تازہ ترین

۔8 برس قبل سڑک تعمیر ہوئی لیکن معاوضہ نہیں ملا | کاہرہ ڈوڈہ میں عوام نے پی جی ایس وائی کے خلاف کیا احتجاج

تاریخ    8 مارچ 2021 (31 : 01 AM)   


اشتیاق ملک
ڈوڈہ //ڈوڈہ کی تحصیل کاہرہ سے آئے تین پنچائتوں کے لوگوں نے پی ایم جی ایس وائی کے خلاف احتجاج بلندکرتے کہا کہ 2014 میں اندلو چالر سڑک کی تعمیر شروع کی گئی لیکن آٹھ برس گذر جانے کے بعد بھی زمینداروں کو معاوضہ ادا نہیں کیا گیا ہے۔سابق سرپنچ و سیاسی کارکن چوہدری فاروق شکاری کی قیادت میں مظاہرین نے پی ایم جی ایس وائی ڈویژن ٹھاٹھری کے خلاف نعرہ بازی کرتے ہوئے سڑک پر ٹریفک کی آمدورفت مکمل طور پر بند رکھنے کا انتباہ دیا۔ انہوں نے کہا کہ 16 کلومیٹر سڑک میں دھروٹھ،کنسو و بھٹولی کے باشندوں کی 150 کنال رقبہ آیا ہے جبکہ میوہ باغات و پیڑ پودوں کو بھی نقصان پہنچا ہے۔ مظاہرین میں شامل لوگوں کے مطابق معاوضہ کی فائلیں کئی برس قبل تیار کیں ہیں جو پی ایم جی ایس وائی ڈویڑن ٹھاٹھری کے دفتر میں پڑی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ غریب عوام نے متعلقہ حکام کے پاس سینکڑوں چکر کئے لیکن کچھ حاصل نہیں ہوا۔انہوں نے کہا کہ مذکورہ سڑک کی تعمیر سے کئی کنبے بے گھر ہوئے ہیں۔ مظاہرین نے ڈپٹی کمشنر ڈوڈہ و ایس ڈی ایم ٹھاٹھری سے مداخلت کی اپیل کرتے ہوئے متاثرین کے ساتھ انصاف کرنے و متعلقہ محکمہ کو جوابدہ بنانے کا مطالبہ کیا۔ 
 

تازہ ترین