تازہ ترین

شب 10بجے سے صبح 6بجے تک

جموں وکشمیر کے 8اضلاع میں کورونا کرفیو کا نفاذ

تاریخ    9 اپریل 2021 (00 : 01 AM)   


نیوز ڈیسک
جموں // جموں کشمیر کے لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے سرینگر اور جموں سمیت 8اضلاع میں شبانہ کورونا کرفیو نافذ کرنے کے احکامات صادر کئے ہیں۔لیفٹیننٹ گورنر نے رات کے قریب 10بجے سماجی رابطہ گاہ ٹیوٹر پر ٹویٹ کرتے ہوئے اس بات کی جانکاری دی کہ صوبائی انتظامیہ کو ہدایات دی گئی ہیں کہ وہ کورونا کرفیو کا نفاذ سختی کیساتھ عمل میں لائے۔ٹویٹ میں کہا گیا ہے’’ جموں، ادہمپور،کھٹوعہ، سرینگر بارہمولہ، بڈگام ، اننت ناگ اور کپوارہ اضلاع  کے میونسپل حدود میں رات کے 10بجے سے صبح 6بجے تک کرفیو نافذ رہیگا، کیونکہ کورونا کیسز میں تشویشناک حد تک اضافہ ہورہا ہے‘‘۔منوج سنہا نے دوسرے ٹویٹ میں کہا’’ کرفیو کا نفاذ ان 8اضلاع کے بلدیاتی اداروں کے  میونسپل حدود میں رہیگا ، جسکا اطلاق آج یعنی جمعہ کی شب 10بجے سے ہوگا،ریاسی ضلع نگرانی میں رہیگا کہ کہیں اس میں کورونا معاملات میں تیزی نہ آئے‘‘۔
 
 

۔ 835مثبت،ایک فوت

۔162سفر کرنے والے شامل،متوفین کی تعداد 2019 تک پہنچ گئی

پرویز احمد 
 
 سرینگر //جموں و کشمیر میں کورونا وائرس متاثرین کی تعداد روز بروز بڑھ رہی ہے۔ جہاںبدھ کو متاثرین کی تعداد 812تھی وہیںجمعرات کو اس میں بدستور اضافہ ہوا اورتعداد 835 ریکارڈ کی گئی۔ان میں 162افراد سفر کر کے لوٹے تھے۔ اس دوران ایک شخص فوت ہوگیا ، جو وادی سے تعلق رکھتا تھا۔ جمعرات کو44ہزار 24ٹیسٹ کئے گئے جن میں 835افراد کی رپورٹیں مثبت آئیں۔ ان میں 280جموں اور 555کشمیر سے تعلق رکھتے تھے۔ کشمیر سے تعلق رکھنے والے 555متاثرین میں 469مقامی سطح پر جبکہ 86سفر کرکے وادی آئے تھے ۔ سرینگر میں 349، بارہمولہ میں 74، بڈگام میں 24، پلوامہ میں 8، کپوارہ میں 31، اننت ناگ میں 22، بانڈی پورہ میں 18، گاندربل میں 7، کولگام میں 18 اور شوپیان میں 4 شہری وائرس سے متاثر ہوئے ہیں۔وادی میں متاثرین کی مجموعی تعداد 81ہزار 329ہوگئی ہے جن میں 1274 فوت ہوئے ہیں۔ جموں صوبے میں 280افراد کی رپورٹیں مثبت آئیں جن میں 204مقامی سطح پرجبکہ 76افراد بیرون ریاستوں اور ممالک سے سفر کرکے آئے ہیں۔ متاثرین میں جموں میں140، ادھمپور میں 35، راجوری میں 9، ڈوڈہ میں 4، کٹھوعہ میں 20، سانبہ میں 8، کشتواڑ میں 4، پونچھ میں 3، رام بن میں 2 اور ریاسی میں47افراد شامل ہیں۔ جموں صوبے میں متاثرین کی مجموعی تعداد 54ہزار333تک پہنچ گئی ہے جن میں 745فوت ہوگئے ہیں ۔ یہاں سرگرم معاملات کی تعداد 1688ہوگئی ہے۔  
 
 

ضلع سرینگر بری طرح لپیٹ میں

۔8روز میں 1669مثبت قرار،358سفر سے لوٹنے والے بھی شامل

 پرویز احمد 
 
 سرینگر //کورونا وائرس کی دوسری لہر سرینگر شہر کو تیزی سے اپنی لپیٹ میں لے رہی ہے ۔ جمعرات کو ضلع میں مزید 349افراد کی رپورٹیں مثبت آئیں ،جن سے سرگرم معاملات کی تعداد ایک مرتبہ پھر 2000 کا ہندسہ پار کرکے 2027ہوگئی ہے۔ سرینگر شہر میں 8دنوں کے دوران 1669افراد وائرس سے متاثرین ہوئے ہیں جن میں 358بیرون ریاستوں اور ممالک سے آئے ہیں۔  یکم اپریل کو 157افراد کی رپورٹیں مثبت آئیں ۔ اسطرح متاثرین کی مجموعی تعداد 29ہزار219ہوگئی جن میں26ہزار 38مقامی سطح پر جبکہ 3181مختلف ریاستوں اور ممالک سے سرینگر پہنچنے والے شامل ہیں۔ اپریل  مہینے کے ابتدائی ایام میں ہی روزانہ متاثر ہونے والے افراد کی تعداد میں اضافہ ہواہے۔ سرینگر میں یکم اپریل کو 157، 2اپریل کو 173، 3اپریل کو 207، 4اپریل کو 208، 5اپریل کو 114، 6اپریل کو 222، 7اپریل کو 239 اور 8اپریل کو 349افراد مثبت پائے گئے۔ سرینگر شہر میں 8اپریل کو کورونا متاثرین کی مجموعی تعداد 30ہزار 758ہوگئی ہے جن میں 27ہزار 219مقامی سطح جبکہ سفر کرنے والوں کی تعداد 3539افراد شامل ہیں ۔ سرینگر ضلع میں سرگرم معاملات کی تعداد 2027تک پہنچ گئی ہے۔