معروف عالم دین مولانا منظور کرمانی

کھٹوعہ سڑک حادثے میں جاں بحق

تاریخ    23 فروری 2021 (00 : 01 AM)   


اشرف چراغ
کپوارہ// وادی کشمیر کے ایک معروف اسلامی اسکالر اورجامع مسجد ہندوارہ کے سابق امام و خطیب مولوی منظور احمد کرمانی کی دوران سفر کٹھوعہ سڑک حادثے میں موت واقع ہوئی ہے۔موصوف مسلم پرسنل بورڈ کے ممبراورمتحدہ مجلس علما ء کے بانی رکن مفتی نظام الدین ندوی کے بڑے بھائی تھے ۔ منظور احمد کرمانی پیر کو جموں سے دلی ایک اسلامی تقریب میںشرکت کی غرض سے جارہے تھے کہ کٹھوعہ کے مقام پر ان کی گا ڑی زیر نمبر JK09B-0179 مخالف سمت سے آرہی گا ڑی سے ٹکرائی جس میں منظور احمدکرمانی اور گا ڑی میں سواردیگر افراد زخمی ہوئے ۔منظور احمد کرمانی کو اگرچہ نزدیکی اسپتال علاج و معالجہ کیلئے دا خل کیا گیا تاہم وہا ں ڈاکٹرو ں نے انہیں مر دہ قرار دیا ۔ کرمانی کی موت کی خبر جو نہی ہندوارہ پہنچ گئی تو وہاں کہرام مچ گیا اورہرسو صف ماتم بچھ گئی ۔مرحوم کی نماز جنازہ آج بعد دوپہر ہندوارہ میں ادا کی جائے گی ۔متحدہ مجلس علما ء نے مجلس کے بانی رکن مفتی نظام الدین ندوی کے برادر اکبر مولوی منظور احمد کرمانی کے جاں بحق ہو نے پر دکھ اور صدمے کا اظہار کیا ہے۔مجلس علما ء نے مرحوم کی علاقہ ہندوارہ اور کپوارہ میں دینی ،ملی ، تبلیغی اور سماجی خدمات کو خراج عقیدت ادا کرتے ہوئے کہا کہ مرحوم کا خانوادہ پورے علاقے میں قدر و منزلت کی نگاہوں سے دیکھا جاتا ہے۔ مرحوم  ایک ہر دلعزیز شخصیت کے مالک اور بااخلاق انسان تھے۔
 

تازہ ترین