۔8.5کلو میٹرنئی فور لین بانہال ٹنل مارچ میں کھول دی جائیگی

تعمیراتی کام آخری مرحلے میں، بانہال میں ٹول پلازہ اور قاضی گنڈ میں فلائی اووور تقریباً مکمل

تاریخ    26 جنوری 2021 (00 : 01 AM)   


محمد تسکین
بانہال// قاضی گنڈ اور بانہال کے درمیان فورلین ٹنل کے ساتھ ساتھ ٹنل سے ریلوے سٹیشن بانہال اور وانگنڈ قاضی گنڈ میں فلائی اوور اور سڑک کی تعمیر کا کام مکمل کیا گیا ہے۔ ساڑھے8 کلو میٹر لمبی قاضی گنڈ بانہال فورلین ٹنل کے دونوں طرف سے قاضی گنڈ کے وانگنڈ اور بانہال ریلوے سٹیشن بانہال تک قریب 6 کلومیٹر لمبی فورلین سڑک مکمل کرلئے گئے ہیں۔نویگْہ تعمیراتی کمپنی کو امید ہے مارچ تک فورلین ٹنل کو مکمل کرکے اسے قابلِ آمدورفت بنایا جائے گا۔ اس ٹنل سے بانہال اور قاضی گنڈکے درمیان16 کلومیٹر کی مسافت کم ہو جائے گی اور جموں جانے والے مسافروں کو اب لور منڈا، اپر منڈا، ٹول ٹیکس کراسنگ، زگ اور بانہال ٹنل تک پہنچنے کے انتہائی تکلیف دہ سفر سے چھٹکارا ملے گا۔اتنا ہی نہیں بلکہ شیطانی نالہ اور نوگام کے درمیان پیچیدہ راستے سے بھی نجات ملے گی۔ نویگہ تعمیراتی کمپنی کے چیف منیجر منیب ٹاک نے کشمیر عظمیٰ سے بات کرتے ہوئے کہا کہ فورلین ٹنل اور اس کے دونوں طرف سے سڑک اور بانہال ٹول پلازہ کو دوہزار کروڑ روپے سے زائد کی لاگت سے تعمیر کیا جارہا ہے اور ٹنل پروجیکٹ کا کام آخری مرحلے میںہے۔ انہوں نے کہا کہ ٹنل کے دونوں طرف فورلین سڑک کا کام مکمل کیا گیا ہے اور اب دو سرنگوں پر مشتمل فورلین ٹنل کے اندر اور باہر الیکٹرک ومکینیکل کا کچھ حصہ کا کام باقی رہ گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بانہال ریلوے سٹیشن اور فورلین ٹنل کے درمیان لامبر کے مقام پر ٹول پلازہ بھی زیر تعمیر ہے اور بانہال قاضی گنڈ فورلین ٹنل کو عوام کے نام وقف کرنے سے پہلے اسے بھی مکمل کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ یہ ٹنل پروجیکٹ موجودہ جواہر ٹنل سے چار سو میٹر نیچے تعمیر کیا گیا ہے۔ 
 

تازہ ترین