تازہ ترین

ٹنگڈار کرناہ میں منشیات کی بھاری کھیپ ضبط

۔60کروڑ کی ہیروئن سرحد پار سے سمگل کی گئی، ایک ملوث سمگلر گرفتار: پولیس

تاریخ    9 اپریل 2021 (00 : 01 AM)   
(File Photo)

اشرف چراغ
 کپوارہ //فوج اور پولیس کی مشترکہ ٹیم نے کرناہ میںلائن آف کنٹرول کے نزدیک منشیات کا کاروبار کرنے والے ایک بہت بڑے نیٹ ورک کا پردہ فاش کرکے 9 کلو گرام ہیروئن ضبط کی، جسکی مالیت بین الاقوامی مارکیٹ میں 60کروڑ روپے سے زائد بتائی جارہی ہے۔ ایس ایس پی کپوارہ ڈاکٹر جی وی سندیپ چکرورتی نے ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ فوج اور کپوارہ پولیس نے ایک مشترکہ آپریشن کے دوران منشیات ملی ٹینٹ گروہ کے خلاف کارروائی عمل میں لاکر مختار احمد شاہ ساکن پنجتیرہ کرناہ کی گرفتاری عمل میں لائی اور اس کی نشاندہی پر پنجیترہ کے جنگلی علاقہ سے 9کلو گرام ہیروئن بر آمدکی جس کی قیمت 60 کرو ڑ کے آس پاس بتایا جاتی ہے ۔پولیس نے کہا کہ گرفتار کئے گئے سمگلر پولیس کو پہلے سے مطلوب تھا اور جمعرات کے روز پولیس اور فوج نے ایک مصدقہ اطلاع ملنے پر مختار حسین شاہ کو دھر لیا ۔انہوں نے کہا کہ منشیات کے اس کاروبار کی جڑیں پاکستان میں ہیں اور وہا ں سے ہی کشمیر لائی جارہی ہے۔ ایس ایس پی نے بتایا کہ"ہمیں منشیات فروشی اسمگلنگ ماڈیول کے بارے میں اطلاع ملی تھی اور فوج کے6 جے اے کے آر آئی ایف یونٹ اور کپوارہ پولیس نے مشترکہ کارروائی کی جس کے نتیجے میں ایک اسمگلر کو گرفتار کیا گیا۔انہوںنے مزید بتایا کہ ’’ملزم اسمگلر پاکستانی زیر انتظام کشمیر میں مقیم عسکریت پسندوں کے ساتھ مل کر کام کر رہا تھا اور وادی میں سرگرم عسکریت پسندوں کے ساتھ منشیات کی تجارت میں ملوث تھا۔انہوں نے مزید کہا کہ’’ملزم اسمگلر جموں و کشمیر میں عسکریت پسندوں کی مالی مدد کے لئے منشیات کا کاروبار کررہا تھا اور یہ ایک بہت بڑا حوالہ سیکنڈل ہے جہاں رقم کی نقل و حرکت کے بغیر ہی منشیات کے ذریعہ رقم منتقل کی جاتی ہے اور پھر اس رقم کو ملی ٹنٹ کارروائیوں کے لئے استعمال کی جاتی ہے۔
 

تازہ ترین