تازہ ترین

۔5اگست کو انضمام مکمل ہوگیا

ڈی پی سریواستو کی تصنیف کردہ کتاب کی اجرائی، 18 مہینوں میں مثبت تبدیلی آئی، 70سال کی پالیسیاں ختم:لیفٹیننٹ گورنر

تاریخ    19 مارچ 2021 (00 : 01 AM)   


نیوز ڈیسک
جموں// لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے کہا کہ گذشتہ سات دہائیوں سے جموں و کشمیر کو دیگر ریاستوں کے مقابلے میں زیادہ فی کس بجٹ ملنے کے باوجود خوشحالی اور ترقی سے دور رکھا گیا ۔  انہوں نے کہا کہ 5 اگست 2019 کو وزیر اعظم نریندر مودی کی کاوشوں اور عزم کے ساتھ ہی جموں و کشمیر کاپوری طرح  مرکزی دھارے میں انضمام مکمل ہوگیا ہے۔انہوں نے کہا "گذشتہ سات دہائیوں سے ، جموں و کشمیر کو دیگر ریاستوں کے مقابلے میں فی کس بجٹ حاصل کرنے کے باوجود خوشحالی اور ترقی سے دور رکھا گیا ہے ،۔ لیفٹیننٹ گورنر نے 'بھولے ہوئے کشمیر: لائن آف کنٹرول پر "کے عنوان سے مصنف سفارت کار دنکر پی سریواستو  کی تصنیف کردہ کتاب کی اجرائی کی۔سنہا نے کہا کہ اب مرکز کے علاقوں میں ترقیاتی عمل کو تیز کردیا گیا ہے۔ جلد ہی ، آزادی کے بعد پہلی بار 973 دیہات میں رہنے والی آبادی کو پکی سڑکوں سے منسلک کیا جائے گا ، اور اگلے تین چار سالوں میں دور دراز دیہات میں 20-22 گھنٹے تک بجلی ہوگی۔UT کی ترقی کے لئے اٹھائے جارہے مختلف اصلاحاتی اقدامات کے بارے میں بات کرتے ہوئے ، لیفٹیننٹ گورنر نے کہاکہ جموں وکشمیر گذشتہ 18 ماہ سے مثبت تبدیلی کی لہر دیکھ رہا ہے اور سماجی و معاشی ترقی کو ایک پرعزم جہت ملی ہے۔انہوں نے مزید کہا ، ’’ خطے کی ترقی میں رکاوٹ پیدا کرنے والے سینکڑوں قوانین اور پالیسیاں ختم ہوچکی ہیں یا ان میں ترمیم کی گئی ہے۔وزیر داخلہ امت شاہ نے پارلیمنٹ  میں پاکستانی زیر انتظام کشمیرکے بارے میں ہندوستان کے مؤقف کو صاف کردیا ہے۔ لیفٹیننٹ گورنر نے کہا کہ ہندوستان کی وزارت خارجہ نے بھی خطے میں آبادیاتی تبدیلیوں کے خلاف پاکستان کو متنبہ کیا ہے۔لیفٹیننٹ گورنر نے کہا کہ یو ٹی حکومت انتظامیہ کے ہر سطح پر شفافیت اور احتساب کی پرورش کر رہی ہے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ دیہی علاقوں میں رہنے والے لوگوں کی مانگیں اور ترقیاتی مسائل حکومت کے زیر غور ہیں ۔لیفٹیننٹ گورنر نے کہا کہ عوامی شکایات کے ازالے کے میکانزم کو مزید مضبوط اور ذمہ دار بنانے میں اصلاحات کی گئی عوامی شکایات کی سماعت ہر ماہ ہوتی ہے جہاں میں لوگوں سے بات چیت کرتا ہوں اور اُن کی شکایات کا ازالہ کرتا ہوں ۔"اس موقع پر لیفٹیننٹ گورنر نے ویویکانند انٹرنیشنل فاؤنڈیشن کے ویبنار سے بھی خطاب کیا۔سنہا نے اپنی کتاب کے ذریعے گذشتہ سات دہائیوں کے دوران مقبوضہ جموں وکشمیر (پی او جے کے) پر پاکستان کی سازش اور عوام پر مظالم کی "بے نقاب" تعریف کرنے والے مصنف کی تعریف کی ، اور خطے میں اپنی پالیسیوں کے لئے پاکستان کے محرکات کی بہتر تفہیم پیدا کی۔لیفٹیننٹ گورنر نے غیر ملکی سفارت کاری کے محاذ پر ایک ماہر سفارتکار ، دنکر پی سریواستو کی خدمات کو سراہا۔ انہوں نے وزارت خارجہ میں جموں و کشمیر کے معاملے میں شمولیت ، اور اقوام متحدہ میں تبادلہ خیال کے لئے مصنف کا بھی خصوصی ذکر کیا۔
 

تازہ ترین