تازہ ترین

کرشنا ڈابہ ہلاکت کیخلاف جموں میں تاجروں کا احتجاج

تاریخ    4 مارچ 2021 (00 : 01 AM)   


 جموں //سری نگر میں ایک کرشنا ڈابہ کے مالک کے بیٹے کے حالیہ قتل کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے تاجروں کے ایک گروپ نے بدھ کے روز وادی کشمیر میں کام کرنے والے غیر مقامی تاجروں کی حفاظت اور سلامتی کا مطالبہ کیا۔تاجروں نے نہرو مارکیٹ میں مہرا کے قتل کے خلاف مظاہرہ کیا اور حکومت سے اپیل کی کہ حملہ آوروں کی جلد سے جلد شناخت کی جائے۔ویئر ہائوس ٹریڈرس فیڈریشن کے جنرل سکریٹری دیپک گپتا نے بتایا "کشمیر میں ملی ٹنٹ غیر مقامی تاجروں کو نشانہ بنا رہے ہیں ، یہ اچھی علامت نہیں ہے ۔جس طرح سے کشمیر میں باہر سے آنے والے تاجروں کو نشانہ بنایا جارہا ہے ، خوف کی فضا پیدا کی جارہی ہے"۔انہوںنے کہاکہ اگست 2019 میں آئین کے آرٹیکل 370 کو منسوخ کرنے کے بعد حکومت پورے ملک کے تاجروں اور صنعت کاروں کو جموں و کشمیر میں سرمایہ کاری کے لئے مدعو کررہی ہے تاہم اس طرح کی صورتحال میں وادی میں کون آئے گا۔گپتا نے کہا کہ حکومت سید علی شاہ گیلانی جیسے علیحدگی پسند رہنماؤں کو تحفظ فراہم کرتی ہے ، لیکن تاجروں کو ہتھیار بند افراد کے رحم و کرم پر چھوڑ دیا ہے۔گپتا نے کہا "حکومت کو کشمیر میں کام کرنے والے تمام بیرونی افراد خصوصاً تاجروں کی حفاظت اور حفاظت کو یقینی بنانا چاہئے۔"انہوں نے سری نگر میں مہرہ کے کنبہ کے افراد اور ان کے تحفظ کیلئے مناسب اقدامات کا مطالبہ کیا۔ 
 

تازہ ترین