبردست مقابلہ ہوگا، حالانکہ دونوں ٹیمیں ابھی کووڈ-19 کے مسائل سے دوچارہیں۔سی ایس کے کپتان مہیندر سنگھ دھونی کے لئے یہ ٹورنامنٹ ایک نئی شروعات کی طرح ہوگا، جبکہ دہلی کے کپتان رشبھ پنت کے لئے بھی یہ سنہری موقع ہوگا، کیونکہ ان کے آئیڈیل ان کے سامنے ہوں گے۔ دہلی کی ٹیم پچھلی بار آئی پی ایل 13 میں فائنل میں پہنچی تھی، جبکہ سی ایس کے کی ٹیم ساتویں نمبر پر رہی تھی۔آئی پی ایل 13 گذشتہ سیزن میں دبئی ابو ظہبی اور شارجہ میں منعقد ہواتھا اور ٹورنامنٹ کے فائنل کے پہلیروز کورونا کے 674 نئے معاملے تھے اور ٹورنامنٹ کے فائنل کے دن 1096 نئے کیسز تھے۔ اس کے مقابلے میں آئی پی ایل کے موجودہ سیزن میں چھ شہروں میں مقابلے ہونے ہیں، جن میں ممبئی، دہلی، بنگلور، چنئی، کولکتہ اور احمد آباد شامل ہیں۔ ممبئی نے گزشتہ چھ اپریل کو 10 ہزار نئے معاملے رپورٹ کئے تھے۔دہلی ٹیم کے اصل کپتان شریس اییر اپنے بائیں کندھے کی سرجری کراچکے ہیں، جبکہ دہلی ٹیم کے آل راؤنڈر اکشر پٹیل کورونا سے متاثر ہیں۔ اییر زخمی ہوکر ٹورنامنٹ سے باہر ہوجانے کے بعد نوجوان وکٹ کیپر بلے باز رشبھ پنت کو دہلی کا نیا کپتان نامزد کیا گیا ہے۔ پنت نے اپنی ٹیم کے لئے بہتر کارکردگی کا اعتماد ظاہر کیا ہے، لیکن یہ دیکھنا بہت دلچسپ ہوگا کہ وہ مہیندر سنگھ دھونی کے سامنے کس طرح کارکردگی کا مظاہرہ کرپاتے ہیں۔سی ایس کے کی ٹیم نے آسٹریلیا کے جوش ہیزلووڈکے ذاتی وجوہات سے ٹورنامنٹ سے ہٹ جانے کے بعد ان کی جگہ جیسن بیہرینڈورف سے معاہدہ کیا ہے۔ دوسری جانب دہلی کی ٹیم کے کیگسو ربادا اور اینرچ نوترجے حالانکہ ممبئی کے دہلی ٹیم کے ہوٹل پہنچ چکے ہیں، لیکن وہ کم سے کم پہلے میچ میں نہیں کھیل پائیں گے۔ جنوبی افریقہ کے ان دونوں تیزگیندبازوں نے دہلی کے پچھلی بار فائنل میں پہنچنے میں اہم کرداراداکیا تھا،دہلی کی ٹیم کے لئے ایک بڑامسئلہ پہلے میچ میں بہتر الیون کو منتخب کرنا ہے، کیونکہ آئی پی ایل میں فاتحانہ آغاز بہت ضروری ہے۔ ربادا اورنوترجے نے آئی پی ایل 2020 میں آپس میں کل 52 وکٹ تقسیم کئے تھے، اس لئے ان کے پہلے میچ میں باہر رہنے کی کمی دہلی کو کھلے گی۔چنئی کی ٹیم میں دھونی کے علاوہ معین علی، کے ایم آصف، ڈوین براوو، دیپک چاہر، فاف ڈو پلیسیس، کرشنپا گوتم، عمران طاہر، ریتوراج گائکواڈ، رویندر جڈیجا، لونگی اینگدی، امباتی رائیڈو، چیتیشور پجارا، سریش رینا، مچل سینٹنر، شاردل ٹھاکراور رابن اتھپا جیسے کئی مضبوط کھلاڑی موجود ہیں۔دوسری جانب دہلی کی ٹیم میں پنت کے علاوہ روی چندرن اشون، آویش خان، سیم بلنگز، ٹام کرین، شکھردھون، شمرون ہیٹمائر، امت مشرا، اینرچ نوترجے، اکشرپٹیل، کیگیسو ربادا، اجنکیا رہانے، ایشانت شرما، پرتھوی شا، اسٹوین اسمتھ، مارکس اسٹائنس، کرس ووکس اور امیش یادو جیسے بہترین کھلاڑی موجود ہیں۔ اب یہ دیکھنا دلچسپ ہوگا کی ان میں سے کون کھلاڑی الیون میں جگہ بناتے ہیں۔ یہ حالات دونوں ٹیموں کے لئے ہے۔یواین آئی۔الف الف
 

تازہ ترین